Home Forums Non Siasi Tomorrow’s Pakistan

Viewing 20 posts - 1 through 20 (of 26 total)
  • Author
    Posts
  • #1
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Every commentator laments lack of progress in and by Pakistan.

    Without dwelling on the past and as if Pakistan was born today, I invite members to Penn their thoughts on what steps need to be taken to set the country on the path of recovery.

    Your thoughts should be free of politics and political parties and armed forces.

    JMP

    Atif Qazi

    نادان

    Bawa

    shahidabassi

    Zaidi

    Awan

    SaleemRaza

    @believer12

    • This topic was modified 7 months, 2 weeks ago by الشرطہ.
    #2
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    It is disappointing that the invitation has not been accepted so far. However it does not stop me from expressing my thoughts on the topic.

    I believe that three areas are the most important and fundamental.

    1. Law and Order
    2. Education
    3. Health

    I will return to expand.

    • This reply was modified 7 months, 2 weeks ago by Anjaan.
    #3
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Law & Order

    The Police should be responsible for maintaining law and order and it should be the duty of every Provincial Government.

    The recruitment of police personnel (constables and officers) should be subject to rigorous procedures.

    Only those should be employed who are committed to the profession.

    Their remuneration should take into account the provincial cost of living and performance. The remuneration package should be reviewed regularly and updated to ensure that police personnel are not tempted to resort to corrupt practices.

    #4
    Believer12
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 397
    • Posts: 9082
    • Total Posts: 9479
    • Join Date:
      14 Sep, 2016

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    میرے خیال میں پاکستان کو سب سے پہلے مختلف قوموں اور ملکوں کا انڈر ڈاگ بننے سے باز آنا ہوگا، کل ایک سابقہ وزارت خارجہ کا اہلکار عبدالباسط کہہ رہا تھا کہ سعودیہ اور عرب ممالک کو چھوڑنا نہیں چاہئے تھا۔ میرے خیال میں ایسے ہی عربیوں کی امداد پر پلنے والے کچھ پڑھے لکھے اپنی دولت، اپنی فیملی کی عیاشیاں اور معاشرے میں اونچا سٹیٹس رکھنے کی غرض سے پاکستان کو اپنے پاوں پر کھڑا نہیں ہونے دے رہے، مثلا راحیل شریف کو ملنے والی خطیر تنخواہ کا پاکستان کے عوام کو کیا فائدہ یا مشرف کو ملنے والا پیلس پاکستان کے کس مفاد میں تھا ؟

    پاکستان نے کب عربیوں سے بگاڑنی چاہی ہے؟  عرب ممالک خود پاکستان سے پیچھے ہٹے ہیں کیونکہ وہ ہم سے مطالبہ کررہے تھے کہ مفلوک الحال بھوکے ننگے یمنی بچوں پر بم پھینکیں اور فوج کشی کریں،پاکستان کا انکار عربوں کا ناراضگی کی بنیادی وجہ بنی ۔  آج چھ سال بعد بھی وہ جنگ ختم نہیں ہوی اور لاکھوں بچوں کی لاشیں جب دنیا کو دکھای دیتی ہیں تو وہ ان پر لعنتیں ڈالتے ہیں۔ اس لئے نوازشریف یا ریاست پاکستان کا فیصلہ سو فیصد درست تھا، مجھے یاد ہے ایک مذہبی تنگ نطری کا حامل جاہل ممبر ،کراچی والا، جو دوسرے فورم پر لکھتا تھا اس نے ایک تھریڈ بنا دیا کہ پاکستان کو سعودیہ سے معافی مانگ کر فوری اپنی فوج اس جنگ کیلئے بھیجنی چاہئے ایسا نہ ہو کہ یہ جنگ ایک ہفتے میں ختم ہوجا ے اور یمن میں سعودیہ کا حمایتی صدر واپس آجاے اور پاکستان منہ دیکھتا رہ جاے، اس کا مطلب تھا کہ ان بچوں کو جلدی مارو کہیں یہ  نہ ہو کہ کوی دوسرے آکر ان ننگ دھڑنگ یمنی بچوں کو پہلے مارنے کا سارا کریڈٹ لے جاے، آج میں اس ممبر کو بے شرمی سے وہیں براجمان دیکھتا ہوں تو سوچتا ہوں کہ اب یہ کیون نہیں کہتا کہ یمن کی جنگ میں جلدی فوج بھجواو یہ ایک ہفتے میں ختم ہوجاے گی؟

    دوسری اہم ترین چیز لازمی ایجوکیشن ہے میں انگلینڈ میں ہوں یہاں کوی بھی بچہ اٹھارہ سال سے کم عمر کا اگر اسکول نہیں جاتا تو پہلے اسکول اور پھر کونسل کی طرف سے لیٹر آجاتا ہے کہ بچہ سکول کیوں نہیں جارہا؟ اس کو اسکول بھجوائیں ورنہ کونسل  اس بچے کو قانونی طریق پر سکول بھجواے گی، یا والدین اگر نہیں چاہتے کہ ان کا بچہ پڑھے تو وہ بچہ گورنمنٹ چھین لیتی ہے، یہی پاکستان میں کرنا ہوگا مگر کونسل کی سطح پر تاکہ ایسے بچوں کو مفت تعلیم دی جاسکے اور لوکل معزز افراد کی نگرانی میں ان بچوں کی تعلیم جارہ رہ سکے، لوکل ہونے کا یہ فائدہ ہے کہ مجھے معلوم ہے کس دوکان یا ورکشاپ پر بچوں کا استحصال ہوتا ہے میں وہاں جاکر خود بات کرسکتا ہوں یا قانون کی مدد لے کر ان بچوں کی تعلیم جاری کروا سکتا ہوں، مدرسوں میں بچے بن ماں باپ کیون رہتے ہیں وہاں سے میں اپنے ایریا کے مدرسے کو بند کروا کر بچوں کو ریسکیو کرسکتا ہوں یہ کام لوکل سطح پر کرنے پڑیں گے ورنہ تبدیلی نہیں آے گی

    تیسری سب سے اہم اور بنیادی چیز جو پاکستان کو ترقی سے روک رہی ہے ریاست کے اندرمذہبی عناصر کا بے حد دخل اور بدمعاشی ہے۔ ریاست کا مذہب سے کچھ لینا دینا نہیں ہونا چاہئے ریاست سب کیلئے مساوی سلوک کا پرچار کرے جس میں قابلیت ہے وہ آگے آے اور ریاست کی مدد کرے خواہ وہ شیعہ ہو یا احمدی ،مسلمان اپنے اعتقادات کو سامنے رکھ زندگی گزارین اور غیر مسلم اپنے اپنے اعتقادات کے ساے میں زندگی بسر کریں ہر ایک فرد کو مکمل مذہبی آزادی ہونی چاہئے اور کوی ملا یا فرد کسی دوسرے شہری پر کفر کے فتووں کے تیر نہ برساے

    سب سے پہلے بھٹو نے یہ پنگا لیا تھا اور مذہبی معاملات میں ریاست کو ایسا گھسیڑا کہ اب ریاست جتنا اس دلدل سے باہر آنے کیلئے ہاتھ پاوں مارتی ہے اتنا ہی نیچے کو دھنستی جاتی ہے ۔ احمدیوں کا جھگڑا مولویوں کے ساتھ چلتا رہتا تھا مگر سب مل جل کر رہتے تھے کبھی قتل و غارت یا فساد نہیں ہوا تھا مگر بھٹو کے فیصلے کے بعد فرقہ ورایت کی آگ ایسی پھیلی کہ ملک کو کھا گئی اور اب اس سے باہر آنے کیلئے اسٹیبلشمینٹ بھی ہاتھ پاوں مار رہی ہے مگر اس عفریت کے سامنے بے بس ہے ،ایک مولوی جب چاہے مسجد سے اعلان کردیتا ہے کہ فلاں بندے نے توہین کردی ہے اور اس کے بدمعاش آن کی آن اس بندے کی تکہ بوٹی کردیتے ہیں، لاکھوں مدرسے اور لاکھون طالبعلم ایک ایسی فورس بن چکے ہیں جو پاکستان کا وجود ہی خطرے میں ڈال سکتے ہیں، لہذا میرے خیال میں بھٹو کی اس سنگین غلطی بلکہ اقتدار کیلئے کی گئی اس حماقت کو واپس کرنے کا ایک ہی طریقہ ہے کہ اس کے بناے ہوے آئین کو ختم کرکے نیا آئین بنایا جاے بھٹو کے آئین کے خاتمے کے ساتھ ہی اس میں کی گئی ضیا اور اس کے بعد کے حکمرانوں کی اپنے مفادات کیلئے  کی گئی تمام ترمیمات بھی ختم ہوجائیں گی

    میرے خیال میں تیسرا نقظہ سب سے اہم ہے کسی بھی ریاست کو مذہب سے کوی سروکار نہیں ہونی چاہئے اور یہی قائد اعظم کا بھی طریقہ کار تھا ان کا دایاں بازو وزیر خارجہ کون تھا،،،،ایک احمدی ظفراللہ خان ؟ باونڈری کمیشن کا ہیڈ علامہ اقبال کے استعفے کے بعد بھی سر ظفراللہ خان کو قائداعظم نے اصرار کرکے بنایا تھا، قرارداد پاکستان کے تمام پوائینٹ بھی قائد اعظم نے انہی سے لکھواے تھے

    اب کیوں ایسا ہورہا ہے کہ عمران خان کا کوی مشیر اکانومی پر مشورہ دینے والا احمدی نہیں ہے اس کی تعیناتی پر جلوس نکل آتے ہیں  مگر حکومت ان مذہبی عناصر کا مقابلہ کرتے ہوے ان کی ڈیمانڈز سختی سے رد کرنے کی بجاے انکے سامنے سرنڈر کرجاتی ہے؟ یہ تو عجب طرح کی جہالت اور حماقت کا دور ہے جسے مذہب کی آڑ میں ملک کے خلاف استعمال کیا جارہا ہے

    • This reply was modified 7 months, 2 weeks ago by Believer12.
    #5
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 289
    • Posts: 4613
    • Total Posts: 4902
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Anjaan sahib

    Thanks for initiating this topic and for seeking my comments.

    In my opinion, today leads to what we see tomorrow so it is good time to start talking about tomorrow and also start doing something. Based on what I see today and the actions or lack of it, that I see, I think our tomorrow may not be as good as it should be.

    While I don’t know what is the definition of tomorrow for you, in my opinion, the following could help creating a better tomorrow:

    1. Identify, agree and adopt on the identity of Pakistan and Pakistanis. I think we don’t have any identity or if we have, we have too many identities and perhaps many are not suitable for us.
    2. Decide on the government system that is more suited for us in short term and adopt it.
    3. Create a list of top priorities and pursue the priorities regardless of which political party governs the country.
    4. Decide if we want to become economic power or a military power. If we want to attain both, decide which we will aim first. I prefer becoming an economic power.
    5. Decide if we will remain non aligned or will be aligned with other geopolitical powers. If we want to be aligned, who are we going to be aligned with. I favour remaining non aligned.
    6. Make local bodies / municipalities more stronger, more responsible and more accountable.
    7. Implement political reforms (if required I can share my opinion on some potential reforms)
    8. Reform educations system and have single curriculum across the country. Every child regardless of the background gets same education.
    9. Focus on controlling  population growth
    10. Focus on value added manufacturing and production
    11. Lower the difference significantly between wages of white collar and blue collar workers.
    12. Remove the disparity in the salaries of teachers, police, low lever administrative functions, essential service providers

    These are the ones that came to my mind as I was writing. There are many others that could be added to the list

    #6
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Anjaan sahib Thanks for initiating this topic and for seeking my comments. In my opinion, today leads to what we see tomorrow so it is good time to start talking about tomorrow and also start doing something. Based on what I see today and the actions or lack of it, that I see, I think our tomorrow may not be as good as it should be. While I don’t know what is the definition of tomorrow for you, in my opinion, the following could help creating a better tomorrow:

    1. Identify, agree and adopt on the identity of Pakistan and Pakistanis. I think we don’t have any identity or if we have, we have too many identities and perhaps many are not suitable for us.
    2. Decide on the government system that is more suited for us in short term and adopt it.
    3. Create a list of top priorities and pursue the priorities regardless of which political party governs the country.
    4. Decide if we want to become economic power or a military power. If we want to attain both, decide which we will aim first. I prefer becoming an economic power.
    5. Decide if we will remain non aligned or will be aligned with other geopolitical powers. If we want to be aligned, who are we going to be aligned with. I favour remaining non aligned.
    6. Make local bodies / municipalities more stronger, more responsible and more accountable.
    7. Implement political reforms (if required I can share my opinion on some potential reforms)
    8. Reform educations system and have single curriculum across the country. Every child regardless of the background gets same education.
    9. Focus on controlling population growth
    10. Focus on value added manufacturing and production
    11. Lower the difference significantly between wages of white collar and blue collar workers.
    12. Remove the disparity in the salaries of teachers, police, low lever administrative functions, essential service providers

    These are the ones that came to my mind as I was writing. There are many others that could be added to the list

    JMP Sahib

    Many thanks for a detailed response. I will not be responding to all the points you have raised and you can raise more.

    “There are many others that could be added to the list”

    Indeed…Pakistan has multitudes of problems requiring multitudes of fixes.

    While I don’t know what is the definition of tomorrow for you

    Whist writing my original post, I thought that hopefully what I like will be achieved in 50 years’ time. So, Tomorrow’s Pakistan is what I like to see in 50 years. Because, the changes in today’s Pakistan cannot be brought about in a short span of time.

    The Identity of Pakistan  in my opinion is well established and the identity of Pakistanis including overseas Pakistanis is as established by Nadra. Refinement can be introduced at a later stage.

    Decide on the government system that is more suited for us in short term and adopt it.

    I strongly recommend a “Technocratic” system.

    Decide if we want to become economic power or a military power. If we want to attain both, decide which we will aim first. I prefer becoming an economic power.

    I side with Economy but will be happy just to be economically self sufficient. Power will follow.

    Reform educations system and have single curriculum across the country. Every child regardless of the background gets same education.

    Agreed and the education for children should be free.

    All other points raised are accepted.

    Surprisingly you have not touched on the “Health”.

    Reforms are desperately needed to ensure that children’s health is looked after as a priority and eventually free medical care is available to all.

    I believe that a healthy and educated nation can achieve anything.

    #7
    Believer12
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 397
    • Posts: 9082
    • Total Posts: 9479
    • Join Date:
      14 Sep, 2016

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    JMP Sahib Many thanks for a detailed response. I will not be responding to all the points you have raised and you can raise more. “There are many others that could be added to the list” Indeed…Pakistan has multitudes of problems requiring multitudes of fixes. While I don’t know what is the definition of tomorrow for you Whist writing my original post, I thought that hopefully what I like will be achieved in 50 years’ time. So, Tomorrow’s Pakistan is what I like to see in 50 years. Because, the changes in today’s Pakistan cannot be brought about in a short span of time. The Identity of Pakistan in my opinion is well established and the identity of Pakistanis including overseas Pakistanis is as established by Nadra. Refinement can be introduced at a later stage. Decide on the government system that is more suited for us in short term and adopt it. I strongly recommend a “Technocratic” system. Decide if we want to become economic power or a military power. If we want to attain both, decide which we will aim first. I prefer becoming an economic power. I side with Economy but will be happy just to be economically self sufficient. Power will follow. Reform educations system and have single curriculum across the country. Every child regardless of the background gets same education. Agreed and the education for children should be free. All other points raised are accepted. Surprisingly you have not touched on the “Health”. Reforms are desperately needed to ensure that children’s health is looked after as a priority and eventually free medical care is available to all. I believe that a healthy and educated nation can achieve anything.

    یہ تمام باتیں خودبخود ٹھیک ہوجائیں گی جب ریاست سب کیلئے مان بن جاے گی یہ نہیں کہ اپنی پارٹی کو سپورٹ کرو دوسروں کو بھاڑ میں جھونکو اصل وہی پوائینٹ ہے کہ ریاست ایک مذہبی کسٹوڈین کا رول ادا کرنے کی بجاے سیکولر رول ادا کرے ساری ریاستیں جو سیکولر ہیں وہیں کا نظام آپ اپنے ملک میں دیکھناچاہتے ہو مگر سیکولر نہیں ہونا چاہتے یہی وجہ ہے کہ تبدیلی کا نعرہ محض نعرہ ہی رہ جاتا ہے اس کی مثال یوں دی جاسکتی ہے کہ قائد اعظم بننا سب کا خواب ہے مگر ان کے اصول و ڈسپلن اور ان تھک محنت کا طریقہ اپناتے ہوے موت پڑتی ہے

    #8
    Awan
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 152
    • Posts: 2949
    • Total Posts: 3101
    • Join Date:
      10 Jun, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    اانجان صاحب اچھا تھریڈ شروع کرنے کا شکریہ – پاکستان کو سب سے پہلے دو تین باتیں ابتدا میں طے کرنی ہونگی
    ١- یہاں صرف جمہوریت ہو گی اور فوج کا کسی قانون سازی یا حکومت میں عمل دخل نہیں ہو گا – فوج ایک خود مختیار ادارہ ہو جو اپنا آرمی چیف بھی خود مقرر کرے گا وہ جو بھی معیار اپنے لئے مقرر کرنا چاہیں –
    ٢-خارجہ پالیسی صرف ملکی مفاد کے مطابق ہو گی جس میں ہمسایوں سے اچھے تحلقات اور تجارت بنیادی نقطہ ہونا چاہئے – نسل مذہب اور زبان فرقے کی بنا پر کسی ملک سے نہ دوستی رکھی جائے اور نہ دشمنی –
    ٣- عدالتیں خود مختار ہونگی ان کا چیف جسٹس بھی وہ خود لگائیں گی – جج مقرر کرنے کے لئے کسی بھی ملک کا طریقہ اپنایا جا سکتا ہے جہاں کامیاب عدالتی نظام ہے جیسے انگلینڈ
    ٤- پولیس کا چیف بھی کوئی وزیر اعلیٰ نہیں لگائے گا صوبے کی پولیس اپنے لئے چیف خود مقرر کرے گی اس سے نچلی تعیناتیوں کے لئے بھی دنیا کی کسی بہترین پولیس کا ماڈل فولو کیا جائے –
    ٥- تحلیم صرف حکومت فراہم کرے گی کوئی پرائیویٹ اسکول کھول کر کاروبار کی اجازت نہیں دی جائے گی -محکمہ تحلیم بھی سرکار کے اثر و رسوخ سے آزاد ادارہ ہو گا –
    ٦- علاج بھی صرف سرکاری ہو گا کوئی پرائیویٹ علاج یا ڈاکٹر کو پرائیویٹ پریکٹس کی اجازت نہ ہو گی – محمکہ صحت بھی حکومت کے اثر رسوخ سے آزاد ہو گا –
    ٧- اسی طرح دوسرے ادارے بھی آزاد ہونگے – وزیر صرف بجٹ اور ترجیحات طے کریں گے کسی کو کوئی عہدہ نہیں دے سکیں گے
    ٨- تمام ترقیاتی کام شہری ادارے کریں گے جن کے اوپر لوکل گورنمنٹ ہو گی جہاں کونسلر اور سٹی میئر ہو گا
    اور بھی بہت ہے مگر فلحال اتنا ہی

    Anjaan

    • This reply was modified 7 months, 2 weeks ago by Awan.
    #9
    Zaidi
    Participant
    Offline
    • Advanced
    • Threads: 19
    • Posts: 935
    • Total Posts: 954
    • Join Date:
      30 May, 2020
    • Location: دل کی بستی

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    It is disappointing that the invitation has not been accepted so far. However it does not stop me from expressing my thoughts on the topic. I believe that three areas are the most important and fundamental.

    1. Law and Order
    2. Education
    3. Health

    I will return to expand.

    میرے خیال میں پاکستان کو سب سے پہلے مختلف قوموں اور ملکوں کا انڈر ڈاگ بننے سے باز آنا ہوگا، کل ایک سابقہ وزارت خارجہ کا اہلکار عبدالباسط کہہ رہا تھا کہ سعودیہ اور عرب ممالک کو چھوڑنا نہیں چاہئے تھا۔ میرے خیال میں ایسے ہی عربیوں کی امداد پر پلنے والے کچھ پڑھے لکھے اپنی دولت، اپنی فیملی کی عیاشیاں اور معاشرے میں اونچا سٹیٹس رکھنے کی غرض سے پاکستان کو اپنے پاوں پر کھڑا نہیں ہونے دے رہے، مثلا راحیل شریف کو ملنے والی خطیر تنخواہ کا پاکستان کے عوام کو کیا فائدہ یا مشرف کو ملنے والا پیلس پاکستان کے کس مفاد میں تھا ؟ پاکستان نے کب عربیوں سے بگاڑنی چاہی ہے؟ عرب ممالک خود پاکستان سے پیچھے ہٹے ہیں کیونکہ وہ ہم سے مطالبہ کررہے تھے کہ مفلوک الحال بھوکے ننگے یمنی بچوں پر بم پھینکیں اور فوج کشی کریں،پاکستان کا انکار عربوں کا ناراضگی کی بنیادی وجہ بنی ۔ آج چھ سال بعد بھی وہ جنگ ختم نہیں ہوی اور لاکھوں بچوں کی لاشیں جب دنیا کو دکھای دیتی ہیں تو وہ ان پر لعنتیں ڈالتے ہیں۔ اس لئے نوازشریف یا ریاست پاکستان کا فیصلہ سو فیصد درست تھا، مجھے یاد ہے ایک مذہبی تنگ نطری کا حامل جاہل ممبر ،کراچی والا، جو دوسرے فورم پر لکھتا تھا اس نے ایک تھریڈ بنا دیا کہ پاکستان کو سعودیہ سے معافی مانگ کر فوری اپنی فوج اس جنگ کیلئے بھیجنی چاہئے ایسا نہ ہو کہ یہ جنگ ایک ہفتے میں ختم ہوجا ے اور یمن میں سعودیہ کا حمایتی صدر واپس آجاے اور پاکستان منہ دیکھتا رہ جاے، اس کا مطلب تھا کہ ان بچوں کو جلدی مارو کہیں یہ نہ ہو کہ کوی دوسرے آکر ان ننگ دھڑنگ یمنی بچوں کو پہلے مارنے کا سارا کریڈٹ لے جاے، آج میں اس ممبر کو بے شرمی سے وہیں براجمان دیکھتا ہوں تو سوچتا ہوں کہ اب یہ کیون نہیں کہتا کہ یمن کی جنگ میں جلدی فوج بھجواو یہ ایک ہفتے میں ختم ہوجاے گی؟ دوسری اہم ترین چیز لازمی ایجوکیشن ہے میں انگلینڈ میں ہوں یہاں کوی بھی بچہ اٹھارہ سال سے کم عمر کا اگر اسکول نہیں جاتا تو پہلے اسکول اور پھر کونسل کی طرف سے لیٹر آجاتا ہے کہ بچہ سکول کیوں نہیں جارہا؟ اس کو اسکول بھجوائیں ورنہ کونسل اس بچے کو قانونی طریق پر سکول بھجواے گی، یا والدین اگر نہیں چاہتے کہ ان کا بچہ پڑھے تو وہ بچہ گورنمنٹ چھین لیتی ہے، یہی پاکستان میں کرنا ہوگا مگر کونسل کی سطح پر تاکہ ایسے بچوں کو مفت تعلیم دی جاسکے اور لوکل معزز افراد کی نگرانی میں ان بچوں کی تعلیم جارہ رہ سکے، لوکل ہونے کا یہ فائدہ ہے کہ مجھے معلوم ہے کس دوکان یا ورکشاپ پر بچوں کا استحصال ہوتا ہے میں وہاں جاکر خود بات کرسکتا ہوں یا قانون کی مدد لے کر ان بچوں کی تعلیم جاری کروا سکتا ہوں، مدرسوں میں بچے بن ماں باپ کیون رہتے ہیں وہاں سے میں اپنے ایریا کے مدرسے کو بند کروا کر بچوں کو ریسکیو کرسکتا ہوں یہ کام لوکل سطح پر کرنے پڑیں گے ورنہ تبدیلی نہیں آے گی تیسری سب سے اہم اور بنیادی چیز جو پاکستان کو ترقی سے روک رہی ہے ریاست کے اندرمذہبی عناصر کا بے حد دخل اور بدمعاشی ہے۔ ریاست کا مذہب سے کچھ لینا دینا نہیں ہونا چاہئے ریاست سب کیلئے مساوی سلوک کا پرچار کرے جس میں قابلیت ہے وہ آگے آے اور ریاست کی مدد کرے خواہ وہ شیعہ ہو یا احمدی ،مسلمان اپنے اعتقادات کو سامنے رکھ زندگی گزارین اور غیر مسلم اپنے اپنے اعتقادات کے ساے میں زندگی بسر کریں ہر ایک فرد کو مکمل مذہبی آزادی ہونی چاہئے اور کوی ملا یا فرد کسی دوسرے شہری پر کفر کے فتووں کے تیر نہ برساے سب سے پہلے بھٹو نے یہ پنگا لیا تھا اور مذہبی معاملات میں ریاست کو ایسا گھسیڑا کہ اب ریاست جتنا اس دلدل سے باہر آنے کیلئے ہاتھ پاوں مارتی ہے اتنا ہی نیچے کو دھنستی جاتی ہے ۔ احمدیوں کا جھگڑا مولویوں کے ساتھ چلتا رہتا تھا مگر سب مل جل کر رہتے تھے کبھی قتل و غارت یا فساد نہیں ہوا تھا مگر بھٹو کے فیصلے کے بعد فرقہ ورایت کی آگ ایسی پھیلی کہ ملک کو کھا گئی اور اب اس سے باہر آنے کیلئے اسٹیبلشمینٹ بھی ہاتھ پاوں مار رہی ہے مگر اس عفریت کے سامنے بے بس ہے ،ایک مولوی جب چاہے مسجد سے اعلان کردیتا ہے کہ فلاں بندے نے توہین کردی ہے اور اس کے بدمعاش آن کی آن اس بندے کی تکہ بوٹی کردیتے ہیں، لاکھوں مدرسے اور لاکھون طالبعلم ایک ایسی فورس بن چکے ہیں جو پاکستان کا وجود ہی خطرے میں ڈال سکتے ہیں، لہذا میرے خیال میں بھٹو کی اس سنگین غلطی بلکہ اقتدار کیلئے کی گئی اس حماقت کو واپس کرنے کا ایک ہی طریقہ ہے کہ اس کے بناے ہوے آئین کو ختم کرکے نیا آئین بنایا جاے بھٹو کے آئین کے خاتمے کے ساتھ ہی اس میں کی گئی ضیا اور اس کے بعد کے حکمرانوں کی اپنے مفادات کیلئے کی گئی تمام ترمیمات بھی ختم ہوجائیں گی میرے خیال میں تیسرا نقظہ سب سے اہم ہے کسی بھی ریاست کو مذہب سے کوی سروکار نہیں ہونی چاہئے اور یہی قائد اعظم کا بھی طریقہ کار تھا ان کا دایاں بازو وزیر خارجہ کون تھا،،،،ایک احمدی ظفراللہ خان ؟ باونڈری کمیشن کا ہیڈ علامہ اقبال کے استعفے کے بعد بھی سر ظفراللہ خان کو قائداعظم نے اصرار کرکے بنایا تھا، قرارداد پاکستان کے تمام پوائینٹ بھی قائد اعظم نے انہی سے لکھواے تھے اب کیوں ایسا ہورہا ہے کہ عمران خان کا کوی مشیر اکانومی پر مشورہ دینے والا احمدی نہیں ہے اس کی تعیناتی پر جلوس نکل آتے ہیں مگر حکومت ان مذہبی عناصر کا مقابلہ کرتے ہوے ان کی ڈیمانڈز سختی سے رد کرنے کی بجاے انکے سامنے سرنڈر کرجاتی ہے؟ یہ تو عجب طرح کی جہالت اور حماقت کا دور ہے جسے مذہب کی آڑ میں ملک کے خلاف استعمال کیا جارہا ہے
    اانجان صاحب اچھا تھریڈ شروع کرنے کا شکریہ – پاکستان کو سب سے پہلے دو تین باتیں ابتدا میں طے کرنی ہونگی ١- یہاں صرف جمہوریت ہو گی اور فوج کا کسی قانون سازی یا حکومت میں عمل دخل نہیں ہو گا – فوج ایک خود مختیار ادارہ ہو جو اپنا آرمی چیف بھی خود مقرر کرے گا وہ جو بھی معیار اپنے لئے مقرر کرنا چاہیں – ٢-خارجہ پالیسی صرف ملکی مفاد کے مطابق ہو گی جس میں ہمسایوں سے اچھے تحلقات اور تجارت بنیادی نقطہ ہونا چاہئے – نسل مذہب اور زبان فرقے کی بنا پر کسی ملک سے نہ دوستی رکھی جائے اور نہ دشمنی – ٣- عدالتیں خود مختار ہونگی ان کا چیف جسٹس بھی وہ خود لگائیں گی – جج مقرر کرنے کے لئے کسی بھی ملک کا طریقہ اپنایا جا سکتا ہے جہاں کامیاب عدالتی نظام ہے جیسے انگلینڈ ٤- پولیس کا چیف بھی کوئی وزیر اعلیٰ نہیں لگائے گا صوبے کی پولیس اپنے لئے چیف خود مقرر کرے گی اس سے نچلی تعیناتیوں کے لئے بھی دنیا کی کسی بہترین پولیس کا ماڈل فولو کیا جائے – ٥- تحلیم صرف حکومت فراہم کرے گی کوئی پرائیویٹ اسکول کھول کر کاروبار کی اجازت نہیں دی جائے گی -محکمہ تحلیم بھی سرکار کے اثر و رسوخ سے آزاد ادارہ ہو گا – ٦- علاج بھی صرف سرکاری ہو گا کوئی پرائیویٹ علاج یا ڈاکٹر کو پرائیویٹ پریکٹس کی اجازت نہ ہو گی – محمکہ صحت بھی حکومت کے اثر رسوخ سے آزاد ہو گا – ٧- اسی طرح دوسرے ادارے بھی آزاد ہونگے – وزیر صرف بجٹ اور ترجیحات طے کریں گے کسی کو کوئی عہدہ نہیں دے سکیں گے ٨- تمام ترقیاتی کام شہری ادارے کریں گے جن کے اوپر لوکل گورنمنٹ ہو گی جہاں کونسلر اور سٹی میئر ہو گا اور بھی بہت ہے مگر فلحال اتنا ہی Anjaan

    خواب میں نے بھی بہت دیکھے تھے
    راستہ بھول گیا تھا میں بھی

    #10
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    یہ تمام باتیں خودبخود ٹھیک ہوجائیں گی جب ریاست سب کیلئے مان بن جاے گی یہ نہیں کہ اپنی پارٹی کو سپورٹ کرو دوسروں کو بھاڑ میں جھونکو اصل وہی پوائینٹ ہے کہ ریاست ایک مذہبی کسٹوڈین کا رول ادا کرنے کی بجاے سیکولر رول ادا کرے ساری ریاستیں جو سیکولر ہیں وہیں کا نظام آپ اپنے ملک میں دیکھناچاہتے ہو مگر سیکولر نہیں ہونا چاہتے یہی وجہ ہے کہ تبدیلی کا نعرہ محض نعرہ ہی رہ جاتا ہے اس کی مثال یوں دی جاسکتی ہے کہ قائد اعظم بننا سب کا خواب ہے مگر ان کے اصول و ڈسپلن اور ان تھک محنت کا طریقہ اپناتے ہوے موت پڑتی ہے

    جب ریاست سب کیلئے مان بن جاے گی

    But Riaasat  will not become Maan by itself. People of the Riassat will have to do something to achieve that.

    #11
    Believer12
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 397
    • Posts: 9082
    • Total Posts: 9479
    • Join Date:
      14 Sep, 2016

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    جب ریاست سب کیلئے مان بن جاے گی But Riaasat will not become Maan by itself. People of the Riassat will have to do something to achieve that.

    وہ وقت بھی آجاے گا سب سے پہلے میرے اٹھاے گئے پوائینٹس پر عمل کرنا ہوگا اور ریاست کو قائداعظم والے دور میں واپس لے جانا ہوگا جہاں فوج سرحدوں پر واپس جاے گی اور ملا لوگ مساجد میں جائیں گے ناکہ پارلیمینٹس اور منسٹر ہاوسز میں اس کے بعد تعلیم اور دیگر معاملات میں ترقی ہوسکتی ہے

    #12
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    JMP Sahib

    Awan Sahib

    Believer Sahib

    What all of us want for Pakistan can come true, provided the people learn one very vital thing.  They should learn to appreciate the power and value of their vote and use it wisely. They should cast their vote in favour of a candidate who is competent and does not have a bad track record.

    This will eventually allow democracy to flourish and become the political system for the country. My suggestion of having a Technocratic System will become invalid.

    It is a big task and looks impossible but I am convinced there are enough wise and sincere Pakistanis who will educate those who do not appreciate the value of their vote.

    JMP

    Awan

    Believer12

    • This reply was modified 7 months, 1 week ago by Anjaan.
    #13
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 289
    • Posts: 4613
    • Total Posts: 4902
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Is there a possibility that things may not be as wrong as I am perceiving. Maybe the Pakistanis living in Pakistan are happy with their lives
    #14
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 289
    • Posts: 4613
    • Total Posts: 4902
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Based on what I have read so far and have understood from learned writers Awan sahib, Anjaan sahib and Believer12 sahib, it seems that there are two set f changes that need to take place.

    1. Structural or strategic
    2. Tactical

    I think tactical changes are easy to implement and will bring some immediate wins. These tactical changes, once implemented and adopted for good may help  Pakistanis to start thinking about long term structural changes and their rights.

    The structural changes seem to me as difficult to implement and I don’t think majority of the Pakistanis will care about those structural changes as of now.

    Since this forum as well as this the topic under discussion in this thread has not been attracting comments from other learned writers, it is difficult for me to gauge as to what ails Pakistan, what Pakistanis should focus on and whether there is an issue or not.

    #15
    Awan
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 152
    • Posts: 2949
    • Total Posts: 3101
    • Join Date:
      10 Jun, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Based on what I have read so far and have understood from learned writers Awan sahib, Anjaan sahib and Believer12 sahib, it seems that there are two set f changes that need to take place.

    1. Structural or strategic
    2. Tactical

    I think tactical changes are easy to implement and will bring some immediate wins. These tactical changes, once implemented and adopted for good may help Pakistanis to start thinking about long term structural changes and their rights. The structural changes seem to me as difficult to implement and I don’t think majority of the Pakistanis will care about those structural changes as of now. Since this forum as well as this the topic under discussion in this thread has not been attracting comments from other learned writers, it is difficult for me to gauge as to what ails Pakistan, what Pakistanis should focus on and whether there is an issue or not.

    Jay Bhai can you please differentiate tactical and structural changes? What tactical and structural changes you recommend or agree with what others on this thread have brought forward?

    #16
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 289
    • Posts: 4613
    • Total Posts: 4902
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Jay Bhai can you please differentiate tactical and structural changes? What tactical and structural changes you recommend or agree with what others on this thread have brought forward?

    Awan sahib

    In my opinion provision of education, access to health, law and order, remuneration of police and teachers etc, independence of judiciary etc are tactical and easy to implement solutions which can and should be pursued without any inhibition.

    In my opinion the structural and strategic changes are political reforms, mode of government and governance, role of various institutions and functions, formulating foreign relation / affairs policies etc are more difficult to implement and requires some bold steps.

    One can argue that some of the tactical steps could be structural and vice versa and I don have any issue with that. In some cases, even I struggled to decide if a particular action or direction or decision is tactical or structural.

    For me it is very important to understand what is the identity of Pakistan, what form of government is suited to us (even if it is for short to mid term) an, what our priorities should be

    #17
    Awan
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 152
    • Posts: 2949
    • Total Posts: 3101
    • Join Date:
      10 Jun, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    JMP Sahib Awan Sahib Believer Sahib What all of us want for Pakistan can come true, provided the people learn one very vital thing. They should learn to appreciate the power and value of their vote and use it wisely. They should cast their vote in favour of a candidate who is competent and does not have a bad track record. This will eventually allow democracy to flourish and become the political system for the country. My suggestion of having a Technocratic System will become invalid. It is a big task and looks impossible but I am convinced there are enough wise and sincere Pakistanis who will educate those who do not appreciate the value of their vote. JMP Awan Believer12

    Anjaan sahib if you  make a structural change and go from Parliamentary system to Presidential system then elected president can appoint  all technocrats as ministers and advisers. We already have gone too far in parliamentary system that going back back and strengthening the presidential system will take long time. People spend billion of rupees on their constituencies now and in presidential system then don’t have to worry about this investment back with profit after going into government. In many aspects, presidential system suits a poor and corrupt country like Pakistan but it would have been great if we had this since Bhutto times. If we are now stuck with parliamentary system then we need to strengthen the election commission. Election commission is so weak that no one listen to them on irregularities and they exceed election expenses to any level they want. Making election transparent and strengthening election commission are those tactical changes which are not very hard to implement if all parties agree. I am hoping that with the increase of educated persons’s percentage more educated and capable people will come forward in our democratic system and will bring improvements while in the government. The way opposition is attacking army, it is very likely that army may not interfere much in next government paving way for true democracy. This is all optimism with high hopes and no guaranty of this happening in near future.

    JMP

    Ghost Protocol

    Zaidi

    Believer12

    • This reply was modified 7 months, 1 week ago by Awan.
    #18
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Awan sahib In my opinion provision of education, access to health, law and order, remuneration of police and teachers etc, independence of judiciary etc are tactical and easy to implement solutions which can and should be pursued without any inhibition. In my opinion the structural and strategic changes are political reforms, mode of government and governance, role of various institutions and functions, formulating foreign relation / affairs policies etc are more difficult to implement and requires some bold steps. One can argue that some of the tactical steps could be structural and vice versa and I don have any issue with that. In some cases, even I struggled to decide if a particular action or direction or decision is tactical or structural. For me it is very important to understand what is the identity of Pakistan, what form of government is suited to us (even if it is for short to mid term) an, what our priorities should be

    JMP

    You said

    For me it is very important to understand what is the identity of Pakistan, what form of government is suited to us (even if it is for short to mid term) an, what our priorities should be

    In order to explore and discuss it further let me ask you few questions.

    1. What is in your opinion identity of Pakistan?
    2. What form of Government in your opinion, is suited to Pakistan?
    3. What should be our priorities in your opinion?
    #19
    Ghost Protocol
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 164
    • Posts: 5438
    • Total Posts: 5602
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    Anjaan sahib if you make a structural change and go from Parliamentary system to Presidential system then elected president can appoint all technocrats as ministers and advisers. We already have gone too far in parliamentary system that going back back and strengthening the presidential system will take long time. People spend billion of rupees on their constituencies now and in presidential system then don’t have to worry about this investment back with profit after going into government. In many aspects, presidential system suits a poor and corrupt country like Pakistan but it would have been great if we had this since Bhutto times. If we are now stuck with parliamentary system then we need to strengthen the election commission. Election commission is so weak that no one listen to them on irregularities and they exceed election expenses to any level they want. Making election transparent and strengthening election commission are those tactical changes which are not very hard to implement if all parties agree. I am hoping that with the increase of educated persons’s percentage more educated and capable people will come forward in our democratic system and will bring improvements while in the government. The way opposition is attacking army, it is very likely that army may not interfere much in next government paving way for true democracy. This is all optimism with high hopes and no guaranty of this happening in near future. JMP Ghost Protocol Zaidi Believer12

    اعوان بھائی،
    آپ نے ٹیگ کردیا ہے تو لکھ دیتا ہوں بات تلخ ہے بہت لوگوں کو بری لگے گی مگر میری یہی رائے ہے
    مجھے آنے والے کل میں پاکستان دکھائی نہیں دیتا.
    پاکستان کے مستقبل کے حوالے سے اسکے کرتا دھرتاؤں کا ایمان بھی نہ ہونے کے برابر ہے پاکستان کی اشرافیہ جنمیں اعلی فوجی عہدیداران، افسر شاہی ، سیاست دان، کاروباری حضرات اپنے مستقبل اور مستقبل کی نسلوں کے بہتر تحفظ کے لئے تسلسل کے ساتھ مغربی ممالک کے پاسپورٹ کے پیچھے بھاگ رہے ہیں سب کی کوشش ہے کہ جتنا ہو سکے اسکو لوٹ لو اور فرار ہو جاؤ . آپ تصور کریں کہ حتی کہ میاں صاحب کے وزارت عظمی کے دور میں انکی سگی اولاد نے پاکستان میں بسنا گوارہ نہیں کیا یہی صورتحال اسحق ڈار کے بچوں کی ہے ان دو حضرات کا تذکرہ محض مثال کے طور پر کیا ہے وگرنہ پوری اشرافیہ کی یہی صورتحال ہے
    پاکستان کی بنیاد میں ایک خرابی موجود ہے جس جھوٹ کی بنیاد پر یہ ملک وجود میں آیا تھا اس کی ہی وجہ سے اسمیں بے چینی ہے یہ ایک ایسی بے چینی ہے جس نے یہاں پر سیکڑوں ہزاروں سال سے بسنے والی اقوام سے انکی شناخت چھین کر انکو ایک مصنوعی شناخت فراہم کرنے کی سعی لاحاصل کی ہے اہل پنجاب جو باقی ماندہ پاکستان کی اکثریت ہیں اپنی ثقافت و زبان کو اپنانے میں جھجھک اور شرم محسوس کرتے ہیں یہی حال دیگر اقوام کا مگر کم شدت کے ساتھ موجود ہے اسکی بنیاد میں خرابی کی وجہ سے اسکو ایک دشمن کی ضرورت ہے اور اس دشمن سے تحفظ کے نام پر اسکی آنے والی نسلیں ہمیشہ گروی رہیں گیں اسی بنیادی خرابی کی وجہ سے انکو مذہبی شدت پسندی کی ضرورت بھی رہے گی جو کہ بذات خود ہی ترقی کی نفی ہے
    اس خطہ کے عوام کو ممکنہ طور پر سکون تب ہی ملے گا جب وہ ان زنجیروں سے نجات پاکر اپنی اپنی تاریخی حقائق کی روشنی اپنی مرضی سے نظام کو اختیار کرنے میں آزاد ہوں گے پھر چاہے جرگے ہوں ، بادشاہت ہو ، پارلیمانی جمہوریت ہو یا صدارتی نظام ہو یا کسی کو خلیفہ بننے کا شوق ہو ، وہ انکا اپنا نظام ہوگا اور اسکے نتائج عوام تک پہنچیں گے .

    #20
    Anjaan
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 46
    • Posts: 2191
    • Total Posts: 2237
    • Join Date:
      2 Mar, 2017
    • Location: Kala Shah kaku

    Re: Tomorrow’s Pakistan

    جس جھوٹ کی بنیاد پر یہ ملک وجود میں آیا تھا

    Can you expand on that? What was the JHOOT?

Viewing 20 posts - 1 through 20 (of 26 total)

You must be logged in to reply to this topic.

×
arrow_upward DanishGardi