Thread: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

Home Forums Hyde Park / گوشہ لفنگاں طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

  • This topic has 216 replies, 21 voices, and was last updated 3 months ago by نادان. This post has been viewed 6695 times
Viewing 20 posts - 1 through 20 (of 217 total)
  • Author
    Posts
  • #1
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    #2
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    قرار صاحب۔۔۔۔۔

    ایک چیز ہوتی ہے جس کو ذہنی ارتقاء کہتے ہیں۔۔۔۔۔ ایک وقت تھا جب مَیں اور آپ پی کے پولیٹکس پر بنو فنڈوئین سے کُشتیاں لڑا کرتے تھے، قرآنی آیات و احادیث کی کارپٹ بومبنگ سے بنو فنڈوئین کے ریت کے گھروندے نما قلعوں کو تباہ و برباد کیا کرتے تھے۔۔۔۔۔ لیکن کیا مَیں اور آپ یہ بابرکت کام اب کرتے ہیں۔۔۔۔۔ اپنے بارے میں مجھے علم ہے  کہ مَیں اب یہ نہیں کرتا کیونکہ اب مجھے ایک بات بہت اچھی طرح سمجھ آگئی ہے کہ ایک ایمان پرست اور ملحد میں مذہبی حوالوں سے کسی قسم کی نتیجہ خیز بحث کا ہونا ممکن ہی نہیں ہے۔۔۔۔۔ پیریڈ۔۔۔۔۔۔ اور ساتھ ساتھ مَیں یہ بھی سمجھتا ہوں کہ کسی کو بھی سکھایا نہیں جاسکتا، صرف سیکھا جاسکتا ہے۔۔۔۔۔ تو اِسی وجہ سے مَیں اب فنڈوئین سے مذہب پر کوئی زیادہ بحث و مباحثہ نہیں کرتا۔۔۔۔۔ البتہ چَسکے لینے کی انسانی بنیادی ضرورت کی خاطر کبھی کبھار مادام کی چُٹیا کھینچتا رہتا ہوں۔۔۔۔۔ اور آپ کے بارے میں بھی میرا مشاہدہ ہے کہ آپ بھی اُس خُشوع و خُضوع سے وہ سب نہیں کرتے جو پہلے کرتے تھے۔۔۔۔۔ کیا ہمارے ملحدانہ خیالات اب تبدیل ہوچکے ہیں جو اب ہم فنڈوئین سے دنگل نہیں لڑتے۔۔۔۔۔ نہیں ایسا بالکل نہیں ہے۔۔۔۔۔ مذاہب کے بارے میں ہمارے خیالات آج بھی وہی ہیں جو پہلے تھے۔۔۔۔۔ لیکن زندہ رُود آج وہی سب کرتا ہے جو ہم سالوں پہلے کرتے تھے۔۔۔۔۔ کیا وجہ ہے۔۔۔۔۔ ایک وجہ مجھے سمجھ آتی ہے کہ ہماری ٹرانسفورمیشن اور زندہ رُود کی ٹرانسفورمیشن میں کئی سالوں کا فرق ہے۔۔۔۔۔ مانتا ہوں کہ ہر انسان منفرد ہوتا ہے لیکن عموماً اکثر انسانوں کے نفسیاتی پیٹرن ایک جیسے ہی ہوتے ہیں۔۔۔۔۔ پہلے بھی کہیں لکھا تھا کہ نیو کنورٹس بڑے ہی جوش و جذبے کے ساتھ ڈھول بجاتے ہیں۔۔۔۔۔ ہم بھی جب نیو کنورٹس تھے تو ایسے ہی کرتے تھے۔۔۔۔۔

    اب زندہ رُود کی کچھ مذہبی حوالوں کی تحاریر پڑھ کر مجھے شبہ ہوتا ہے کہ کہیں یہ مَیں نے ہی تو نہیں لکھا۔۔۔۔۔ اِسی وجہ سے میرا بہت حد تک اندازہ ہے کہ زندہ رُود کچھ سالوں میں بَیک برنر پر شِفٹ ہوجائے گا(فنڈوئین کیلئے یہ جُزوی خوشخبری ہے مگر کچھ عرصہ عذابِ زندہ رُود کو بھگتنا پڑے گا، اِس بارے میں کچھ نہیں ہوسکتا) اور اِس معاملے میں میری اور آپ کی طرح کا قرار حاصل ہوجائے گا(مَیں غلط بھی ہوسکتا ہوں کہ میرے اور زندہ رُود کے کچھ حالات میں بہت بڑا فرق ہے)۔۔۔۔۔

    اب آجاتے ہیں طاقت اور اخلاقیات پر۔۔۔۔۔

    قرار صاحب۔۔۔۔۔ طاقت اور اخلاقیات دو انتہائی مختلف دُنیائیں ہیں۔۔۔۔۔ اِن دونوں کا آپس میں کوئی گذر نہیں ہے۔۔۔۔۔ اِن دونوں کی اپنی اپنی ڈومَینز ہیں۔۔۔۔۔ اور یہ انسانی نفسیات کے ایک دوسرے سے ٹکراتے ہوئے دو متضاد پہلو ہیں۔۔۔۔۔ مگر آخری فیصلہ طاقت کا ہوتا ہے۔۔۔۔۔ اخلاقیات پیچھے رہ جاتی ہے۔۔۔۔۔ آپ چاہیں تو اخلاقیات کی ٹیم میں دو کھلاڑی اور شامل کرلیں، آئین اور قانون۔۔۔۔۔ لیکن دلچسپ بات یہ ہے کہ آئین و قانون بھی تب ہی اپنے پیروں پر چلتے ہیں جب اِن کے پیچھے طاقت ہو۔۔۔۔۔ لہٰذا طاقت ہی فیصلہ کُن عنصر ہوتی ہے۔۔۔۔۔

    طاقت کیا ہے۔۔۔۔۔ پچھلے سال اِس پر بہت بات ہوچکی ہے اور مَیں وہی نکات مزید دُہرانا نہیں چاہتا۔۔۔۔۔ اور آپ بھی سمجھتے ہیں کہ طاقت کیا ہوتی ہے،  طاقت کی نفسیات کیا ہوتی ہے، طاقت کے ڈائنامکس کیا ہوتے ہیں اور طاقت ہاتھ میں رکھنے کے کیا ضروری تقاضے ہوتے ہیں۔۔۔۔۔ اور میرا گمان ہے کہ آپ بھی یہ معاملات سمجھتے ہیں۔۔۔۔۔ بس اتنا کہوں گا کہ طاقت ایک انتہائی بنیادی حقیقت ہے جس سے فرار ممکن نہیں ہے۔۔۔۔۔

    لیکن مسئلہ کچے اذہان کے ساتھ یہ ہوتا ہے کہ وہ ایک اونچے اخلاقی مقام پر بیٹھ کر طاقت کے کرشمے دیکھ کر لعنت ملامت کرتے رہتے ہیں۔۔۔۔۔ اب میری نظر میں یہ دیکھنے کا غلط زاویہ ہے۔۔۔۔۔ آپ کو ایک دُنیا(طاقت) کو سمجھنے کیلئے اُسی دُنیا میں بیٹھ کر دیکھنا پڑے گا۔۔۔۔۔ ہاؤس آف کارڈز کے فرینک انڈروُوڈ کا بہت تذکرہ ہوا ہے۔۔۔۔۔ فرینک انڈروُوڈ کا کردار ایک اچھے شخص کا تھا یا پھر بُرے شخص کا۔۔۔۔۔ میرے خیال میں یہ سوال اِس بات کا محتاج ہے کہ آپ اُس کردار کو کہاں سے بیٹھ کر دیکھتے ہو۔۔۔۔۔ اگر عام رائج اخلاقی حوالوں سے دیکھا جائے تو یقیناً وہ ایک بُرا شخص تھا لیکن طاقت کی دُنیا میں بیٹھ کر دیکھا جائے تو وہ ایک زبردست کردار تھا۔۔۔۔۔

    اب جیسے پی کے پولیٹکس پر یا یہاں پر، جب بھی سرکارِ دو عالم کی طرف سے آس پاس کی ریاستوں کو خطوط بھیج کر شرائط(مسلمان ہوجاؤ ورنہ جِزیہ دو اور اگر یہ بھی نہیں کرتے تو پھر ڈاکٹر اِسرار کے الفاظ میں تلوار فیصلہ کرے گی) عائد کرنے پر میری جانب سے بات ہوئی ہے تو مَیں نے سرکار کے احکامات پر یا عُمر فاروق کے دور میں دوسری ریاستوں پر لشکر کشی پر اعتراض نہیں اٹھایا بلکہ ہمیشہ اعتراض فنڈوئین کے موقف میں تضاد پر اٹھایا ہے کہ ایک طرف تو کہتے ہو اسلام اَمن کا دین ہے اور ہر وقت اٹھتے بیٹھے سوتے جاگتے لکم دینکم ولی الدین اور رحمت العالمین کے جنتر منتر پڑھتے رہتے ہو تو پھر  دوسری ریاستوں پر حملہ کرنے کو کیسے جائز قرار دیتے ہو۔۔۔۔۔ اور آپ کو بھی سرکار کے ایک بڑے پہنچے ہوئے سیاستدان ہونے پر کبھی شبہ نہیں رہا۔۔۔۔۔

    خیر سو باتوں کی ایک بات کہ طاقت کا کھیل بظاہر گندا ہے پَر دھندہ ہے۔۔۔۔۔ اور یہ گندا دھندہ پوری انسانی تاریخ میں پوری آب و تاب کے ساتھ جاری رہا ہے۔۔۔۔۔ چانکیہ سے لے کر میکیاولی تک ایسے ہی یہ کھیل شہزادوں کو سکھاتے نہیں رہے۔۔۔۔۔

    ایک نکتہ اور۔۔۔۔۔  انسانی تاریخ میں طاقت(حکمرانی) سے زیادہ انتہاء درجہ کی اَیڈِکشن رکھنے والا نشہ ابھی تک دریافت نہیں کیا جاسکا ہے۔۔۔۔۔

    اب میاں برادران و زرداری کی مثال ہی لے لیں۔۔۔۔۔ کیا اِن لوگوں کے پاس پیسے کی کوئی کمی ہے۔۔۔۔۔ یہ دُنیا میں کہیں بھی بہت، بہت ہی پُرآسائش زندگی گذار سکتے ہیں اور ویسے بھی اِس کے علاوہ انسان کو دُنیا میں اور کیا چاہئے۔۔۔۔۔ لیکن آخر میاں برادران و زرداری کو کوئی تو ایسی کھُرک ضرور ہے جو انہیں ہر وقت پاکستان کے عوام کی خدمت کرنے کیلئے بے چین کئے رکھتی ہے۔۔۔۔۔ عمران خان کی مثال بھی لے لیں، وہاں بھی یہی حال ہے۔۔۔۔۔ ٹھیک ہے اُس کے پاس میاں برادران یا زرداری کی طرح کا اندھا پیسہ نہیں ہے مگر  حکمرانی کا نشہ تو ویسا ہی ہے۔۔۔۔۔ اب چاہے پاکستان کے سیاسی حکمرانوں کیلئے دس پندہ سال کی جیلیں کاٹنا ہوں یا روزانہ کی بنیاد پر بے عزتی، یہ نشہ چھٹائے نہیں چھُٹتا۔۔۔۔۔

    ابھی کچھ عرصہ پہلے بی بی سی پر ایک بہت ہی دلچسپ آرٹیکل پڑھا تھا۔۔۔۔۔ وہ آرٹیکل عثمانی سلطنت کے بارے میں تھا۔۔۔۔۔ عثمانی سلطنت میں ایک روایت تھی کہ جب بھی کوئی نیا بادشاہ(سلطان) بنتا تھا تو اپنے تمام بھائیوں کو باقاعدہ ایک تقریب منعقد کر کے قتل کرواتا تھا۔۔۔۔۔ اُس آرٹیکل میں ایک عثمانی سلطان کا حوالہ تھا کہ وہ روتا جاتا تھا اور اپنے بھائیوں کو قتل کرواتا جاتا تھا۔۔۔۔۔ اب بظاہر تو اُس بادشاہ کا غم سے نڈھال ہونا زار و قطار رونا اور اپنے سامنے سگے بھائیوں کو قتل کروانا دو انتہائی عجیب و متضاد رویے نظر آتے ہیں۔۔۔۔۔ طاقت کی نفسیات کے تقاضوں سے ناآشنا اِس فورم کے کچے اذہان اور بڑی عمر کے نونہال(کیا کسی نے زیدی صاحب کی آواز لگائی ہے؟) اگر یہ مثال پڑھیں تو یقیناً کہیں گے کہ آخر یہ ہو کیا رہا ہے، اگر نیا بادشاہ بھائیوں کے قتل سے اتنا غمگین ہورہا ہے تو پھر قتل کیوں کروارہا ہے۔۔۔۔۔ لیکن اگر آپ بغور دیکھیں تو دونوں فعل اپنی اپنی جگہ اور اپنی اپنی وجوہات کے باعث دُرست تھے۔۔۔۔۔ اخلاقی حوالوں سے دیکھا جائے تو نئے بادشاہ کا غم سے نڈھال ہونا بھی سمجھ آتا ہے کہ جن بھائیوں کے ساتھ کھیلتا وہ بڑا ہوا ہے وہ اُس کے سامنے مارے جارہے ہیں مگر طاقت کے حوالے سے دیکھا جائے تو بھائیوں کو قتل کروانا بھی سمجھ آتا ہے کہ کہیں یہ بھائی مستقبل میں سلطان کے اقتدار کیلئے خطرہ نہ بن جائیں۔۔۔۔۔

    اب فورم کے کسی نونہال کو عثمانی سلطنت کی اِس روایت کے بارے میں کچھ اِشکال ہے تو ضیاء الحق اور بھٹو(ایک قبر بندے دو) یا مشرف کے ٹیک اوور، میاں صاحب کی جلاوطنی اور پھر سات سال بعد میاں صاحب کی واپسی پر غور کرلے۔۔۔۔۔ اُمید ہے بات سمجھ آجائے گی۔۔۔۔۔

    اب آجاتے ہیں پاکستانی ملٹری اسٹیبلشمنٹ پر۔۔۔۔۔

    پاکستان کی ملٹری آخر کیوں پاکستان کے اقتدار پر اپنی گرفت رکھتی ہے۔۔۔۔۔

    وہی ایک سدا بہار جواب۔۔۔۔۔ حکمرانی(طاقت) کا نشہ جو چھُٹائے نہیں چھُٹتا۔۔۔۔۔

    ملٹری بھی اُسی مرض میں مُبتلا ہے  جس کے اور دوسرے  مریض پاکستان کے سیاستدان ہیں۔۔۔۔۔

    کارل مارکس نے کم از کم ایک بات میرے نزدیک جُزوی دُرست کہی ہے۔۔۔۔۔ کہ دُنیا میں انسانوں کی دو بنیادی کلاسیں(طبقات) ہوتی ہیں۔۔۔۔۔ کارل ماکس نے تو اِن دو طبقات کو ہَیو اور ہَیو نَوٹس کہا ہے مگر میرے خیال میں یہ دو طبقات حکمراں اور رعایا ہیں۔۔۔۔۔ حکمراں وہ ہوتے ہیں جو تخت(طاقت) کا کھیل کھیلتے ہیں اور رعایا وہ ہوتے ہیں جو اپنی بے وقوفیوں کے سبب اِسی سمجھ میں رہتے ہیں کہ یہ نیا حکمران دراصل ایدھی صاحب کا پرتو ہے جو اِن(رعایا) کے سارے غم دور کردے گا اور یہ اِسی وجہ سے نئے حکمرانوں یا نئے روپ میں پرانے حکمرانوں کو مزید طاقت فراہم کرنے کا باعث بنتے ہیں اور بنتے رہتے ہیں۔۔۔۔۔

    اور قرار صاحب طاقت دی نہیں جاتی، حاصل کی جاتی ہے، طاقت بانٹی نہیں جاتی بلکہ مرکوز کی جاتی ہے۔۔۔۔۔

    اب مجھے کوئی یہ بتائے کہ ملٹری کو کس باوالے کتے نے کاٹا ہے جو وہ اپنی طاقت سیاستدانوں میں بانٹتی پھرے۔۔۔۔۔

    اور اب آپ کیلئے ایک فوڈ فور تھاٹ ہے کہ جب ملٹری اقتدار پر اپنی گرفت مضبوط کرنے کیلئے کاروائیاں ڈالتی ہے تو آپ کو بُرا لگتا ہے شاید غصہ بھی آتا ہو، لیکن آپ کو بُرا کیوں لگتا ہے۔۔۔۔۔ واپس ذرا طاقت اور اخلاقیات کے پیراگراف پر جائیں۔۔۔۔۔ آپ کو بُرا اِس لئے لگتا ہے کہ آپ بھی ایک اونچے اخلاقی مقام پر بیٹھ کر طاقت کے کھیل کے کرشمات کو دیکھتے ہیں۔۔۔۔۔ نہیں قرار صاحب۔۔۔۔۔ طاقت کے تناظر میں ملٹری بالکل دُرست کررہی ہوتی ہے وہ طاقت کو کنسولیڈیٹ ہی کررہی ہوتی ہے اور طاقت کے حوالوں سے ملٹری کو ایسا ہی کرنا چاہئے(البتہ اخلاقی و قانونی و آئینی حوالوں سے یہ صحیح نہیں ہے) لیکن آپ کے دیکھنے کا زاویہ غلط ہوتا ہے۔۔۔۔۔

    اب یہاں پر شاید کچھ پلپلے دماغ آئین و قانون و آرٹیکل چھ کے راگ اُلاپنا شروع ہوجائیں گے۔۔۔۔۔ اُن بے چاروں کی تسلی کیلئے عرض ہے کہ طاقت کے سامنے آئین و قانون و آرٹیکل چھ کوئی اہمیت نہیں رکھتے۔۔۔۔۔

    اب آجاتے ہیں کونسٹینٹ پر۔۔۔۔۔

    آپ کا کہنا ہے کہ میری جانب سے کونسٹینٹ لفظ استعمال کئے جانے کے بعد تنقید کے باعث مَیں نے ساتھ ساتھ مستقبل قریب کا سابقہ لگادیا۔۔۔۔۔

    نہیں ایسا نہیں ہے۔۔۔۔۔ مجھے بھی علم ہے کہ کونسٹینٹ کا لفظی مطلب ہمیشہ رہنے والی چیز ہوتا ہے۔۔۔۔۔ اَن پڑھ ضرور ہوں لیکن اتنا بھی اَن پڑھ نہیں ہوں۔۔۔۔۔ میرے ایک دوست ایک چیز ہوتی ہے جس کو کونٹیکسٹ(سیاق و سباق یا تناظر) کہا جاتا ہے۔۔۔۔۔ اب دیکھیں جب مَیں نے کونسٹینٹ کہا تھا تو ایک مخصوص سیاق و سباق میں کہا تھا۔۔۔۔۔ اب ذرا غور کریں کہ کہنے کو تو تبدیلی ہر معاملے میں آسکتی ہے لہٰذا پھر تو کبھی مستقبل کے بارے میں بات ہونی ہی نہیں چاہئے کیونکہ پھر مستقل تو کوئی بھی چیز نہیں ہے۔۔۔۔۔

    اقبال نے پہلے ہی کہہ دیا ہے۔۔۔۔۔ ثبات ایک تغیّر کو ہے زمانے میں۔۔۔۔۔

     اور شاہد صاحب نے، مادام نے اور زندہ رُود نے بھی میرے نکات کی اچھی خاصی تشریح کی۔۔۔۔۔ چلیں شاہد صاحب اور مادام کو باہر نکال دیتے ہیں کہ ہوسکتا ہے کہ آپ کا کہنا ہو کہ یہ دونوں تو ملٹری کیمپ کے افراد ہیں مگر زندہ رُود کو تو آپ اُس کیٹیگری میں بھی نہیں ڈالتے، زندہ رُود نے بھی وہی سمجھا جو میرا مطلب تھا۔۔۔۔۔

    اب مَیں کوئی برہَمن جوتشی تو ہوں نہیں جو اگلے دو سو سال کا زائچہ بنا کر دوں یا علمِ غیب پر بھی مکمل عبور رکھتا ہوں کہ آپ کو پانچ دس صدیوں بعد ہونے والے واقعات کھول کھول کر بیان کرنا شروع کردوں۔۔۔۔۔

    مگر خیر اصل سوال آپ ڈک کرگئے۔۔۔۔۔ اصل سوال یہ ہے۔۔۔۔۔

    آیا مستقبل قریب میں فوج کے دائرہِ اثر میں تبدیلی یعنی فوج بالادست کے بجائے زیردست ہوتی نظر آرہی ہے یا نہیں۔۔۔۔۔ 

    مگر تھوڑے دن پہلے آپ نے اِس سوال کا ایک جواب دیا تھا کہ جب تک پنجابی اپنی بے غیرتی نہیں چھوڑیں گے تب تک تبدیلی نہیں آئے گی۔۔۔۔۔ میرے خیال میں یہ صرف پنجابی کی بات نہیں ہے۔۔۔۔۔ میرے مشاہدے کے مطابق پاکستان کی مڈل کلاس بھی یہی چاہتی ہے۔۔۔۔۔ مَیں خود کراچی کا ہوں تو کراچی والوں کے عمومی مزاج کے بارے تھوڑا بہت کہہ سکتا ہوں کہ وہاں بھی یہی حال ہے۔۔۔۔۔

    اب آجاتے ہیں ملٹری پر تنقید کے معاملے پر۔۔۔۔۔

    قرار صاحب اتنا تو آپ مجھےضرور جانتے ہیں کہ محفوظ مقام پر رہ کر ڈرتا تو مَیں کسی سے نہیں ہوں۔۔۔۔۔

    وہ ایک کمینی دو سطری پوسٹ، جس سے مجھے ڈرانے کی دوسرے فورم کا کنگلا سیٹھ ناکام کوششیں کرتا رہتا ہے، تو آپ کو یاد ہوگی۔۔۔۔۔ بلکہ مَیں نے تو اُس سے بھی زیادہ خطرناک لکھا ہے۔۔۔۔۔ اور پاکستان کے تناظر میں مذہب پر لکھنا فوج پر تنقید کے حوالے سے کہیں زیادہ خطرناک ہے۔۔۔۔۔ بلکہ جیسا ایم کیو ایم اور الطاف حسین پر لکھا ہے وہ فوج پر تنقید کے مقابلے میں زیادہ خطرناک ہے۔۔۔۔۔ آپ چونکہ کراچی کے نہیں ہیں تو شاید علم نہیں ہے۔۔۔۔۔

    تو اتنی بات تو واضح ہے کہ چونکہ مَیں فوج پر اب کوئی زیادہ تنقید نہیں کرتا تو اِس کی وجہ کسی قسم کا خوف نہیں ہے۔۔۔۔۔

    البتہ کچھ وجوہات ضرور ہیں۔۔۔۔۔

    پہلی وجہ تو وہی ذہنی ارتقاء ہے جس کا تذکرہ اِس تحریر کے پہلے پیراگراف میں ہے۔۔۔۔۔ ویسے بھی تشخیص مکمل علاج کا ایک مرحلہ ہے۔۔۔۔۔ اب جب تشخیص ہوگئی تو پھر اگلا مرحلہ حل تجویز کرنے کا ہوتا ہے۔۔۔۔۔ یہ جو مَیں بار بار سیاستدانوں پر دباؤ ڈالنے کی بات کرتا ہوں تو وجہ یہی ہے کہ مَیں حل کی بات کرتا ہوں لیکن فورم کے سارے پٹواری و حق پرست و دیگر کا کام صرف یہ ہے کہ تشخیص کو لے لے کر بَین ڈالے جاؤ۔۔۔۔۔ ارے بھئی ٹھیک ہے ہفتہ میں ایک دو بار رو لیا کرو، آنکھیں بھی صاف ہوجائیں گی، رونے کے بعد نیند بھی اچھی آئے گی مگر روز ہی ایک جیسے بَین کی قوالی و جگالی۔۔۔۔۔ یار قرار یہ مَیں نہیں کرسکتا۔۔۔۔۔ بالکل نہیں کرسکتا۔۔۔۔۔ مَیں اِس قوالی و جگالی کیمپ کا حصہ کبھی بھی نہیں بننا چاہوں گا۔۔۔۔۔

    اور ویسے بھی اِس فورم کے صِفِ اول کے رودالی حضرات کا رونا کون سا سچی جمہوریت کے بارے میں ہے۔۔۔۔۔ ایک کو الطاف حسین کے بھتوں کا غم کھائے جارہا ہے، دوسرا میاں صاحب کی جدائی کے آنسو پی رہا ہے۔۔۔۔۔

    دوسری اہم وجہ۔۔۔۔۔

    جس ملک کو چھوڑ دیا، اپنی زندگی ایک نئے ملک میں ترتیب دے لی تو پھر یہ پیچھے مُڑ مُڑ کر پاکستان کے حالات پر آہیں بھرنے کی کوئی تُک مجھے سمجھ نہیں آتی۔۔۔۔۔ میرا کہنا ہے کہ اگر اتنا ہی پاکستان کے بارے میں خیال ہے تو مغربی ممالک میں اپنا سب کچھ(غیر ملکی شہریت سمیت) چھوڑ چھاڑ کر پاکستان منتقل ہوجاؤ تاکہ پاکستان میں جو مشکلات ہیں وہ آپ پر بھی بِیتیں اور اُن مشکلات کا فرسٹ ہینڈ اندازہ ہو تاکہ پھر جو آہیں نکلیں گی وہ یقیناً اثر رکھتی ہوں گی اور ضرور عرش پر پہنچیں گی۔۔۔۔۔ اب مغربی ممالک میں بیٹھ کر جمہوریت کا دفاع کیسے ہوتا ہے۔۔۔۔۔ اپنی آئی ڈی پر ایواٹار لگانے سے؟ ویسے تو مشن امپاسبل ہی لگتا ہے مگر شاید فورم کا کوئی ٹام کروز کرسکتا ہے۔۔۔۔۔

    خیر اگر آپ کو معلوم ہو تو مجھے بتا کر میرے علم میں بھی اِضافہ کریں۔۔۔۔۔

    تیسری وجہ۔۔۔۔۔ مجھے لگتا ہے کہ پاکستان کے لوگوں کا ایمان ہے کہ اللہ نے چار نہیں پانچ آسمانی کتابیں نازل کی ہیں۔۔۔۔۔ اور جو پانچویں آسمانی کتاب ہے، فوجی ڈنڈا شریف، اُس کی اہمیت سب سے زیادہ ہے۔۔۔۔۔ اِس کتاب میں زبان و بیان و تفسیر و معانی وغیرہ کا کوئی جھنجھٹ ہی نہیں ہے۔۔۔۔۔ جب چلتا ہے تو ہر ایک کو آسانی سے سمجھ آجاتا ہے کہ کیا بات ہورہی ہے اور کیا احکامات ہیں۔۔۔۔۔

    قرار مزاح سے قطع نظر ویسے بھی پاکستان اب ایک معنوں میں میرا اور آپ کا ملک نہیں رہا۔۔۔۔۔ یہ ہمارا سابقہ ملک ہے۔۔۔۔۔ بس یہی میرا اور آپ کا پاکستان سے ناطہ ہے۔۔۔۔۔ باقی سب کہانیاں ہیں۔۔۔۔۔ جو پاکستان میں رہنے والے اپنے لئے بہتر سمجھتے ہیں اُنہیں کرنے دو۔۔۔۔۔ اُن کے رنگ میں بھنگ ڈالنے سے پرہیز کرنا چاہئے۔۔۔۔۔

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by BlackSheep.
    #3
    unsafe
    Participant
    Offline
    • Advanced
    • Threads: 52
    • Posts: 882
    • Total Posts: 934
    • Join Date:
      8 Jun, 2020
    • Location: چولوں کی بستی

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    طاقت کیا ہے۔۔۔۔۔ پچھلے سال اِس پر بہت بات ہوچکی ہے اور مَیں وہی نکات مزید دُہرانا نہیں چاہتا۔۔۔۔۔ اور آپ بھی سمجھتے ہیں کہ طاقت کیا ہوتی ہے،  طاقت کی نفسیات کیا ہوتی ہے، طاقت کے ڈائنامکس کیا ہوتے ہیں اور طاقت ہاتھ میں رکھنے کے کیا ضروری تقاضے ہوتے ہیں۔۔۔۔۔ اور میرا گمان ہے کہ آپ بھی یہ معاملات سمجھتے ہیں۔۔۔۔۔ بس اتنا کہوں گا کہ طاقت ایک انتہائی بنیادی حقیقت ہے جس سے فرار ممکن نہیں ہے۔۔۔۔۔

    #5
    Guilty
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 0
    • Posts: 5287
    • Total Posts: 5287
    • Join Date:
      6 Nov, 2016

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    طاقت کیا ہے۔۔۔۔۔ پچھلے سال اِس پر بہت بات ہوچکی ہے اور مَیں وہی نکات مزید دُہرانا نہیں چاہتا۔۔۔۔۔ اور آپ بھی سمجھتے ہیں کہ طاقت کیا ہوتی ہے، طاقت کی نفسیات کیا ہوتی ہے، طاقت کے ڈائنامکس کیا ہوتے ہیں اور طاقت ہاتھ میں رکھنے کے کیا ضروری تقاضے ہوتے ہیں۔۔۔۔۔ اور میرا گمان ہے کہ آپ بھی یہ معاملات سمجھتے ہیں۔۔۔۔۔ بس اتنا کہوں گا کہ طاقت ایک انتہائی بنیادی حقیقت ہے جس سے فرار ممکن نہیں ہے۔۔۔۔۔

    بہت پیارا  کلپ ۔۔۔۔۔

    تعلیم سائنس پروفیسری ۔۔۔ پڑھے لکھوں کے لیئے سبق ہے ۔۔۔۔۔ وہ جس بھی خوش فہمی میں مبتلا زندہ رھیں ۔۔۔ ان کی کوئی اوقات  نہیں ۔۔۔۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    دنیا کا مشا ھدہ اور تجربہ ۔۔۔۔ثا بت کرتا ہے ۔۔۔۔ دنیا کی سب سے بڑی ۔۔۔ حقیقت ۔۔۔۔ طاقت ۔۔۔ پاور ۔۔۔۔ ہی ہوتی ہے ۔۔۔۔۔ باقی سب ڈائیلا گ ہوتے ہیں ۔۔۔۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by Guilty.
    #6
    Guilty
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 0
    • Posts: 5287
    • Total Posts: 5287
    • Join Date:
      6 Nov, 2016

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    ۔

    بلیک شیپ نے جتنی بھی تاولیں پیش کی ہیں ۔۔۔۔ سب جعلی ۔۔۔

    جب ملک ہی چھوڑ دیا

    میرا آپ کا ملک نہ رھا

    میں قوالی گروپ میں شامل نہیں ہونا چا ھتا ۔۔۔۔۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    ان سب تاویلوں اور بے وزن ۔۔۔۔۔ لفاظی کا ۔۔۔۔ سے اصلی چہرہ ۔۔۔ چھپا یا نہیں جا سکتا ۔۔۔۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    بلیک شیپ ایک ٹی پی کل ۔۔۔ بوٹ پالیشا ہے ۔۔۔ اور فوج پر تنقید کرنے سے موت پڑتی ہے ۔۔۔۔ اس میں جرآت بہادری نہیں کی ۔۔۔۔ ڈنکے کی چوٹ پر ۔۔۔ بتا سکے کہ ھاں یہ میرا زھن ہے ۔۔۔

    لیکن جھوٹی فرضی تاولیں دے کر ۔۔۔۔ فورم والوں ۔۔۔ کو گو لیاں دے رھا ۔۔۔۔۔۔

    یہ سیا ستدانوں خاص کر میاں نوازشریف ٹائپ عوامی سیا ستدانوں سے متعصب ہے ۔۔

    ۔ کیونکہ نواز شریف ٹائپ عوامی سیا ستدان اوپر  ویڈیو والے  ۔۔۔  ممکنه مقتول ۔۔۔ کی طرح پڑھا ئی کوکسی کھا تے میں نہیں لیتے ۔۔۔

    وہ بزنس کاروبار ۔۔۔ دولت کی طاقت ۔۔۔ سے ما لا  ما ل ہوتے ہیں ۔۔ ان کو تعلیم جیسی افسا نوی طاقت کی چندا ں ضرورت نہیں ہوتی ۔۔

    فوج یا ایسٹبلشمنٹ کی حما یت کرنے والوں کی دوطرح کی نفسیا ت ہوتی ہیں  ۔۔۔ وہ یا تو اکثر پیدا ئیشی طور پر ۔۔۔ بھارت هند و دشمنی زھنی بیماری میں مبتلا ہوتے ہیں ۔۔۔۔

    لہذا ان دشمنی زدہ بیمار زھن لوگوں کے اونلی چوائس فوج ہی ہوتی ہے ۔۔

    یا پھر ان کا پرابلم ۔۔۔۔ میاں نوازشریف کی شلوار قمیض سے الرجی ہوتی ہے ۔۔۔۔

    قصہ مختصر  کہ ۔۔۔ بلیک شیپ کی تمام جعلی تاویلیں ۔۔۔ صرف پا نی میں وٹے مارنے کی پریکٹس ہے ۔۔۔۔

    ورنہ ایک بوٹا چا ٹیا ۔۔۔۔ اپنے آپ کو چھپا نہ سکا ہے ۔۔۔ اس کی سوچ کے کپڑے کب کے اتر چکے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by Guilty.
    #7
    Shirazi
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 185
    • Posts: 2429
    • Total Posts: 2614
    • Join Date:
      6 Jan, 2017

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    BlackSheep Sahib

    Whatever you wrote here is common sense, power is power and morality is morality. Power is pragmatic and morality is ideal. Power trumps morality and what not. You and @nadan Jee are on same page when you blame politicians for over powering Generals. But let’s not ignore the simple fact Politicians derive power from masses. They don’t command armed troops, they command political groups. If masses don’t find anything wrong with Generals calling the shots Politicians can’t turn things around. The power dynamics that you highlighted is global. Why Generals don’t command same authority in India, U.K. or U.S. as they do in Pakistan or Egypt. It’s the political upbringing of masses. Congress didn’t win India freedom but at least they showed some resistance to British Raj. Americans won freedom through war of independence. That gave them opportunity to bring political awareness to masses and that in turn helped to keep armed men on back seats.

    The repeated anti establishment rants on these pages and other social media forums is part of that political awareness that we lacked. It will help push military back in barracks. On the contrary explaining power dynamics like you tried and blaming Politicians is nothing but defeatist mindset that accept this as reality. I couldn’t agree more with Qarar Sahib the Punjabis specifically and others in generally needs to overcome their begharti and call spade a spade. Until they realize and say military is not their savior but it exploits them things won’t change.

    One day we will be like India and rest of the developed world, where Generals won’t take over, seek extensions and won’t define foreign policy. They won’t head every civilian institution and their retirement won’t cost exchequer billions. We will be civilized country,

    Last but not the least, for us the first generation expats Pakistan is not our ex country. It is our country. The reason you and I spend time here, follow news, watch cricket, get frustrated on their social and economic problems, listen music, eat desi food …  we are out of Pakistan but Pakistan is NOT out of us. We are bit lucky unlike our fellow countrymen living in Pakistan,  we can express lot more freely be it religion or military. If if distance ourselves from our roots it will further delay reform process. The reforms that are inevitable.

    Iftikhar Chaudhry’s courts targeting few individuals politically questioned loyalties of dual nationals. In today’s world of economic immigrants it’s a joke. IK stood by courts in opposition but I was hoping sanity will prevail when he comes to power especially with his popularity among expats. Today you seem to be on same page as Iftikhar Chaudhry and military establishment on expats.

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by Shirazi.
    #8
    Ghost Protocol
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 158
    • Posts: 5232
    • Total Posts: 5390
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    اوپر لکھی گئی بنو ملحدین کی آیتوں کا خلاصہ

    اور اے ایمان والو – جب کوئی قصائی چھڑی لے کر کالی بھیڑ کی طرف لپکے تو تم اپنا راستہ ناپو

    تب تک کہ جب قصائی اپنی بےغیرتی سے باز نہیں آ جاتا

    بس کہ یہ جوتا چٹائی تم پر فرض کر دی گئی ہے

    :cwl: :cwl: :cwl: :cwl: :cwl:

    جیو جی بھائی،
    یہ بنو ملحدین نہیں بلکہ بنو چٹو ئیین کی آیتیں ہیں بلکہ التجا ہے کہ
    قرار صاحب تینوں جوتوں دا واسطہ ہے کہ ہک واری میرے کونسٹینٹ نوں من لے ورنہ میری منجھی تلے ڈانگ پھر جائے گا (جیسے ابھی تک پھرا نہیں ہے )

    :cwl: :cwl: :cwl:

    #9
    Ghost Protocol
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 158
    • Posts: 5232
    • Total Posts: 5390
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    On a serious note, below picture accurately depicts the mindset behind this

    :serious: :serious: :serious:

    garbage.

    #10
    shami11
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 739
    • Posts: 8779
    • Total Posts: 9518
    • Join Date:
      12 Oct, 2016
    • Location: Pakistan

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    بہت عرصے پہلے یہ بات کہی تھی یا لکھی تھی ، بلیک شیپ کی تحریروں میں وہ جادو نہی رہا جو پڑہنے والے کو اپنے زیر اثر کر لیتا تھا ، لگتا ہے یہ زبردستی کسی نے کنپٹی پر رکھ کر اس سے لکھوائی ہے اور سنائی دو یا تین بندوں کو کروائی جا رہی ہے

    ٹائٹل دیکھ کر مجھے ایسا لگا جیسے بلیک شیپ صاحب کا ضمیر جاگ گیا لیکن ان کا باجوہ شریف ابھی تک اٹین شین ہے

    یہ بات آپ کی درست ہے ، ہماری پوری قوم کو اپنا نجات دہندہ سمجھتی ہے ، کراچی میں نالوں کی صفائی پر ایسے خوبصورت ارشادات دیکھنے کو ملے کے مت پوچھیں ، لیکن انہیں یہ نہی پتا یہ تین دن نالا صفائی کراچی والوں کو سوا ارب کی پڑی ہے

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by shami11.
    #11
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    You and @nadan Jee are on same page when you blame politicians for over powering Generals. But let’s not ignore the simple fact Politicians derive power from masses. They don’t command armed troops, they command political groups. If masses don’t find anything wrong with Generals calling the shots Politicians can’t turn things around. The power dynamics that you highlighted is global. Why Generals don’t command same authority in India, U.K. or U.S. as they do in Pakistan or Egypt.

    شیرازی صاحب۔۔۔۔۔۔

    بات دراصل یہ ہے کہ آپ کم کم ہی فورم پر آتے ہیں تو شاید آپ کو اِس معاملے میں میرے خیالات سے مکمل آگاہی نہ ہو۔۔۔۔۔

    مَیں پاکستان کے حالات کی سب سے زیادہ ذمہ داری وہاں رہنے والے عوام پر ڈالتا ہوں اور میرا یہ موقف آج کا نہیں بلکہ سالوں پرانا ہے۔۔۔۔۔

    کوئی دو سال پہلے مَیں نے باقاعدہ اِس موضوع پر ایک صفحہ بنایا تھا جس کا مرکزی خیال یہی تھا کہ ملٹری اسٹیبلشمنٹ کو آخر طاقت ملتی کہاں سے ہے۔۔۔۔۔

    ویسے آپ کو بھی اُس صفحہ پر لکھنے کی دعوت بھی دی گئی تھی۔۔۔۔۔

    یہ مادام کا موقف رہا ہے کہ اسٹیبلشمنٹ کو طاقت پاور ہنگری سیاستدان فراہم کرتے ہیں۔۔۔۔۔

    آپ نے بلاوجہ ہی مجھے مادام سے ساتھ نتھی کردیا۔۔۔۔۔ حد ہی کردی آپ نے تو۔۔۔۔۔

    :facepalm: ;-) :facepalm: ™©

    ہماری پیاری اسٹیبلشمنٹ

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by BlackSheep.
    #12
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    On the contrary explaining power dynamics like you tried and blaming Politicians is nothing but defeatist mindset that accept this as reality.

    شیرازی صاحب۔۔۔۔۔

    میرا آپ کو مخلصانہ مشورہ ہے کہ آپ پہلے میرا موقف اچھی طرح جان لیں پھر میرے خیالات پر سوالات اٹھائیں۔۔۔۔۔

    اور یہ موقف ہے سیاستدانوں(صرف پاکستان کے ہی نہیں بلکہ دنیا بھر کے سیاستدان) کے بارے میں۔۔۔۔۔

    آپ چاہیں تو مندرجہ ذیل پوسٹ کو کِلک کرکے اِس موضوع پر میرے خیالات مزید جان سکتے ہیں۔۔۔۔۔

    میرا اپنا نظریہ یہ ہے کہ سیاستدان چاہے پاکستان کے ہوں یا برطانیہ امیریکہ فرانس کے، ایک ہی تھان کے کٹے ہوئے ہوتے ہیں، یہ صرف اُس ملک کے لوگوں کا دباؤ ہوتا ہے جو برطانیہ امیریکہ فرانس کے رہنماؤں کو ویسے ہی کھل کر کاروائیاں ڈالنے سے روکتا ہے جیسی کاروائیاں پاکستان کے سیاستدان آرام سے کرپاتے ہیں۔۔۔۔۔

    اور سیاست کے بارے میں میرا موقف یہ ہے۔۔۔۔۔

    سیاست عموماً اقتدار(طاقت) حاصل کرنے اور اُس اقتدار(طاقت) کو برقرار رکھنے کا نام ہے۔۔۔۔۔

    اب اگر آپ کو میرے موقف سے اختلاف ہے تو اپنی گذارشات پیش کریں۔۔۔۔۔

    ;-) :) ;-) ™©

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by BlackSheep.
    #13
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    Why Generals don’t command same authority in India, U.K. or U.S. as they do in Pakistan or Egypt.

    شیرازی صاحب۔۔۔۔۔

    اب فورم کے جمہوریت پرستوں کے نزدیک پاکستانی ملٹری کے سیاست میں بالادست ہونے کی ایک وجہ یہ ہے کہ پاکستانی ملٹری کے پاس ہتھیار ہیں۔۔۔۔۔

    لہٰذا اِس نرالی وجہ کے حوالے سے دیکھا جائے تو لگتا کچھ یوں ہے کہ انڈیا، برطانیہ اور امیریکہ کی افواج کے پاس ہتھیار نہیں ہوتے۔۔۔۔۔ شاید یہ وجہ ہو جو اُن ملکوں کے جنرلز وہ اتھارٹی نہیں رکھتے جو پاکستانی جنرلز کے پاس ہے۔۔۔۔۔

    :cwl: ;-) :cwl: ™©

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by BlackSheep.
    #14
    Jack Sparrow
    Participant
    Offline
    • Advanced
    • Threads: 14
    • Posts: 779
    • Total Posts: 793
    • Join Date:
      3 Dec, 2016

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    شیرازی شیرازی صاحب۔۔۔۔۔ اب فورم کے جمہوریت پرستوں کے نزدیک پاکستانی ملٹری کے سیاست میں بالادست ہونے کی ایک وجہ یہ ہے کہ پاکستانی ملٹری کے پاس ہتھیار ہیں۔۔۔۔۔ لہٰذا اِس نرالی وجہ کے حوالے سے دیکھا جائے تو لگتا کچھ یوں ہے کہ انڈیا، برطانیہ اور امیریکہ کی افواج کے پاس ہتھیار نہیں ہوتے۔۔۔۔۔ اِس وجہ اُن ملکوں کے جنرلز وہ اتھارٹی نہیں رکھتے جو پاکستانی جنرلز کے پاس ہے۔۔۔۔۔ :cwl: ;-) :cwl: ™©

    بلیک شیپ صاحب

    ایک کہاوت ہے جب عورت کا ناڑا غیر كے لئے ایک بار کھل جائے تو دوبارہ بند نہیں ہوتا. ہماری فوج کا ناڑا بھی کھل چکا ہے جو بند ہونے والا نہیں ہے
    :serious: انڈیا، برطانیہ اور امریکا کی فوج مالک سے وفادار ہے . ناڑا کھولنے کا سوچ بھی نہیں سکتی

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by Jack Sparrow.
    #15
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    بلیک شیپ صاحب

    ایک کہاوت ہے جب عورت کا ناڑا غیر كے لئے ایک بار کھل جائے تو دوبارہ بند نہیں ہوتا. ہماری فوج کا ناڑا بھی کھل چکا ہے جو بند ہونے والا نہیں ہے

    :serious:

    انڈیا، برطانیہ اور امریکا کی فوج مالک سے وفادار ہے . ناڑا کھولنے کا سوچ بھی نہیں سکتی

    جیک اسپیرو صاحب۔۔۔۔۔

    کیا آپ یہ کہنا چاہتے ہیں کہ فورم کے کچے ذہن والے جمہوریت پسندوں کا جو یہ موقف ہے کہ پاکستان کی فوج کے پاس ہتھیار ہیں اِس بناء پر وہ بالادست ہے، وہ غلط ہے اور وجہ ہتھیار نہیں ہیں۔۔۔۔۔

    خیال رہے مَیں نے اُس پوسٹ میں صرف فورم کے بھونپوؤں کا موقف لکھا ہے۔۔۔۔۔ اپنا موقف نہیں دیا ہے۔۔۔۔۔

    #15
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    ہماری فوج کا ناڑا بھی کھل چکا ہے جو بند ہونے والا نہیں ہے

    کونسٹینٹ؟

    ;-) :cwl: ;-) ™©

    #16
    GeoG
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 83
    • Posts: 5543
    • Total Posts: 5626
    • Join Date:
      12 Oct, 2016

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    شیرازی صاحب۔۔۔۔۔ اب فورم کے جمہوریت پرستوں کے نزدیک پاکستانی ملٹری کے سیاست میں بالادست ہونے کی ایک وجہ یہ ہے کہ پاکستانی ملٹری کے پاس ہتھیار ہیں۔۔۔۔۔ لہٰذا اِس نرالی وجہ کے حوالے سے دیکھا جائے تو لگتا کچھ یوں ہے کہ انڈیا، برطانیہ اور امیریکہ کی افواج کے پاس ہتھیار نہیں ہوتے۔۔۔۔۔ شاید یہ وجہ ہو جو اُن ملکوں کے جنرلز وہ اتھارٹی نہیں رکھتے جو پاکستانی جنرلز کے پاس ہے۔۔۔۔۔ :cwl: ;-) :cwl: ™©

    یار بلیک شیپ صاحب ایک کونستنٹ کو ثابت کرنے کے چکر میں آپ کی تو سچی میں مت وجی گئی ہے

    جب ٹرپل ون بریگیڈ دروازے پھلانگ کر اندر جاتی ہے تو ان کے ہاتھوں میں جو ہتھیارہوتے ہیں وہ مزاحمت ہو تو چلنے کی صلاحیت بھی رکھتے ہیں

    اور ایسی دھاک صرف پاکستانی نہیں مصری جرنلوں نے بھی کسی حد تک بنا رکھی ہے

    #17
    GeoG
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 83
    • Posts: 5543
    • Total Posts: 5626
    • Join Date:
      12 Oct, 2016

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    کونسٹینٹ؟ ;-) :cwl: ;-) ™©

    اے بندا بریزییر دے پلاسٹک دی غلیل ای بنانے گا

    :cwl: :cwl: :cwl:

    #18
    BlackSheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 16
    • Posts: 2688
    • Total Posts: 2704
    • Join Date:
      11 Feb, 2017
    • Location: عالمِ غیب

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    ایم بخاری نے کمال کا لکھا تھا۔۔۔۔۔

    When I post here, I expect a certain level of original thinking from someone before I respond to them. What I do not expect to do is to give education. You have universities for that.

    ;-) :facepalm: ;-) ™©

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by BlackSheep.
    #19
    Bawa
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 154
    • Posts: 15432
    • Total Posts: 15586
    • Join Date:
      24 Aug, 2016

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    فوجیوں کے بوٹ چاٹنے والے تو بہت دیکھے ہیں لیکن فوجیوں کے بوٹ چاٹنے کا دفاع جتنی بے شرمی، بے غیرتی اور ڈھٹائی سے فکری بیواؤں کی نائکہ کو کرتے دیکھا ہے وہ قابل تحسین ہے

    :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap: :clap:

    #20
    unsafe
    Participant
    Offline
    • Advanced
    • Threads: 52
    • Posts: 882
    • Total Posts: 934
    • Join Date:
      8 Jun, 2020
    • Location: چولوں کی بستی

    Re: طاقت، اخلاقیات اور کونسٹینٹ

    پٹواریوں  کی نائکہ آج کل بہت مستی میں خدا خیر کرے جانے اب کون سا نیا مجرا مارکیٹ میں لانے والی ہے 

    • This reply was modified 3 months, 2 weeks ago by unsafe.
Viewing 20 posts - 1 through 20 (of 217 total)

You must be logged in to reply to this topic.

Navigation

Do NOT follow this link or you will be banned from the site!