Thread: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

Home Forums Hyde Park / گوشہ لفنگاں #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

This topic contains 10 replies, has 6 voices, and was last updated by  SaleemRaza 2 months, 4 weeks ago. This post has been viewed 282 times

Viewing 11 posts - 1 through 11 (of 11 total)
  • Author
    Posts
  • #1
    Ghost Protocol
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 138
    • Posts: 4463
    • Total Posts: 4601
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    برطانوی پولیس نے لندن برج حملے میں دو افراد کو ہلاک اور تین کو زخمی کرنے والے کا نام عثمان خان بتایا ہے جنھیں اس سے قبل شہر کی سٹاک ایکسچینج پر حملے کی منصوبہ بندی کرنے کے الزام میں جیل بھیجا گیا تھا۔

    28 برس کے عثمان خان مشروط ضمانت پر جیل سے باہر تھے جب انھوں نے جمعے کو لندن برج پر چاقو کے حملے سے دو افراد کو قتل جبکہ تین کو زخمی کر دیا۔

    اس کے بعد انھیں مسلح پولیس اہلکاروں نے گولیاں مار کر ہلاک کر دیا۔ بی بی سی کو ملنے والی معلومات کے مطابق جیل سے گذشتہ دسمبر میں مشروط ضمانت پر رہا ہونے کے بعد وہ سٹیفورڈ شائر میں مقیم تھے۔

    سنہ 2012 میں انھیں ‘عوام کی حفاظت’ کی غرض سے غیر معینہ مدت کے لیے قید کی سزا سنائی گئی تھی جس کی کم سے کم مدت آٹھ برس تھی۔

    اس سزا کے باعث انھیں جیل میں آٹھ برس سے زیادہ رکھا جا سکتا تھا۔ تاہم سنہ 2013 میں عدالت نے ان کی سزا کو ختم کر کے ایک نئی سزا دی جس کے مطابق، انھیں 16 برس کی سزا دی گئی جس میں سے عثمان کو جیل میں اس کی آدھی سزا کاٹنی تھی۔

    سزا سناتے وقت اس وقت کے لارڈ جسٹس لیویسن کا کہنا تھا کہ ’اس حوالے سے ایک بحث یہ بھی کی جا رہی ہے کہ جسے بھی اس طرح کے جرم میں سزا دی جاتی ہے اس کی اس حوالے سے معاونت کی جانی چاہیے تاکہ اسے بحفاظت رہا کیا جا سکے۔‘

    ان کا مزید کہنا تھا کہ ’اس حوالے سے کوئی بھی فیصلہ پیرول بورڈ پر چھوڑنا بہتر ہے تاکہ وہ اس پر رہائی سے پہلے غور کر سکیں۔

    سٹوک-آن-ٹرینٹ میں پیدا ہونے والے عثمان کو آٹھ افراد کے ساتھ جیل میں ڈالا گیا تھا۔‘

    یہ افراد شدت پسند تنظیم القاعدہ کے نظریے سے متاثر تھے اور برطانوی خفیہ تنظیم ایم آئی فائیو ان پر نظر رکھے ہوئے تھی۔

    یہ نو افراد اس سے قبل بھی متعدد دہشگرد حملوں کی منصوبہ بندی کا حصہ رہے ہیں جن میں سے ایک لندن سٹاک ایکسچینج میں پائپ بم رکھنا بھی تھا۔

    تصویر کے کاپی رائٹGETTY IMAGESImage captionحملے کے بعد پولیس کے اہلکار
    عثمان اور سٹوک میں ان کے دیگر ساتھیوں کو شہر کے مختلف علاقوں میں حملے کرنے کے بارے میں بات کرتے ہوئے سنا گیا تھا۔ انھوں نے شہر کے مختلف ٹوائلٹس، پبز اور کلبز میں دھماکہ خیز مواد رکھنے کے بارے میں کی تھی۔

    ایک موقع پر عثمان کو القاعدہ میگزین سے پائپ بم بنانے کی ترکیب حاصل کرنے کے حوالے سے بھی گفتگو کرتے ہوئے سنا گیا تھا۔

    یہ افراد بیرونِ ملک ایک ایسا مدرسہ بنانے کے لیے فنڈز بھی بھیج رہے تھے جہاں اسلحے کو استعمال کرنے کی ٹریننگ ہونی تھی جس میں بعد میں خود عثمان نے بھی شریک ہونا تھا۔

    عدالت نے اپنے فیصلے میں لکھا کہ ’اس گروہ نے متعدد منصوبے بنا رکھے تھے جن میں سے ایک پاکستان میں ایک مدرسے کے قیام کے لیے فنڈز اکھٹے کرنا تھا جہاں انھوں نے خود بھی ٹریننگ حاصل کرنا تھی اور دوسروں کو بھی بھرتی کرنا تھا۔‘

    ان کے منصوبوں میں ڈاک کے ذریعے بم بھیجنے، برطانیہ میں نسل پرست گروہوں کے استعمال میں آنے والے گھروں، کسی معروف شخصیت کو نشانہ بنانا اور ممبئی کی طرز کا حملہ کرنا شامل تھا۔‘

    اس فیصلے میں مزید لکھا گیا تھا کہ عثمان کو تربیت اور دہشتگردی کے حوالے سے تجربہ دینے کے لیے طویل مدت کے لیے بھیجا جانا تھا۔

    فیصلے میں یہ بھی لکھا گیا تھا کہ ‘اگر وہ برطانیہ واپس آئے تو وہ دہشتگری میں تربیت یافتہ اور تجربہ کار ہو چکے ہوتے۔‘

    ’وہ ایسے دیگر افراد سے بھی ملے جو برطانیہ میں چھوٹے پیمانے پر حملے کرنے کے خواہاں تھے تاہم انھیں احساس ہوا کہ وہ جہاد کے معاملے میں ان سے زیادہ سنجیدہ ہیں۔‘

    سٹوک سے تعلق رکھنے والے ایک اور شخص کو عثمان کے ساتھ جیل میں رکھا گیا تھا۔ ان کا نام محب الرحمان تھا اور انھیں رہا ہونے کے بعد دہشت گردی کا ایک اور منصوبہ بنانے کے جرم میں دوبارہ قید سزا سنائی گئی تھی۔

    #2
    Ghost Protocol
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 138
    • Posts: 4463
    • Total Posts: 4601
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    یو کے خصوصا لندن میں مقیم دوستوں کے پاس اس حوالے سے مزید معلومات ہوں تو فورم سے شیئر کرسکتے ہیں

    #3
    Atif
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 156
    • Posts: 7372
    • Total Posts: 7528
    • Join Date:
      15 Aug, 2016

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    چیک کرو مومن بھائی بھی دو دن سے فورم سے غائب ہیں۔

    مومن

    #4
    Ghost Protocol
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 138
    • Posts: 4463
    • Total Posts: 4601
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    چیک کرو مومن بھائی بھی دو دن سے فورم سے غائب ہیں۔ مومن

    مومن بھائی جرمنی میں ہوتے ہیں اور برلن سیل کا حصہ ہیں

    :bigsmile: :bigsmile: :bigsmile:

    #5
    Bawa
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 147
    • Posts: 13117
    • Total Posts: 13264
    • Join Date:
      24 Aug, 2016

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    یہ دہشتگرد آزاد کشمیر میں اپنی آبائی زمینوں پر فوج کے زیر انتظام ایک دہشتگردی کا کیمپ بھی چلاتا رہا ہے

    ہمیں اپنی فوج پر فخر ہے

    اس فوج کے پالتو دہشتگرد اب پوری دنیا میں پاکستان کا نام “روشن” کر رہے ہیں

    :jhanda: :jhanda: :jhanda:

    #6
    shami11
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 701
    • Posts: 7809
    • Total Posts: 8510
    • Join Date:
      12 Oct, 2016
    • Location: Pakistan

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    گھوسٹ بھائی – اس سانحہ کی خبر ایک دم پورے شہر میں پھیل گئی تھی ، بی بی سی اور سکائی نیوز والوں نے تو سب کچھ چھوڑ کر اس پر رپورٹنگ شروع کر دی تھی ، آس پاس ایک آدھ میل کے حصار دفاتر کو سیل کر دیا تھا ، نہ کوئی اندر جا سکتا تھا اور نہ کوئی باہر ، لندن برج سٹیشن کو بند کر دیا گیا تھا

    سب سے اہم خبر جو جیو والوں نے دی وہ کچھ اس طرح سے تھی ، میاں نواز شریف میڈیکل چیک ایپ کے لئے سینٹ تھامس اینڈ گائیز ہسپتال روانہ ہونے لگے تھے مگر اتھارٹیز نے انہیں منع کر دیا کے دہشت گرد حملہ ہو گیا ہے آپ یہاں مت آئیں

    #7
    Ghost Protocol
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Professional
    • Threads: 138
    • Posts: 4463
    • Total Posts: 4601
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    Usman Khan profile: terrorist who wanted to bomb London Stock Exchange

    Usman Khan, the suspect shot dead in the 29 November 2019 terror attack near London Bridge, had been released from jail after being convicted of terror offences, including plotting to attack the London Stock Exchange in 2010.

    Khan was part of a gang of nine extremists from Stoke-on-Trent, Cardiff and London who were sentenced in February 2012 at Woolwich crown court. He had planned to establish a “terrorist military training facility” on land owned by his family in Kashmir, according to sentencing remarks.

    Khan, at 19, was the youngest of the group. In his sentencing remarks Mr Justice Wilkie said Khan and two others were “more serious jihadis” than the others.

    Play Video
    2:23
    How the London Bridge terror attack unfolded – video report
    threat but this condition was later lifted.

    Khan was originally classed as never to be released unless deemed no longer a threat but this condition was later lifted.

    Advertisement

    He was freed in licence in December 2018.

    Wilkie said Khan and his co-accused Nazam Hussain and Mohammed Shahjahan were planning to fund and establish the terrorist training school, with Khan and Hussain planning to leave the UK in January 2011 to train.

    Khan appealed against the decision in 2013 before Lord Justice Leveson, sitting with Mr Justice Mitting and Mr Justice Sweeney. It was decided that his sentence would go from 18 to 16 years, along with five-year extended licence periods.

    The court of appeal judgment said: “The groups were clearly considering a range of possibilities including fundraising for the establishment of a military training madrasa in Pakistan, where they would undertake training themselves and recruit others to do likewise, sending letter bombs through the post, attacking public houses used by British racist groups, attacking a high-profile target with an explosive device and a Mumbai-style attack.”

    Khan’s lawyer, Joel Bennathan, said at the time of the offence his client was 19. Notes from the appeal hearing say: “Mr Bennathan put the matter on behalf of Khan in this way. At the time of the offence, he was a 19-year-old, whose ambition was to bring sharia law to Pakistan-controlled Kashmir, his ancestral home. The madrasa had not been built (and there was no evidence that there was any real funding to build it); he had no access to terrorist training and it was highly unrealistic to suppose that the authorities in Pakistan would allow a teenager from Stoke to impose sharia law or run a training school for terrorists.”

    Guardian Today: the headlines, the analysis, the debate – sent direct to you

    Read more
    It is also noted: “Conversation about bombing public houses in Stoke (in any event, not included within the allegation in the indictment) was no more than angry talk within some four minutes of young men responding to racist incidents in Stoke.”

    In a July 2013 report the independent reviewer of terrorism wrote that Khan was one of three men from Stoke who had travelled to Pakistan’s federally administered tribal areas (Fata) and planned to fund, construct and take part in a terrorist training camp in Kashmir, with a view to carrying out terrorist acts in the future. They were part of a group that had copies of the al-Qaida English-language extremist magazine Inspire and had considered putting letter bombs in the post.

    Usman Khan in a police mugshot from the time of his original arrest. Photograph: West Midlands Police/PA
    The extremists talked about setting off a pipe bomb in the toilets of the London Stock Exchange, as well as in pubs in Stoke, the Woolwich court heard. A handwritten target list belonging to the group listed the names and addresses of the then London mayor, Boris Johnson, the Dean of St Paul’s Cathedral, two rabbis, the US embassy in London and the stock exchange.

    Group members were bugged and heard claiming that fewer than 100,000 Jews died in the Holocaust and talking about how Hitler had been on the same side as the Muslims because he understood that “the Jews were dangerous”.

    Khan’s then home in Persia Walk, Stoke-on-Trent, was bugged as he discussed plans for the firearms training camp, which was to be disguised as a legitimate madrasa, an Islamic religious school, Woolwich court heard. Discussing terrorist fundraising, he said Muslims in Britain could earn in a day what people in Kashmir, a disputed region divided between Pakistan and India, are paid in a month. He went on: “On jobseeker’s allowance we can earn that, never mind working for that.”

    The sentencing judge, Wilkie, said the gang embarked on a “serious, long-term venture in terrorism” that could also have resulted in atrocities in Britain. He noted: “It was envisaged by them all that ultimately they and the other recruits may return to the UK as trained and experienced terrorists available to perform terrorist attacks in this country.”

    The men were mostly British citizens apart from two born in Bangladesh. The Met said at the time that the operation to round up the gang involved 1,000 police and staff at its height.

    #8
    Believer12
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 345
    • Posts: 7866
    • Total Posts: 8211
    • Join Date:
      14 Sep, 2016

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    یہ لوگ جب کسی ترقی یافتہ سوسائیٹی میں رہتے ہیں تو اپنی جہالت اور کم مائیگی کے احساس کی وجہ سے بھی دھشت گردی پر اتر آتے ہیں تاکہ کسی طرح ہی سہی لوگوں کو متوجہ توکریں، ایک مخصوص گروپ سے تعلق رکھنے والے یہ لوگ سب کی پہچان میں رہتے ہیں، اس کتے کے پتر نے بھی مرنا تھا تو پل سے چھلانگ لگا دیتا مگر راہ چلتے راہ گیروں پر خنجر زنی کر کے جانے کونسی منزل کا حصول چاہتا تھا

    پولیس کی نرمی کی وجہ سے بھی ایسے واقعات  رونما ہوتے ہیں انہیں نارمل لوگوں کے ساتھ رکھنا بھی سنگین غلطی ہے ہوسکتا ہے ، ایک الیکٹرانک ڈیوائس پہنانے سے لوگ محفوظ نہیں ہوجاتے یہ کسی ہمساے پر حملہ کرکے اس کی فیملی مار دے تو پولیس کیا کرلے گی۔ لندن برج جو ٹورسٹ ایریا ہے اور کئی واقعات کے بعد اب وہاں سخت سیکیورٹی ہر وقت موجود رہتی ہے پولیس کی کاروای سے پہلے یہ س بندوں کو خنجر مار چکا تھا جن میں سے دو مر گئے اور کئی زخمی ہیں

    #9
    SaleemRaza
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 669
    • Posts: 12083
    • Total Posts: 12752
    • Join Date:
      13 Oct, 2016
    • Location: سہراب گوٹھ ۔

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    یہ لوگ جب کسی ترقی یافتہ سوسائیٹی میں رہتے ہیں تو اپنی جہالت اور کم مائیگی کے احساس کی وجہ سے بھی دھشت گردی پر اتر آتے ہیں تاکہ کسی طرح ہی سہی لوگوں کو متوجہ توکریں، ایک مخصوص گروپ سے تعلق رکھنے والے یہ لوگ سب کی پہچان میں رہتے ہیں، اس کتے کے پتر نے بھی مرنا تھا تو پل سے چھلانگ لگا دیتا مگر راہ چلتے راہ گیروں پر خنجر زنی کر کے جانے کونسی منزل کا حصول چاہتا تھا پولیس کی نرمی کی وجہ سے بھی ایسے واقعات رونما ہوتے ہیں انہیں نارمل لوگوں کے ساتھ رکھنا بھی سنگین غلطی ہے ہوسکتا ہے ، ایک الیکٹرانک ڈیوائس پہنانے سے لوگ محفوظ نہیں ہوجاتے یہ کسی ہمساے پر حملہ کرکے اس کی فیملی مار دے تو پولیس کیا کرلے گی۔ لندن برج جو ٹورسٹ ایریا ہے اور کئی واقعات کے بعد اب وہاں سخت سیکیورٹی ہر وقت موجود رہتی ہے پولیس کی کاروای سے پہلے یہ س بندوں کو خنجر مار چکا تھا جن میں سے دو مر گئے اور کئی زخمی ہیں

    نہائت ہی افوس کا مقام ہے ۔۔ان جیسے لوگوں کی وجہ سے معاشرے زوال پذیر ہوتے ہیں ۔۔۔اب تو کوئی لندن برج پر جیب سے سگریٹ نکالنے کے لیے ہاتھ ڈالے تو لوگ یہ سمجھ کر دوڑ لگا دیتے ہیں کہہ یہ جیب سے چاقو نکالنے لگا ہے ۔۔۔۔۔۔چلو کم از کم ایک بد بخت کی کمی تو ہوئی ہے ۔۔۔۔۔۔

    #10
    Believer12
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 345
    • Posts: 7866
    • Total Posts: 8211
    • Join Date:
      14 Sep, 2016

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    نہائت ہی افوس کا مقام ہے ۔۔ان جیسے لوگوں کی وجہ سے معاشرے زوال پذیر ہوتے ہیں ۔۔۔اب تو کوئی لندن برج پر جیب سے سگریٹ نکالنے کے لیے ہاتھ ڈالے تو لوگ یہ سمجھ کر دوڑ لگا دیتے ہیں کہہ یہ جیب سے چاقو نکالنے لگا ہے ۔۔۔۔۔۔چلو کم از کم ایک بد بخت کی کمی تو ہوئی ہے ۔۔۔۔۔۔

    لندن برج اندر گراونڈ ٹرین پر مجھے کوی بیس منٹ کی دوری پر ہے اور ابھی دو تین ہفتے پہلے میں لندن برج سے نیچے اتر کر دریا کے کنارے چہل قدمی فرماتا ہوا دو تین میل تک نکل گیا تھا، اتنا مسحور کن دریا کا کنارہ ہے کہ بندہ کھو جاتا ہے، اب اس پل پر جاتے ہوے ڈر لگتا ہے کہ کوی دھشت گرد نہ  مارے تو ڈر کے مارے کوی گورا ہی نہ کڈ مارے، لندن برج پر ہی پہلے پیدل چلنے والوں پر وین چڑھا کر کافی لوگوں و کچلتے ہوے بورو مارکیٹ گئے تھے جو پل کے کونے پر ہے جس کی سڑکوں پر دھشت گرد چاقو لہراتے لوگوں کو مار رہے تھے اور آٹھ دس بندے پھڑکا کر پھر گولیوں کا نشانہ بنے، یہ تاریخی علاقہ لندن کا حسن بھی ہے اور دھشت گردی کا نشانہ بھی

    کبھی آو اکٹھے چلتے ہیں؟

    :serious:

    • This reply was modified 2 months, 4 weeks ago by  Believer12.
    #11
    SaleemRaza
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 669
    • Posts: 12083
    • Total Posts: 12752
    • Join Date:
      13 Oct, 2016
    • Location: سہراب گوٹھ ۔

    Re: #LondonBridge: لندن برج پر چاقو سے حملہ کرنے والا عثمان خان کون تھا؟

    لندن برج اندر گراونڈ ٹرین پر مجھے کوی بیس منٹ کی دوری پر ہے اور ابھی دو تین ہفتے پہلے میں لندن برج سے نیچے اتر کر دریا کے کنارے چہل قدمی فرماتا ہوا دو تین میل تک نکل گیا تھا، اتنا مسحور کن دریا کا کنارہ ہے کہ بندہ کھو جاتا ہے، اب اس پل پر جاتے ہوے ڈر لگتا ہے کہ کوی دھشت گرد نہ مارے تو ڈر کے مارے کوی گورا ہی نہ کڈ مارے، لندن برج پر ہی پہلے پیدل چلنے والوں پر وین چڑھا کر کافی لوگوں و کچلتے ہوے بورو مارکیٹ گئے تھے جو پل کے کونے پر ہے جس کی سڑکوں پر دھشت گرد چاقو لہراتے لوگوں کو مار رہے تھے اور آٹھ دس بندے پھڑکا کر پھر گولیوں کا نشانہ بنے، یہ تاریخی علاقہ لندن کا حسن بھی ہے اور دھشت گردی کا نشانہ بھی کبھی آو اکٹھے چلتے ہیں؟ :serious:

    ہاں میں بھی کافی عرصے سے پروگرام بنا رہا تھا  ساتھ الطاف بھائی کو بھی مل لوں گا اور آپکو بھی

    پر پھر یہ نہ گاتے پھرنا ۔۔

    دشمن نہ کرے دوست نے وہ کام کیا ہے

    مطلب  دریا کے ٹھنڈے ٹھار پانی میں دھکا دے دیا ہے

Viewing 11 posts - 1 through 11 (of 11 total)

You must be logged in to reply to this topic.

Navigation

Do NOT follow this link or you will be banned from the site!