Thread: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

Home Forums Science and Technology موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

This topic contains 17 replies, has 6 voices, and was last updated by  bluesheep 3 weeks, 3 days ago. This post has been viewed 662 times

Viewing 18 posts - 1 through 18 (of 18 total)
  • Author
    Posts
  • #1
    bluesheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Advanced
    • Threads: 10
    • Posts: 176
    • Total Posts: 186
    • Join Date:
      7 Dec, 2018
    • Location: Pindi HQ

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    ایک دوسرے تھریڈ میں نائن اےلیون کی سازشی مفروضوں پر بات ہورہی تھی، میں اس تھریڈ میں ایک ایسا ہی نظریہ پیش کرنا چاہتا ہوں، لوگ ان چیزوں پر کیوں یقین کرتے ہیں یہ انسانی نفسیات کا ایک بہت اہم اور دلچسپ موضوع ہے لیکن چند چیزیں ایسی ضرور ہیں جو نو گیارہ کی واقع میں ایسی ہیں جو آپ کو ایک لمحے کیلئے اپنی طرف ضرور متوجہ کرتی ہیں، میں نے بھی سالوں یو ٹیوب پر سینکڑوں ویڈیو دیکھی ہونگی اور کچھ پر ہنسی آئ اور کچھ پر افسوس ہوا، کچھ پر غیر یقینی کی کیفیت تھی اور کچھ پر خوف کی، لیکن اتنے سارے لوگ اس ایک واقع سے متاثر ہوے ایک اہم بات ہے. ان تمام چیزوں کے بعد میں نے سوچا کے میں اپنی ایک سازشی تھیوری بناؤں جو دوسروں سے کچھ مختلف ہو، اب لوگ یہ چورن اتنی دفا بیچ چکے ہیں کے مجھے کوئی نئی چیز بنانی ہوگی لہذا میں اختصار کے ساتھ آپ کے سامنے ایک تھیوری ” ڈی بنکنگ ” کیلئے پیش کر رہا ہوں.

    عنوان ہے کے ہمارے حالات مستقبل سے کنٹرول ہورہے ہیں. کوئی طاقت، انسانی یا غیر انسانی، جیسے مصنوعی ذہانت، یا دونوں کا ملاپ مستقبل میں شاید سینکڑوں سالوں آگے بیٹھ کر ہمارے حال کو چلا رہے ہیں، وجہ، غیر معلوم.

    نو گیارہ کا واقع صرف دوہزار یا اسکے آس پاس ہی ہوسکتا تھا کیوں کے ٹیکنولوجی ابھی آگے بھی نہیں تھی کے بہت زیادہ ثبوت لوگوں کو کسی سازش کے ملتے اور اتنی پیچھے بھی نہیں تھی کے لوگ اسکو ایک چھوٹا سا واقع سمجھ کر چھوڑ دیتے، حالات سن دو ہزار کے آس پاس ہی اس حملے کیلئے مناسب تھے، مثلا لوگوں کے پاس کیمرے تو تھے لیکن وہ ہائی ڈیفینیشن نہیں تھے ! اب اتنی ویڈیوز موجود ہیں لیکن سب کی کوالٹی بس ایسی ہی ہے.اگر آپ لوگوں کو ثبوت بھی دینا چاہتے ہوں کے کچھ ہوا ہے اور یہ بھی چاہتے ہ این کے تصویر بس غیر مبہم ہی رہے تو سن دو ہزار والا وقت ہی بہترین تھا.. پھر یہ وہ وقت تھا جو بہترین تھا کے لوگوں کو مشغول کیا جاسکے اور انٹرنیٹ ابھی اپنی ابتدائی قدم لے رہا تھا، بہترین وقت تھا کے ایسے وقت میں یہ بات ہو جہاں لوگ خود با خود انٹرنیٹ پر فعال ہوں اور ایک بیانیہ بنے.

    نو گیارہ کے بعد ابتدائی سالوں میں تو انٹرنیٹ پر صرف انہی چیزوں کی بھرمار تھی تو اگر یہ ایک مقصد تھا تو جس طاقت نے یہ کام کیا ہے وہ کامیاب رہی، لوگ اکثر سوچتے ہیں کے بش انتظامیہ کیوں عراق پر چڑھ دوڑی تھی تو اسکا ایک جواب یہ بھی ہے کچھ طاقتیں جو چاہتی تھیں کے اس دنیا کی تاریخ ایک خاص طور پر لکھی جائے اور ایک خاص طرف چلے تو پھر یہ بات صاف ہے کے ہوسکتا ہے انکو کہا گیا ہو کے آپ نے اگلے سالوں میں یہ کام کرنا ہے اگر آپ نہیں کریں گے تو ہم آپ کو دیکھا چکے ہیں ہم نو گیارہ والا کام کر سکتے ہیں، اگر ایک لمحے کو ہم مان لیں کے میری تھیوری ٹھیک ہے تو آپ خیال سے صدر بش عراقی حملے کو رد کرسکتے تھے ؟ آپ صدر بش کو جو مرضی کہیں لیکن وہ اکیلا نہیں تھا اسکے پیچھے ایک پوری فوج تھی جو سپر کمپوٹرز پر وار گیم کرتی ہے اور دیکھتی ہے کے نفع نقصان کتنا ہے، مجھے نہیں لگتا کے وہ اتنا غیر معقول فیصلہ صرف صدر بش کی خود ساختہ ہٹ دھرمی کی وجہ سے مان لیتے، اسکے پیچھے کوئی بہت بڑی سازش یا خطرہ تھا جس کی وجہ سے انکو یہ کام کرنا پڑا.

    کیا یہ ممکن ہے مستقبل، حال کے معاملات میں دخل اندازی کرسکے ؟ فزکس میں یہ تھیوری موجود ہے کے ماضی، حال اور مستقبل ساتھ ساتھ موجود ہیں، اگر آج ہمارے پاس ایسی ٹیکنولوجی ہو جو ہمیں اجازت دے کے ہم اپنے ماضی کو ٹھیک کرسکیں تو کیا ہم ایسا کریں گے ؟ میرے خیال سے جی ہاں، انسان کی نفسیات ایسی ہے جو اکثر اسکو ایسے کاموں پر اکساتی ہے جو خطرناک ہوسکتے ہیں، ارتقا میں یہ ہمارے لئے اچھی چیز تھی کیوں کے ہمارے آباؤ اجدار اگر رسک نہ لیتے تو ہم آج یہاں نہیں ہوتے، ہومو سپینس کی ایک یہی ادا انکی کامیابی کی وجہ ہوسکتی ہے، لیکن انسانی جبلت اور بقا کی جنگ ابھی ختم نہیں ہوئی، صرف اسکی نوعیت بدل گئی ہے تو ایسا بلکل ممکن ہے کے ہمارے مستقبل میں ایسے لوگ ہوں، ایسی طاقتیں ہوں جو سمجھتی ہو اس زمانے کو اس طرح چلانا چاہئے کے اسکا اثر تاریخ پر ایک خاص طریقہ سے ہو، اب آپ پوچھیں کے صرف یہی وقت ہی کیوں تو میرے خیال سے انسانی تاریخ کا یہ وقت جہاں ہم اور آپ لوگ آج ” زندہ ” ہیں سب سے اہم وقت ہے، ایٹمی تاریخ سے لیکر چاند پر قدم، ٹیکنولوجی کی ترقی ایسی جو واقع انسانی تاریخ کو صدیوں کیلئے تبدیل کرسکتی ہے تو پھر اگر کوئی مستقبل میں کوئی خاص نتیجہ چاہتا ہے یہی وہ وقت ہے جہاں ” مینجمنٹ ” کی ضروت ہوگی.

    کیا اس بات کا کوئی ثبوت موجود ہے ؟ شاید نہیں، جو لوگ اس بات کو پلان کرتے ہونگے انکے پاس ایسی طاقت ہوگی جو پہلے سے تمام رد عمل اور نتیجے سمو لیشن کرکے دیکھ چکے ہونگے اور جو سب سے کامیاب حکمت عملی ہوگی اس پر ہی عمل پیرا ہونگے اور ایسا ہی ہوا ہے، فوجی حکمت عملی میں آپ لوگوں کی توجہ ہمیشہ اس طرف کرواتے ہیں جو ” حقیقت ” سے دور ہو، کیا ایسا ممکن ہے کے ہم سب اجتماعی طور پر وہ سوچ رہے ہیں جو وہ طاقتیں چاہتی ہوں کے ہم سوچیں ؟ اگر شرلاک ہولمز اور ڈاکٹر واٹسن کو ثبوت صاف نظرنا آرہے ہوں تو وہ کیا کرتے ہیں ؟ جب آپ نے تمام ممکنات کو دیکھ لیا ہو پھر بھی آپ نتیجہ پر نہ پہنچ پارہے ہوں تو بعض اوقات جو باقی بچ جائے، چاہے کتنا ہی جھوٹا اور چھوٹا، فریب یا جادو ہی کیوں نہ ہو، اکثر سچائی ہی ہوتا ہے.

    ہاں ایک ویڈیو میں یہاں ضرور لگانا چاہتا ہوں اور یہ ہے ڈاکٹر جوڈی ووڈ کی ہے جو نو گیارہ کی جتنی بھی سازشی تھیوریز ہیں ان میں منفرد ہیں کیوں کے وہ ایسی بات کرتی ہیں جس پر بہت ہی کم لوگوں نے توجہ دی ہے اور وہ ہے کے دونوں ٹاورز کے گرنے کے بعد جو ملبہ وہاں ہونا چاہیے تھا وہ وہاں نہیں ہے اور ایسے لگتا ہے کے آدھے سے زیادہ ملبہ ہوا میں بھس بن کر اڑ گیا تھا اور اس نے اس ویڈیو میں چند بہت ہی سوال اٹھاۓ ہیں اگر آپ نے نہیں دیکھی تو ضرور دیکھیں، بیشک جبر کر کے ہی دیکھ لیں، آپ کو واقع ایک نئی چیز دیکھنے کو ملے گی. آخر میں تمام دوستوں سے گزارش ہیں کے براہ مہربانی اسکو ایک سازشی مفروضہ کی حد تک ہی رکھیں اور سچ نہ سمجھ لیں، میں نے صرف چند پہلے سے موجود تھیوریوں سے کچھ نتیجہ اخذ کرکے اپنا لچ تلنے کی کوشش کی ہے، :disco: ہوسکتا ہے ایسا ہو، قوانٹم فزکس کے لحاظ سے میری تھیوری کے سہی ہونے کے کچھ فیصد چانس ضرور موجود ہیں، آپ چاہیں تو اسکو ڈی بنک کر سکتے ہیں.

    • This topic was modified 2 months, 1 week ago by  bluesheep.
    #2
    brethawk
    Participant
    Offline
    • Advanced
    • Threads: 25
    • Posts: 231
    • Total Posts: 256
    • Join Date:
      27 Oct, 2016

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    This piece of crap illustrates the extent of damage your brain cells have experienced.

    You need an urgent psychiatric and emotional help before you plunge further into the abyss of insanity and self destruction.

    #3
    bluesheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Advanced
    • Threads: 10
    • Posts: 176
    • Total Posts: 186
    • Join Date:
      7 Dec, 2018
    • Location: Pindi HQ

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    This piece of crap illustrates the extent of damage your brain cells have experienced. You need an urgent psychiatric and emotional help before you plunge further into the abyss of insanity and self destruction.

    :hilar: :lol:   :hilar:

    او تیری خیر ہووے

    بھائی جن تو لگتا ہے غصہ کرگیے ہیں

    :thinking: :serious:

    • This reply was modified 2 months, 1 week ago by  bluesheep.
    #4
    Guilty
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 0
    • Posts: 3563
    • Total Posts: 3563
    • Join Date:
      6 Nov, 2016

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    :hilar: :lol: :hilar: او تیری خیر ہووے بھائی جن تو لگتا ہے غصہ کرگیے ہیں :thinking: :serious:

    وہ بے چارہ بھی غلط نہیں کہہ رھا ۔۔۔۔۔۔۔۔

    ڈاکٹر کو د کھا لینے میں آخر ھر ج ہی کیا ہے ۔۔۔۔۔ ڈاکٹر کھا تھوڑی نہ جا ئے گا ۔۔۔

    آخر کہیں نہ کہیں کچھ نہ کچھ تو کمی محسوس ہوتی ہوگی ۔۔۔۔۔۔۔

    #5
    Zinda Rood
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 12
    • Posts: 1540
    • Total Posts: 1552
    • Join Date:
      3 Apr, 2018
    • Location: NorthPole

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    انٹرسٹیلر مووی میں کوپر جب بلیک ہول میں پہنچ جاتا ہے تو وہ ماضی میں چلا جاتا ہے، وہاں سے وہ ماضی میں اپنے آپ کو ہی دیکھ رہا ہوتا ہے، اس کے ساتھ اس کی بیٹی بھی ہوتی ہے، پھر وہ وہاں سے گریویٹی سگنلز کے ذریعے خود کو ہی کورآڈی نیٹس بھیجتا ہے، جن کو سمجھ کر وہ (ماضی کا کوپر) ناسا کے سٹیشن پر پہنچتا ہے۔۔ لیکن یہاں پیراڈاکس ہے، کیونکہ اس کے سپیس میں سفر کا باعث ہی وہی سگنلز بنے تھے جو وہ بلیک ہول میں جاکر خود ہی بھیج رہا ہے،۔۔۔ یہ مستقبل سے ماضی کو تبدیل کرنا یا چلانا بھی ایک ایسا ہی پیراڈاکس ہے۔ ہاں ماضی میں جایا جاسکتا ہےیا نہیں، یہ شاید مستقبل میں ممکن ہوسکے، کیونکہ وقت بھی ایک بہت بڑا معمہ ہے، وقت کی گتھی سلجھ جائے تو انسان بہت سے راز جان سکتا ہے۔۔۔

    • This reply was modified 2 months, 1 week ago by  Zinda Rood.
    #6
    bluesheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Advanced
    • Threads: 10
    • Posts: 176
    • Total Posts: 186
    • Join Date:
      7 Dec, 2018
    • Location: Pindi HQ

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    انٹرسٹیلر مووی میں کوپر جب بلیک ہول میں پہنچ جاتا ہے تو وہ ماضی میں چلا جاتا ہے، وہاں سے وہ ماضی میں اپنے آپ کو ہی دیکھ رہا ہوتا ہے، اس کے ساتھ اس کی بیٹی بھی ہوتی ہے، پھر وہ وہاں سے گریویٹی سگنلز کے ذریعے خود کو ہی کورآڈی نیٹس بھیجتا ہے، جن کو سمجھ کر وہ (ماضی کا کوپر) ناسا کے سٹیشن پر پہنچتا ہے۔۔ لیکن یہاں پیراڈاکس ہے، کیونکہ اس کے سپیس میں سفر کا باعث ہی وہی سگنلز بنے تھے جو وہ بلیک ہول میں جاکر خود ہی بھیج رہا ہے،۔۔۔ یہ مستقبل سے ماضی کو تبدیل کرنا یا چلانا بھی ایک ایسا ہی پیراڈاکس ہے۔ ہاں ماضی میں جایا جاسکتا ہےیا نہیں، یہ شاید مستقبل میں ممکن ہوسکے، کیونکہ وقت بھی ایک بہت بڑا معمہ ہے، وقت کی گتھی سلجھ جائے تو انسان بہت سے راز جان سکتا ہے۔۔۔

    میرا خیال ہے کے انسان شاید ” انفارمشن ” کا تبادلہ مستقبل سے ماضی میں کر سکتا ہے اور جیسا آپ نے فلم کی تھیوری کا حوالہ دیا، اور مت بھولیں کے اس فلم کے ڈائریکٹر نے ایک ماہر طبیعات سے فلم کی تیاری میں مدد لی تھی اور یہ صاحب جناب کپ ایس تھورن اس موضوع پر بہت سی کتب بھی لکھ چکے ہیں، جس میں سے ایک بلیک ہولز پر کتاب میں نے بھی پڑھ رکھی ہے، خیر، ہم کئی دفا صرف اپنی انا اور رعونت کی وجہ سے بعض ممکنات اور امکانات کو رد کردیتے ہیں جو ہوسکتا ہے مستقبل قریب میں شاید ممکنات میں شامل ہوں.

    آپ سے میرا ایک سوال ہے، اگر ہم انسانی ترقی کی رفتار اور ” سمت ” کو دیکھتے ھوے آج سے دو سو سے پانچ سو سالوں پر غور کریں اور سوچیں کے انسانی سلطنت کہاں اور کس جگا ہوگی تو اپ کے خیال سے آپ کو کیا کیا ممکن لگتا ہے ؟ اگر ہم بائیو انجیرنگ، کمپیوٹر ٹیکنولوجی اور مصنوعی ذہانت کے مضامین اور شعبوں کو خاص طور پر نظر میں رکھیں تو آپ کو کیا کیا ممکنات میں نظر آتا ہے.

    #7
    bluesheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Advanced
    • Threads: 10
    • Posts: 176
    • Total Posts: 186
    • Join Date:
      7 Dec, 2018
    • Location: Pindi HQ

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    وہ بے چارہ بھی غلط نہیں کہہ رھا ۔۔۔۔۔۔۔۔ ڈاکٹر کو د کھا لینے میں آخر ھر ج ہی کیا ہے ۔۔۔۔۔ ڈاکٹر کھا تھوڑی نہ جا ئے گا ۔۔۔ آخر کہیں نہ کہیں کچھ نہ کچھ تو کمی محسوس ہوتی ہوگی ۔۔۔۔۔۔۔

    آپ کے علاج کے بعد بھی ایسی صورت حال جو آج آپ کو درپیش ہے، دیکھ کر میرا کوئی ارادہ نہیں کسی بھی قسم کے علاج کا، ہم پاگل ہی سہی

    #8
    Zinda Rood
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 12
    • Posts: 1540
    • Total Posts: 1552
    • Join Date:
      3 Apr, 2018
    • Location: NorthPole

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    میرا خیال ہے کے انسان شاید ” انفارمشن ” کا تبادلہ مستقبل سے ماضی میں کر سکتا ہے اور جیسا آپ نے فلم کی تھیوری کا حوالہ دیا، اور مت بھولیں کے اس فلم کے ڈائریکٹر نے ایک ماہر طبیعات سے فلم کی تیاری میں مدد لی تھی اور یہ صاحب جناب کپ ایس تھورن اس موضوع پر بہت سی کتب بھی لکھ چکے ہیں، جس میں سے ایک بلیک ہولز پر کتاب میں نے بھی پڑھ رکھی ہے، خیر، ہم کئی دفا صرف اپنی انا اور رعونت کی وجہ سے بعض ممکنات اور امکانات کو رد کردیتے ہیں جو ہوسکتا ہے مستقبل قریب میں شاید ممکنات میں شامل ہوں. آپ سے میرا ایک سوال ہے، اگر ہم انسانی ترقی کی رفتار اور ” سمت ” کو دیکھتے ھوے آج سے دو سو سے پانچ سو سالوں پر غور کریں اور سوچیں کے انسانی سلطنت کہاں اور کس جگا ہوگی تو اپ کے خیال سے آپ کو کیا کیا ممکن لگتا ہے ؟ اگر ہم بائیو انجیرنگ، کمپیوٹر ٹیکنولوجی اور مصنوعی ذہانت کے مضامین اور شعبوں کو خاص طور پر نظر میں رکھیں تو آپ کو کیا کیا ممکنات میں نظر آتا ہے.

    فلموں میں تو خیر بہت سا فکشن ہوتا ہے، مگر حقیقی زندگی بھی فکشن سے زیادہ مختلف نہیں ہے،  آج ہمارے پاس جو کچھ ہے، وہ کچھ سو سال پہلے تک فکشن ہی تو تھا، چند صدیوں پہلے تک ہوا میں اڑنے والے جہاز جیسی چیز کا تصور ایک ایسا افسانوی خیال تھا، جس کو شاید ناممکنات میں سے سمجھا جاتا، مگر آج یہ عام اور معمولی سی چیز ہے۔۔ کبھی کبھی میں سوچتا ہوں کہ یہ بڑے بڑے اذہان والے سائنسدان، ایڈیسن، نیوٹن، آئن سٹائن وغیرہ کے دماغ باقی انسانوں سے اتنا الگ کیسے ہوتے ہیں، کہیں یہ کسی اور زمانے کی مخلوق تو نہیں۔ ایڈیسن اکیلے شخص نے کتنی ایجادات کر ڈالیں، گلیلیو، آئین سٹائن، نیوٹن نے کیسی کیسی گتھیاں سلجھا دیں۔۔ دنیا کو نئے علوم سے روشناس کروانے والے یہ شخص اتنے نایاب / کم یاب کیوں ہوتے ہیں۔۔؟ آخر کیا چیز ہوتی ہے جو ان کے دماغوں کو باقی لوگوں سے منفرد بناتی ہے۔۔؟  

     آپ سے میرا ایک سوال ہے، اگر ہم انسانی ترقی کی رفتار اور ” سمت ” کو دیکھتے ھوے آج سے دو سو سے پانچ سو سالوں پر غور کریں اور سوچیں کے انسانی سلطنت کہاں اور کس جگا ہوگی تو اپ کے خیال سے آپ کو کیا کیا ممکن لگتا ہے ؟ اگر ہم بائیو انجیرنگ، کمپیوٹر ٹیکنولوجی اور مصنوعی ذہانت کے مضامین اور شعبوں کو خاص طور پر نظر میں رکھیں تو آپ کو کیا کیا ممکنات میں نظر آتا ہے.

    مجھے تو لگتا ہے کہ چند دہائیوں بعد انسانوں میں ایک زبردست نیوکلیئر جنگ ہوگی اور انسان کا زیادہ تر حاصل تباہ ہوجائے گا۔۔ خیر یہ تو میرا مفروضہ ہے۔۔۔ پچھلی چند دہائیوں سے انسان نے ترقی کا جو سفر شروع کیا، اس کی رفتار گزرتے وقت کے ساتھ تیز تر ہوتی جارہی ہے، میری نظر میں انسان نے جو ڈی این اے کا راز جان لیا ہے (اور اسے مزید ایکسپلور کررہا ہے)، یہ بہت بڑی انقلابی کامیابی ہے۔ آج اگر جینیٹک انجینئرنگ کی آزادانہ اجازت دی جائے تو انسان کیا کچھ نہیں کرسکتا، مختلف جانداروں سے مختلف خواص کے جینز لے کر  کیسی کیسی مخلوق نہیں تیار کی جاسکتی، ایمبرائیونک سٹیم سیل ریسرچ سے پابندیاں ہٹا لی جائیں اور اس کو فلاحِ انسانی کے لئے بلا روک ٹوک استعمال کی اجازت دے دی جائے تو انسان شاید ہر قسم کی بیماریوں سے جان چھڑالے۔۔ یہ تو کوئی افسانوی باتیں نہیں ہیں، یہ تو آج کا انسان حاصل کرچکا ہے، جینٹیک مویڈیفیکشن سے سپر مین بھی تیار کیا جاسکتا ہے، لیکن اس کے ڈرا بیکس بھی ہیں، شاید اس میں بہت کچھ تباہی کی طرف لے جائے۔۔

    سٹیم سیل اور جینیٹک انجینرنگ کی بدولت ہوسکتا ہے انسان دوام حاصل کرلے، بڑھاپے اور موت سے ہی چھٹکارا پالے۔۔۔

    آپ آج سے دو سو سال بعد کی بات کررہے ہیں، مجھے تو لگ رہا ہے کہ پچاس ساٹھ سال بعد ہی انسان کیا سے کیا ہوجائے گا۔۔

    #9
    shahidabassi
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 30
    • Posts: 6750
    • Total Posts: 6780
    • Join Date:
      5 Apr, 2017

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

     ایڈیسن اکیلے شخص نے کتنی ایجادات کر ڈالیں، گلیلیو، آئین سٹائن، نیوٹن نے کیسی کیسی گتھیاں سلجھا دیں۔۔ دنیا کو نئے علوم سے روشناس کروانے والے یہ شخص اتنے نایاب / کم یاب کیوں ہوتے ہیں۔۔؟ آخر کیا چیز ہوتی ہے جو ان کے دماغوں کو باقی لوگوں سے منفرد بناتی ہے۔۔؟

    کیونکہ یہ خدا پر یقین رکھتے تھے ۔
    خادم رضوری نے بھی تو قرض اتارنے کا طریقہ ایجاد کیا ہے

    #10
    Guilty
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 0
    • Posts: 3563
    • Total Posts: 3563
    • Join Date:
      6 Nov, 2016

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    آپ کے علاج کے بعد بھی ایسی صورت حال جو آج آپ کو درپیش ہے، دیکھ کر میرا کوئی ارادہ نہیں کسی بھی قسم کے علاج کا، ہم پاگل ہی سہی

    ویسے ۔۔۔۔۔ بہت زیادہ فلمیں دیکھ  دیکھ لوٹ پوٹ ہوکر ۔۔۔۔ آٹھ آٹھ گنھٹے کے لیکچر ۔۔۔۔ سن کر ۔۔۔۔ کتا بیں پڑھ پڑھ کر ۔۔۔۔۔ کبھی کبھی تو ۔۔۔ غلل ۔۔۔۔تھوڑا بہت محسوس تو ہوتا ہی ہوگا ۔۔۔

    #11
    Guilty
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 0
    • Posts: 3563
    • Total Posts: 3563
    • Join Date:
      6 Nov, 2016

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

     بڑے بڑے اذہان والے سائنسدان، ایڈیسن، نیوٹن، آئن سٹائن وغیرہ کے دماغ باقی انسانوں سے اتنا الگ کیسے ہوتے ہیں، کہیں یہ کسی اور زمانے کی مخلوق تو نہیں۔ ایڈیسن اکیلے شخص نے کتنی ایجادات کر ڈالیں، گلیلیو، آئین سٹائن، نیوٹن نے کیسی کیسی گتھیاں سلجھا دیں۔۔ دنیا کو نئے علوم سے روشناس کروانے والے یہ شخص اتنے نایاب / کم یاب کیوں ہوتے ہیں۔۔؟ آخر کیا چیز ہوتی ہے جو ان کے دماغوں کو باقی لوگوں سے منفرد بناتی ہے۔۔۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    جس بندے کے  ۔۔۔۔۔ سر کے پچھلی طرف کا حصہ گول ہو تا ہے  ۔۔۔۔ اور ۔۔۔۔ سر کے پیچھے ۔۔۔۔۔۔ ٹومب ۔۔۔۔ یا گبند  ۔۔۔۔ زیادہ نکلا ہوا ہوگا ۔۔۔۔۔۔۔۔ اس کے زیادہ زھین ہونے کے چانسز بڑھ جاتے ہیں ۔۔۔۔

    اور جس بند کے سر کے پیچھے کا ۔۔۔۔ گنبد یا ٹومب ۔۔۔۔۔ کم ہوگا ۔۔۔۔۔ یا ۔۔۔۔ با لکل ہی ۔۔۔۔ فلیٹ ۔۔۔۔ چپٹا ۔۔۔۔ ہوگا ۔۔۔۔۔ وہ زھا نت سے کافی حد تک پیدل ملے گا ۔۔۔

    کچھ سا ئند انوں کے سر کا معائنہ کرنے سے پتہ چلتا ہے کہ ۔۔۔۔۔ اکثر سا ئندانوں کے سر۔۔۔۔۔ کے پیچھے ۔۔۔ گول حصہ ۔۔۔۔ عام انسان سے زیادہ ۔۔۔۔ لمبا ہوتا تھا ۔۔۔۔۔

    ۔۔۔

    ۔۔۔

    ۔۔

    اوپر تصویر میں ۔۔۔۔ ایک بچے کے  سر کے پیچھے گول  حصہ نکلا ہوا ہے ۔۔۔۔۔ جبکہ دوسرے بچے کا سر پیچھے سے چپٹا ہے ۔۔۔۔۔۔

    زھین  دما غ ہونے کا ایک بڑا دارومدا ۔۔۔۔ سر کی بناوٹ یا دماغ کی بناوٹ پر بھی منحصر کرتا ہے ۔۔۔۔

    دوسرے اس کے علاوہ ۔۔۔۔۔۔۔ عام انسان اپنی پوری زندگی میں ۔۔۔۔ اپنے دماغ کا صرف ۔۔۔۔۔ تیس فیصد حصہ ہی ۔۔۔۔۔ استعمال کرپاتے ہیں ۔۔

    ۔ کوئی بھی انسان کبھی بھی ۔۔۔۔ سو فیصد تو کجا چالیس فیصد برین بھی استعمال نہیں کرپا یا ہے ۔۔۔

    جبکہ ۔۔۔۔ سا ئنسدانوں کے بارے میں خیال کیا جاتا ہے کہ ۔۔۔۔۔ سا ئنسدان اپنے د ماغ کا ۔۔۔۔۔ تینتس یا چونتیس ۔۔۔۔۔ فی صد حصہ استعمال کرپاتے ہیں اس لیئے وہ عام انسان سے زیادہ زھین ہوتے ہیں ۔۔

    یہ بالکل ایسے ہی اگر کسی نوجوان کے بازو کے ۔۔۔ مسل ۔۔۔۔ با ڈی بلڈنگ سے ۔۔۔ بڑے  شیپ دار۔۔۔۔ ہو چکے ہوں تو وہ ۔۔۔۔ بازو ۔۔۔۔ سٹرانگ ہوگا ۔۔۔۔ جبکہ ۔۔۔

    ۔ ایک نا رمل بازو کا مسل ۔۔۔۔ بغیر باڈی بلڈنگ کے کم سٹرانگ ہوگا یا بالکل سٹرانگ نہیں ہوگا ۔۔۔۔

    شیپ ۔۔۔۔ اور ۔۔۔۔ بناوٹ ۔۔۔۔۔ انسانی دما غ کی نشو ونما ۔۔۔ اور ۔۔۔۔ کارکردگی پر بہت زیادہ اچھے اور برے اثرات مرتب کرتی ہی ۔۔

    آپ نے اکثر دیکھا ہوگا ۔۔۔۔۔ امریکن افریقن مردوں کے سر کا پچھلا حصہ اکثر ۔۔۔ چپٹا ما ئل یا ۔۔۔۔ فیلٹ ہوتا ۔۔۔۔ ہے ۔۔۔۔ یا ان کا سر ہی چھوٹا سا ہوتا ہے ۔۔۔ اور آپ نوٹس کریں گے کہ

    اس قسم کے سر کے ساخت کے لوگ ۔۔۔۔ سوائے ۔۔۔۔ چوری چکاری اوباش پن ۔۔۔۔۔ کے کوئی ۔۔۔ زھنی ۔۔۔۔ کام ۔۔۔ مشکل سے  ہی کر پاتے ہیں ۔۔۔

    ۔۔۔

    ۔

    ۔۔۔۔۔ 

    • This reply was modified 2 months, 1 week ago by  Guilty.
    #12
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 209
    • Posts: 3821
    • Total Posts: 4030
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    bluesheep sahib

    محترم بلیو شیپ صاحب

    آپ نے ایک دلچسپ خیال کو پیش کیا ہے . مکین ہے کے درست ہو اور ممکن ہے کے نہیں او رممکن ہے کے کہیں بیچ میں ہو

    اگر میں سمجھ پایا ہوں (گو مجھے یقین ہے کے نہیں سمجھ پایا ہوں) وہ یہ کے ہم جو آج جی رہے اور ہم سے پہلے جو جی چکے ہیں ہیں وہ کسی مستقبل میں موجود طاقت یا طاقتوں کی مرہون منت ہو سکتی ہے اور جو واقعات رونما ہو رہے ہیں یا ہو چکے ہیں یا جو ہوں گے وہ اس وقت رونما ہوے ہیں یا ہوتے رہے ہیں جب انسان کے پاس وہ تمام تکنیکی اور ذہنی صلاحیت موجود نہیں تھی یا ہے کے ان واقعات کے اسباب کی گتھی سلجھانے میں مدد کر سکے

    اگر مفہوم یہ ہے جو میں سمجھا ہوں تو میرے خیال میں انسانی تاریخ ہزاروں سالوں پر محیط ہے اور ان ہزاروں سالوں میں ایسے کئی ہزاروں واقعات رونما ہوے ہیں جو انسان کی سمجھ میں آ گئے اور ہزاروں ایسے جو انسان کی سمجھ میں نہیں آے . اکثر واقعات ہزاروں سال پرانے ہونے کے باوجود انسان نہیں سمجھ پایا ہے . اگر یہ سب ایک مستقبل میں موجود طاقت کر رہی ہے تو اتنے ہزاروں سالوں سے کیوں کر رہی ہے اور اس بات سے کیا حاصل کرنا چاہا رہی ہے .

    پچلے پچاس سو سالوں میں انسان نے جو تکنینکی مہارت حاصل کی ہے اسکی رفتار پچھلے کئی سینکڑوں سالوں سے کہیں تیز ہے تو مستقبل کی اس طاقت کو یکدم انسان کی تکنینکی صلاحیت کو تیز کرنے کی ضرورت کیوں پیش آئی ہے

    یہ قدرتی حادثات اور قد رتی تبدیلیاں بھی کیا اس مستقبل کی طاقت کے مرہون منت ہیں یا ہم صرف انسانی اعمال اور حرکتوں کو اس طاقت کے زیر اثر دیکھتے ہیں

    میں اس بات پر یقین رکھتا ہوں کے انسان کبھی نہ کبھی اور شاید نہت جلد کچھ ایسا ایجاد کر پاۓ گا جو اسکو ماضی اور مستقبل میں سفر کرنے میں مدد دے گا. ایسا شاید میری بہت کم رہی زندگی میں تو شاید نہ ہو مگر ایسا ہی گا ضرور اور اس کا مجھے یقین ہے (گو میں غلط بھی ہو سکتا ہوں ) . جب ایسا ہوا تو شاید میرا نکتہ نظر مختلف ہو مگر میرے خیال میں مستقبل کی کوئی طاقت یہ سب کچھ نہیں چلا رہی ہے اور اگر چلا رہی ہے تو ایسا کیوں کر رہی ہے میرا سب سے بڑا سوال ہے

    میرا خیال ہے کے جو واقعات انسان کی بدولت پیش آے ہیں اس میں اس وقت کے انسان کی ہو سوچ ، عقل اور قابلیت کا عمل دخل ہے او تھا

    ویسے یہ مستقبل کی طاقت کا خیال مذہب کے حوالے سے کسی طاقتور ہستی یا ہستیوں سے بھی متصادم ہے اور اگر یہ خیال درست ہے تو کیا مذہب بھی اس مستقبل کی طاقت کا ایک کھیل ہے

    ہاں اگر میں آپکی بات بلکل نہیں سمجھ سکا ہوں تو میری اس تحریر کو نظر انداز کر دیجیے گا

    #13
    bluesheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Advanced
    • Threads: 10
    • Posts: 176
    • Total Posts: 186
    • Join Date:
      7 Dec, 2018
    • Location: Pindi HQ

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    bluesheep sahib

    محترم بلیو شیپ صاحب

    آپ نے ایک دلچسپ خیال کو پیش کیا ہے . مکین ہے کے درست ہو اور ممکن ہے کے نہیں او رممکن ہے کے کہیں بیچ میں ہو

    اگر میں سمجھ پایا ہوں (گو مجھے یقین ہے کے نہیں سمجھ پایا ہوں) وہ یہ کے ہم جو آج جی رہے اور ہم سے پہلے جو جی چکے ہیں ہیں وہ کسی مستقبل میں موجود طاقت یا طاقتوں کی مرہون منت ہو سکتی ہے اور جو واقعات رونما ہو رہے ہیں یا ہو چکے ہیں یا جو ہوں گے وہ اس وقت رونما ہوے ہیں یا ہوتے رہے ہیں جب انسان کے پاس وہ تمام تکنیکی اور ذہنی صلاحیت موجود نہیں تھی یا ہے کے ان واقعات کے اسباب کی گتھی سلجھانے میں مدد کر سکے

    اگر مفہوم یہ ہے جو میں سمجھا ہوں تو میرے خیال میں انسانی تاریخ ہزاروں سالوں پر محیط ہے اور ان ہزاروں سالوں میں ایسے کئی ہزاروں واقعات رونما ہوے ہیں جو انسان کی سمجھ میں آ گئے اور ہزاروں ایسے جو انسان کی سمجھ میں نہیں آے . اکثر واقعات ہزاروں سال پرانے ہونے کے باوجود انسان نہیں سمجھ پایا ہے . اگر یہ سب ایک مستقبل میں موجود طاقت کر رہی ہے تو اتنے ہزاروں سالوں سے کیوں کر رہی ہے اور اس بات سے کیا حاصل کرنا چاہا رہی ہے .

    پچلے پچاس سو سالوں میں انسان نے جو تکنینکی مہارت حاصل کی ہے اسکی رفتار پچھلے کئی سینکڑوں سالوں سے کہیں تیز ہے تو مستقبل کی اس طاقت کو یکدم انسان کی تکنینکی صلاحیت کو تیز کرنے کی ضرورت کیوں پیش آئی ہے

    یہ قدرتی حادثات اور قد رتی تبدیلیاں بھی کیا اس مستقبل کی طاقت کے مرہون منت ہیں یا ہم صرف انسانی اعمال اور حرکتوں کو اس طاقت کے زیر اثر دیکھتے ہیں

    میں اس بات پر یقین رکھتا ہوں کے انسان کبھی نہ کبھی اور شاید نہت جلد کچھ ایسا ایجاد کر پاۓ گا جو اسکو ماضی اور مستقبل میں سفر کرنے میں مدد دے گا. ایسا شاید میری بہت کم رہی زندگی میں تو شاید نہ ہو مگر ایسا ہی گا ضرور اور اس کا مجھے یقین ہے (گو میں غلط بھی ہو سکتا ہوں ) . جب ایسا ہوا تو شاید میرا نکتہ نظر مختلف ہو مگر میرے خیال میں مستقبل کی کوئی طاقت یہ سب کچھ نہیں چلا رہی ہے اور اگر چلا رہی ہے تو ایسا کیوں کر رہی ہے میرا سب سے بڑا سوال ہے

    میرا خیال ہے کے جو واقعات انسان کی بدولت پیش آے ہیں اس میں اس وقت کے انسان کی ہو سوچ ، عقل اور قابلیت کا عمل دخل ہے او تھا

    ویسے یہ مستقبل کی طاقت کا خیال مذہب کے حوالے سے کسی طاقتور ہستی یا ہستیوں سے بھی متصادم ہے اور اگر یہ خیال درست ہے تو کیا مذہب بھی اس مستقبل کی طاقت کا ایک کھیل ہے

    ہاں اگر میں آپکی بات بلکل نہیں سمجھ سکا ہوں تو میری اس تحریر کو نظر انداز کر دیجیے گا

    جےایم پی  صاحب

    بہت بہت شکریہ جواب اور خیالات کا، تقریبا اتنی ہی بات ہے اور میں کچھ تھوڑا سا اضافہ کرنا چاہوں گا.

    اب چونکہ ہم ممکنات پر بات کرہے ہیں لہٰذا میرا شک کچھ ایسی چیزوں پر جاتا ہے جو میرے خیال سے ” مستقبل ” کو مجبور کرتا ہو کے وہ اس ہمارے موجودہ حال اور انکے ماضی میں دخل اندازی کریں. مثال کے طور پر ہم آج جانتے ہیں کے زمین کے اس پاس اربوں دوسرے سیارے وجود رکھتے ہیں، کیا کسی اور ہمارے زمین جیسے سیارہ پر زندگی کا امکان ہے ؟ اگر آپ مجھ سے پوچھیں تو میں کہوں گا کے جی بلکل، انکی تعداد اتنی زیادہ ہے کے حسابی لحاظ اس چیز کا امکان بہت ہے کے ہم جیسی یا ہم سے بھی بہت زیادہ ترقی یافتہ کوئی خلائی مخلوق بستی ہو اور شاید یہ بھی جانتی ہو کے ہم کائنات کے اس حصے میں بستے ہیں. اب اگر پانچ سو سال بعد انسانیت کو ان سے خطرہ محسوس ہو تو آپ کے خیال سے وہ کیا کریں گے ؟

    میرے خیال سے فزکس کے کائناتی قوانین کے تہت یہ عین ممکن ہے کے ایک ایسی تہذیب جو بہت زیادہ توانائی استعمال کرسکتی ہو یا قابو کرسکتی ہو تو اسکے لئے زمین اور مکاں کے قوانین توڑنا موڑنا کوئی مشکل نہیں ہوگا، ہر چیز کی بنیادی اساس بقا کی جبلت پر کھڑی ہے، مان لیتے ہیں کے مستقبل میں ان انسانیت اور ایک خلائی تہذیب میں جنگ چھڑ جاتی ہے اور دونوں ہی زمین اور مکاں کےقوانیں کو موڑ تروڑو سکتے ہوں تو کیا اس بات کا امکان نہیں کے انسانیت سوچے کے گو آج تو ہم اپنی موجودہ سائنسی ترقی کی بنیاد پر اپنا دفاع کرسکتے ہیں لیکن اگر ہماری دشمن تہذیب وقت میں پیچھے جاکر انسانیت کو اس وقت نشانہ بنانے کی کوشش کرے جب کے وہ بہت زیادہ آگے نہیں تھے تو ہمارا آج کا دفاع غیر موثر ہوگا. ایسی صورت میں ہماری مستقبل کی نسل یہ ضرور سوچ سکتی ہے کے ہمیں خود ہی اپنے ماضی کا دفاع کرنا ہوگا. ہوسکتا ہے یہ جو ہم آے دن اڑن طشتریوں کے بارے میں سنتے رہتے ہیں وہ کوئی خلائی مخلوق نہیں بلکے ہمارے اپنے ہی مستقبل کی مشینیں ہوں جو صرف اس مقصد سے پیچھے آتی ہوں کے حالات کا جائزہ لیتے رہیں. ایک دفا پھر میں صرف ممکنات پر بات کر رہا ہوں.

    پچھلے سو سالوں کی ترقی بہت زبردست ہے، بلکل ٹھیک، لیکن اس کے پیچھے بھی کوئی ” سیاسی ” یا ” مذہبی ” یا کوئی اور ” نا معلوم ” مقصد ہوسکتا ہے، مثال کے طور پر ہوسکتا ہے مستقبل میں بھی انسانوں کے ایسے ہی گروہ ہوں جیسے آج ہیں، ہوسکتا ہے وہاں بھی دنیا سیاسی لحاظ سے ایسے گروہوں میں بٹی جو اپنی اپنی اجارا داری چاہتے ہوں، کیا ایسا ممکن ہے کے وہ چاہیں کے خفیہ طور پر اگر ماضی کو ایسے چھیڑا جائے، اس میں ایسی غیر معلوم طریقے سے چھوٹی چھوٹی تبدیلیاں کی جائیں جس سے انکو مستقبل میں فائدہ ہو تو کیا ایسا ممکن ہے ؟ اگر کے پاس ایک ایسی مشین ہو جو آپ کو ماضی میں تبدیلیوں کی اجازت دیتی ہو تو کیا آپ اپنے موجودہ خیالات کے روشنی میں اسکو استعمال کریں گے ؟ کیا انسانی فطرت کو دیکھتے ہوے ہم اس بات کی کوئی گنجائش دیکھتے ہیں ؟

    آپ نے اکثر سنا ہوگا کے ہم ایک کمپیوٹر سمولیشن میں رہ رہے ہیں، مجبوری یہ ہے کے اگر ہم اس سمولیشن میں رہ بھی رہے ہوں تو ہمارے پاس ایسی کوئی چیز نہیں کے اس بات کو ثابت کرسکیں، ہاں اس فورم پر چند لوگوں کے دیکھ کر ضرور لگتا ہے کے یہ اس سمولیشن میں خرابی کی وجہ سے ہے، خیر مذاق ایک طرف میں سوچتا ہوں کے ہوسکتا ہے یہ سمولیشن نہ ہو صرف ایک ” کونٹرولنگ نظام ” ہو جو وقت کے روانی میں کمی بیشی کرتا ہو، مثال کے طور پر کیا ایسا ممکن ہے زمین سے تقریبا ایک نوری سال کے فاصلے پر آج ہفتے کا دن ہو جبکے زمین پر جمعہ ہو ؟ مجھے پتا ہے اس بات کو سمجھانا ذرا مشکل بات ہے لیکن میں ایک اور کوشش کرتا ہوں، ہوسکتا ہے ہمارے مستقبل کے لوگوں نے زمین کے گرد کوئی ایسا غیر مرئی، نہ نظر آنے والا توانائی کا حصار کھینچ رکھا ہو، جسکے زیر اثر زمین پر وقت کی روانی میں کمی یا بیشی کی جاسکتی ہو، اگر آپ اس حصار میں ہوں تو آپ کو یہ محسوس نہیں ہوگا، ہاں اس حصار کے باہر لوگوں کو اسکا اثر ضرور نظر آتا ہوگا، جیسے آپ ایک ویڈیو کو سلو موشن میں دیکھ سکتے ہیں، تیز کرسکتے ہیں اور جب چاہیں تو روک بھی سکتے ہیں، لیکن اس ویڈیو میں نظر آنے والی چیزوں کو اس بات کا علم نہیں ہوتا کے وہ اس وقت کس رفتار سے حرکت کر رہے ہیں، اب ایسا کیوں کیا جائے گا ؟

    ہوسکتا ہے کے اگر ہم وقت کو سلو یا تیز کرسکتے ہوں تو اس سے بھی انسانی بقا پر اچھا اثر پڑ سکتا ہے، آپ ممکنہ خرابیوں کو ٹھیک کرسکتے ہیں یا چاہیں تو اپنی مرضی کی تبدیلیاں کر سکتے ہیں، کیا تکنیکی طور پر ایسا ہونا ممکن ہے ؟ اگر آپ ٹیکنولوجی کا مستبل دیکھیں تو یہ بلکل ممکن ہے.

    مجھے پتا تھا کے یہ بات پھر بہت دور نکل جائے گی اور مجھے پتا ہے کے ان تمام باتوں کا فلحال ہمارے پاس کوئی جواب بھی نہیں، یہ صرف چند ممکنات ہیں جنکا کوئی ثبوت نہیں، میں صرف آپ کے ساتھ یہ شیر کرنا چاہتا تھا، آپ کے خیالات کو جاننے اور جواب کا منتظر رہیں گے، شکرن

    • This reply was modified 2 months ago by  bluesheep.
    #14
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 209
    • Posts: 3821
    • Total Posts: 4030
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    bluesheep sahib

    محترم بلیو شیپ صاحب

    بہت بہت شکریہ

    جہاں تک “ممکن” کا تعلق ہے میرے خیال میں ہر چیز ممکن ہو سکتی ہے اب کب کہاں کیسے ممکن ہو اس بات کا مجھے علم نہیں ہے

    اگر میں آپ کی بات کو سمجھ پایا ہوں تو شاید یہ سمجھا ہوں کے مستقبل کی طاقت اپنے حال اور مستقبل کی بقاء کے لئے اگر ضرورت پڑے تو اپنے ماضی میں آ کر ماضی کے حالات اور واقعات تبدیل کر سکتی ہے . ممکن ہے کے ایسا ہی ہو رہا ہو یا ہو چکا ہو یا ہوتا رہے . کچھ سوال جو جنم لیتے ہیں وہ یہ ہیں

    ١) اگر مستقبل کو اپنے حال اورمستقبل کو تحفظ دینے کے لئے ماضی بدلنا پڑتا ہے تو ماضی ،حال اور مستقبل کی قیود ختم ہو جاتی ہیں. نہ کوئی حال ہے نہ کوئی مستقبل نہ کوئی ماضی . تو پھر یہ وقت جو گزر رہا ہے وہ کیا ہے اور جو گزر چکا ہے وہ کیا ہے یا وقت گزرا ہی نہیں ہے اور ساکت ہے یا وقت کچھ بھی نہیں ہے

    ٢) اگر کوئی طاقت مستقبل میں موجود ہے مگر اس کے ماضی کی تبدیلی اس کے حال اور مستقبل کو تبدیل کر سکتی ہے تو اس کا مطلب یہ طاقت موجود نہیں ہے بلکہ ایک واہمہ ہے. اسطرح سمجھ لیں کے جب میں یہ اول فول لکھ رہا ہوں اور کوئی میرے ماضی میں جا کر مجھے ختم کر سکتا ہے تو میں اس وقت لکھ نہیں سکوں گا مگر میں لکھ رہا ہوں . تو اگر اس طرح سے کوئی بھی چیز کبھی بھی تبدیل ہو سکتی ہے تو کسی چیز کی کوئی حقیقت نہیں ہے.

    ٣) مستقبل کی طاقت کو کیا اس سے آگے کی کوئی اور طاقت کنٹرول کر رہی ہے. اور اگر ایسا ہے تو حتمی طاقت اور حتمی مستقبل ہے یا نہیں ہے

    ٤) اس تمام کنٹرول، تبدیلی، بقاء کی جنگ ، کسی اور طاقت کا خوف وغیرہ وغیرہ کا مقصد کیا ہے اور اس تمام قوتوں کا مرکز کیا ہے کہاں ہے اور کیوں ہے

    میرے خیال میں بہت کم انسان اپنی موجودگی اور مقصد کے بارے میں سوچتے ہیں. اور اکثر صرف زندگی گزارنے کو ہی سب کچھ سمجھتے ہیں. لگتا ہے کے آپ جستجو میں ہیں کے یہ سب کیا ہے . ممکن ہے کے یہ کچھ بھی نہ ہو اور ممکن ہے کے یہ وہ سب کچھ ہو جو آپ کے گمان میں ہے اور شائد اس سے بڑھ کر . مجھے اس بات کی خوشی ہے کے آپ کچھ سوچ رہے ہیں

    ایک سوال جو اکثر مجھے تنگ کرتا ہے کے انسانی حیات کے ہزاروں سالوں میں اتنی ترقی کیوں نہیں ہوئی جو پچھلے سو ایک سالوں میں ہوئی ہے . ایسا کیا پا لیا ہے انسان نے جو اس قدر تیزی سے تبدیلی تبدیل ہو رہی ہے . موجودہ انسان کے پاس ایسا کیا آ گیا ہے جو آج سے کئی سال پہلے کے لوگوں کے پاس نہیں تھا اور کیسے انسان نے مٹی کے ایک ذرے میں اتنی بڑی تکنینکی دنیا سمو دی ہے .

    مجھے بھی اکثر لگتا ہے کے ہم سب کسی کا خواب ہیں یا کسی کے تجربہ گاہ میں ایک تجربہ ہیں. جس طرح مختلف غیر جاندار مگر چلتے پھرتے کردار (مسلاً کارٹون )پردہ پر نظر اتے ہیں ، مٹا دئیے جاتے ہیں، پھر ابھرے جاتے ہیں شاید ہم بھی وہی ہیں

    #15
    bluesheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Advanced
    • Threads: 10
    • Posts: 176
    • Total Posts: 186
    • Join Date:
      7 Dec, 2018
    • Location: Pindi HQ

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    bluesheep sahib

    محترم بلیو شیپ صاحب

    بہت بہت شکریہ

    جہاں تک “ممکن” کا تعلق ہے میرے خیال میں ہر چیز ممکن ہو سکتی ہے اب کب کہاں کیسے ممکن ہو اس بات کا مجھے علم نہیں ہے

    اگر میں آپ کی بات کو سمجھ پایا ہوں تو شاید یہ سمجھا ہوں کے مستقبل کی طاقت اپنے حال اور مستقبل کی بقاء کے لئے اگر ضرورت پڑے تو اپنے ماضی میں آ کر ماضی کے حالات اور واقعات تبدیل کر سکتی ہے . ممکن ہے کے ایسا ہی ہو رہا ہو یا ہو چکا ہو یا ہوتا رہے . کچھ سوال جو جنم لیتے ہیں وہ یہ ہیں

    ١) اگر مستقبل کو اپنے حال اورمستقبل کو تحفظ دینے کے لئے ماضی بدلنا پڑتا ہے تو ماضی ،حال اور مستقبل کی قیود ختم ہو جاتی ہیں. نہ کوئی حال ہے نہ کوئی مستقبل نہ کوئی ماضی . تو پھر یہ وقت جو گزر رہا ہے وہ کیا ہے اور جو گزر چکا ہے وہ کیا ہے یا وقت گزرا ہی نہیں ہے اور ساکت ہے یا وقت کچھ بھی نہیں ہے

    ٢) اگر کوئی طاقت مستقبل میں موجود ہے مگر اس کے ماضی کی تبدیلی اس کے حال اور مستقبل کو تبدیل کر سکتی ہے تو اس کا مطلب یہ طاقت موجود نہیں ہے بلکہ ایک واہمہ ہے. اسطرح سمجھ لیں کے جب میں یہ اول فول لکھ رہا ہوں اور کوئی میرے ماضی میں جا کر مجھے ختم کر سکتا ہے تو میں اس وقت لکھ نہیں سکوں گا مگر میں لکھ رہا ہوں . تو اگر اس طرح سے کوئی بھی چیز کبھی بھی تبدیل ہو سکتی ہے تو کسی چیز کی کوئی حقیقت نہیں ہے.

    ٣) مستقبل کی طاقت کو کیا اس سے آگے کی کوئی اور طاقت کنٹرول کر رہی ہے. اور اگر ایسا ہے تو حتمی طاقت اور حتمی مستقبل ہے یا نہیں ہے

    ٤) اس تمام کنٹرول، تبدیلی، بقاء کی جنگ ، کسی اور طاقت کا خوف وغیرہ وغیرہ کا مقصد کیا ہے اور اس تمام قوتوں کا مرکز کیا ہے کہاں ہے اور کیوں ہے

    میرے خیال میں بہت کم انسان اپنی موجودگی اور مقصد کے بارے میں سوچتے ہیں. اور اکثر صرف زندگی گزارنے کو ہی سب کچھ سمجھتے ہیں. لگتا ہے کے آپ جستجو میں ہیں کے یہ سب کیا ہے . ممکن ہے کے یہ کچھ بھی نہ ہو اور ممکن ہے کے یہ وہ سب کچھ ہو جو آپ کے گمان میں ہے اور شائد اس سے بڑھ کر . مجھے اس بات کی خوشی ہے کے آپ کچھ سوچ رہے ہیں

    ایک سوال جو اکثر مجھے تنگ کرتا ہے کے انسانی حیات کے ہزاروں سالوں میں اتنی ترقی کیوں نہیں ہوئی جو پچھلے سو ایک سالوں میں ہوئی ہے . ایسا کیا پا لیا ہے انسان نے جو اس قدر تیزی سے تبدیلی تبدیل ہو رہی ہے . موجودہ انسان کے پاس ایسا کیا آ گیا ہے جو آج سے کئی سال پہلے کے لوگوں کے پاس نہیں تھا اور کیسے انسان نے مٹی کے ایک ذرے میں اتنی بڑی تکنینکی دنیا سمو دی ہے .

    مجھے بھی اکثر لگتا ہے کے ہم سب کسی کا خواب ہیں یا کسی کے تجربہ گاہ میں ایک تجربہ ہیں. جس طرح مختلف غیر جاندار مگر چلتے پھرتے کردار (مسلاً کارٹون )پردہ پر نظر اتے ہیں ، مٹا دئیے جاتے ہیں، پھر ابھرے جاتے ہیں شاید ہم بھی وہی ہیں

    جے صاحب آپ کی جے ہو

    محال مجسم، ظاہری تضاد یا پیرا ڈوکس اپنی خود نوعیت میں انتہائی مشکل چیز ہیں، آپ کے پہلے سوال کا جواب بھی لہٰذا ظاہری تضاداد کا ہی شکار ہوگا، یعنی اسکا کوئی اچھا جواب نہی، لیکن مجھے ایک بات کچھ کچھ سمجھ آتی ہے، ہماری زمین اور مکاں کے بارے میں موجودہ معلومات انتہائی ناکافی ہیں، ہوسکتا ہے ہمیں پتا ہی نہ ہو کے کیا کیا ممکن ہے، یہ این ممکن ہے کے جن جن محال مجسم چیزوں کے طرف اشارہ کر رہے ہیں وہ اصل میں وجودو رکھتی ہوں.

    جواب دو کیلئے عرض ہے کے نظریا اضافیت کی رو سے ممکن ہے کے اگر مستقبل ماضی کے معملات میں چھیڑ خانی کرتے تو اسکا اثر اس مستقبل پر نہ ہو جہاں سے یہ انجیرنگ کی جارہی ہو، یہ بھی ممکن ہے کے کائنات اس وقت ایسے حصوں میں بٹ جائے جہاں دونوں امکانات کے ہونے کے برابر چانس ہوں. فزکس میں ایسی تھیوری موجود ہے جسکی رو میں کائنات جب اسکو کسی بنیادی بات پر فیصلہ کی ضرورت ہوتی ہے تو وہ بجاے کسی ایک چیز کا انتخاب کرے وہ دونوں کا اختیار یا آپشن استعمال کرلیتی ہے. یہ ایک جز ہے جو ہوسکتا ہے، لیکن اس سے زیادہ مجھے جس چیز کا امکان نظر آتا ہے وہ کچھ ایسا ہے کے اگر آپ پانچ سو سال بعد مستقبل میں بیٹھ کر اپنے ماضی میں کوئی تبدیلی چاہتے ہوں اور اپنے کسی پڑ دادا کے پڑ دادا کے کسی خاص فیصلے میں تبدیلی چاہتے ہوں تو آپ کے کریں گے ؟ آپ بیشک چاہیں تو صرف انکے خیالات کو تبدیل کرسکتے ہیں کے وہ انکی زندگی کے ایک خاص موڑ کسی خاص فیصلے کی طرف مائل ہوں، اب وہ کوئی بھی چیز ہوسکتی ہے لیکن انسانی خیالات پر اثر انداز ہونا اصل میں نہیات ہی آسان چیز ہے، ایسی صورت میں آپ کے خیال سے آپ کے دوسرے سوال کوئی ممکن حل نکل سکتا ہے ؟

    تیسرے سوال کے جواب میں، جی ہاں یہ این ممکن ہے کے مستقبل کو اسکا مستقبل کنٹرول کر رہا ہو، جیسے سمو لیشن میں یہ ممکن ہے کے آپ ایک سے کسی طور پر باہر آجائیں اور باہر اپر آپ کو پتا چلے اب ایک دوسری میں چلے گئے ہیں، اس امکان کے لامتنائی ہونے کے بھی اتنے ہی چانسز ہیں.

    اگلے سوال کے جواب میں صرف اتنا کہنا چاہوں گا کے میری سوچ میں ہر ” زہین ” یا ” غیر زہین ” انٹلیجنٹ ” زندہ چیز،یا زندہ نماکوئی چیز جو چاہے حیاتیاتی شکل میں وجود رکھتی ہو یا کسی اور شکل میں، چاہے اسکا ” آئ قیو ” دس ہو یا دس ہزار، جب بھی ایسی کوئی زندگی نما یا زندہ چیز اس کائنات میں تخلیق ہوگی تو اسکی گھٹی میں یا اسکے بنیادی اصول میں بقا کی جبلت کو اہمیت ہوگی، اگر کوئی اصول لکھا جائے گا تو بقا کو ہمیشہ سب سے اپر رکھا جائے گا، اور یہ اصول ہمیشہ اپر رہا ہے اور ہمیشہ رہے گا، جیسے خدا کے بارے میں لوگ کہتے ہیں وہ ہمیشہ سے ہے اور ہمیشہ رہے گا جو میری نظر میں بقا کے اس کائناتی اصول کی ایک بگڑی ھوئی توجیح ہے جو ہم اپنی کم عقلی کی وجہ سے نہیں کر سکے تھے. مجھے نہیں پتا کے ہماری اس کائنات میں بقا یا سروائیوال کو اتنی اہمیت کیوں ہے، کیا دوسری کائنات میں ایسی چیزیں کم ہونگی ؟ مجھے نہیں پتا ہاں لیکن اپنی کائنات میں اسکی اتنی اہمیت معنی رکھتی ہے، یہ جبلت اپنے آپ میں آپ سے وہ کام کرواتی ہے جو شاید آپ نہ کرنا چاہتے ہوں، یہ آپ کو مجبور کرتی ہے کے آپ ان چیزوں پر بھی غور کریں جو شاید وجود نہ رکھتی ہوں، ان خطرات پر غور کریں جو شاید وجود تو نہ رکھتے ہوں لیکن ممکنات میں شامل ہوں، مجھ سے پوچھیں تو آپ آج بھی اپنی ساری زندگی اس بقا کی جبلت کے زیر اثر گزار رہے ہیں، اگر آج آپ غور کریں تو انسان آج بھی اپنے سماجی، سیاسی، مذہبی، اقتصادی، روحانی فیصلے اسی جبلت کے زیر اثر کر رہا ہے، کیا خیال ہے آپ کا ؟

    رہی بات کے انسان نے اتنی ترقی اتنی جلدی کیسے کرلی، میرے خیال سے اس میں کوئی خاص بات نہیں اور میں اس بات پر آپ سے معذرت خواہ ہوں کیوں کے میرے خیال سے آپ کی توجیح ماضی کے انسانوں کے بارے میں پوری درست نہیں، وہ کچھ حد تو ٹھیک ہے لیکن مکمل درست نہیں، دیکھیں، انسانی ترقی جیسے ٹیکنولوجی وغیرہ ہمیشہ ہی تیز رفتار رہی ہے، ٹیکنولوجی کی رفتار ہمیشہ تیز ہوتی ہے اگر اسکو موافق حالات درپیش ہوں، مثلا پچھلے سو سالوں میں گو کے انسانیت کو مشکل حالت درپیش تھے مگر انکی بقا کو کوئی بہت زیادہ خطرہ نہیں تھا، کھانے کو خوراک بھی میسر تھی اور سوچنے کیلئے کچھ وقت بھی، پھر انسانی جبلت پر مشکل وقت ہو تو وہ پھر نیے طریقے ڈھونڈتی ہے ان سے نجات کیلئے، جیسے دو جنگوں نے جہاں بہت تباہی مچائی، کسی حد تک، وہیں نئی نئی ایجادات کو جنم دیا، ٹیکنولوجی بھی ہمیشہ ایسی ہی کام کرتی ہے، آپ دو چیزوں کو ایجاد کرتے ہیں اور پھر ان دو چیزوں کے ملاپ سے ایک تیسری بہتر چیز بنا لیتے ہیں، مثلا برقی موٹر سے کتنی ہی اور دوسری ایجادات ممکن ہوئیں وہ میں اور آپ جانتے ہیں، لیکن کیا ماضی میں ایسا ممکن تھا ؟ جی ہاں-

    ماضی میں بھی جب انسانیت کو تھوڑا سا وقت ملا جہاں وہ کچھ آرام سے سوچ بچار کرسکتے تھے اور انکو خوراک اور کچھ امن اور حفاظت درپیش تھی وہاں بھی انسانی ٹیکنولوجی نے نہایت تیزی سے ترقی کی، مثال کے طور پر مصری سلطنت کچھ ہزار سالوں پر محیط تھی اور اس دوران انہوں نے بے مثال ترقی کی، آج بھی انکے شاہکار آپ اور میں دیکھ سکتے ہیں، پھر دور ناجائیں، خود ہمارے اپنے علاقے میں موئینجو دڑو جیسی تہذیب موجود تھی، چونکے اس دور میں آبادی کم تھی اور وہ دور دور تھیں تو انکو کچھ اپنے لوکل مسائل کا ادراک تھا اور مسائل کا مثلا تھا، انکی جبلت انکو بہتر سے بہتر علاقوں پر قبضے کی شاید زیادہ توجہ دیتی ہی تو شاید ہم اور آپ آج کی ترقی کی رفتار پر انکو شاید اپنے جیسا نہیں سمجتھے، لیکن آپ مصر سے لیکر ہندوستان، یا میکسیکو میں مایا تہذیب کا جائزہ لے لیں، جہاں بھی کچھ عرصہ سکون کا ملا وہاں ٹیکنولوجی نے انتہائی تیز رفتار سے ترقی کی، ہمارا موجودہ پیریڈ صرف چونکے لمبا ہے لہٰذا ہماری ترقی کی شرح اور تعداد بھی زیادہ ہے اور یہ اسی طریقہ سے چلتی رہی تو کچھ بعید نہیں کے ہم اس سے بھی بہت آگے چلے جائیں، جسکا تھوڑا سا تذکرہ جناب زندہ رود صاحب نے اپنی ایک پوسٹ پر اپر بھی کیا ہے.

    میں نے ایک بات نوٹ کی ہے اور ہوسکتا ہے آپ بھی اس سے اتفاق کریں، ہر وہ چیز جو انسانی ذھن سوچ سکتا ہے، تخلیق کرسکتا ہے، چاہے تخیل میں یا کسی چس کے رد عمل میں، وہ یا تو وجود رکھتی ہے یا وجود میں آجاتی ہے، جیسی کچھ پہلے تک لوگ پرندوں کو دیکھ کر سوچتے تھے کے جب وہ ہم کو اپر سے نیچے دیکھتے ہونگے تو انکو کیسا دیکھتا ہوگا، پھر خود ووہی انسان کسی اونچی جگا چڑھ کر نیچے دیکھ کر کچھ اور محسوس کرتے ہونگے، لیکن پھر سوچ انکو کہتی ہوگی، چلو اب مجھے پتا چل گیا کے اپر سے نیچے دیکھنے میں کیسا لگتا ہے، لیکن کیا ہی اچھا ہو یہ اگر میں اڑان بھر سکوں اور دیکھوں کے آگے کیا ہوتا ہے یہ تخیل بہت پہلے سے موجود تھا، لیکن آج آپ اور میں جانتے ہیں کے اس خیال کی حقیق شکل موجود ہے، آپ جو سوچ رہے ہیں وہ بھی کہیں اپنا وجود رکھتا ہے.

    • This reply was modified 2 months ago by  bluesheep.
    #16
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 209
    • Posts: 3821
    • Total Posts: 4030
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    bluesheep sahib

    محترم بلیو شیپ صاحب

    بہت شکریہ اور بہت عمدہ

    آپ بات کو گفتگو، سوچ اور ذہانت کے اس مقام پر لا جا چکے ہیں جو میری عقل اور سوچ سے کئی صدیوں اور کوسوں کی دوری پر ہے . میں لاکھ کوشش کروں تو بات کو آگے بڑھانے میں ناکام ہوں گا لیکن کوشش کروں گا

    میں ممکن پر یقین رکھتا ہوں کیونکہ بہت کچھ جو پہلے نا ممکن سمجھا جاتا تھا اور اب ممکن ہے . میں ممکن پر اس لئے بھی یقین رکھتا ہوں کے مجھے کچھ بھی نہیں خبر ہے اور لہٰذا میں محدود سوچ کا نہ قائل ہوں نہ قیدی . ممکن ہے کے ممکن ایک مفروضہ ہو مگر یہ بھی مکین ہے کے ممکن لا محدود ہو .

    اس کائنات میں جو اگر موجود ہے تو کیا کیا راز چھپے ہیں یہ شاید کبھی بھی پورے طرح سے آشکارہ نہ ہو سکیں . اور اگر یہ کائنات موجود نہیں ہے اور یہ سب کچھ کسی کا خواب ، کسی کا ایک تجربہ، کسی کا ایک کھیل ہے تو بھی کچھ نہ کچھ ضرور موجود ہے . دونوں صورتوں میں کئی راز ہیں، کئی پہلو ہیں، کئی گتھیاں ہیں. سب کچھ پرسرار ہے.

    مجھے اس بات سے انکار نہیں کے انسان نے ماضی میں بہت کچھ کیا ہے مگر جو رفتار اب ہے وہ شاید پہلے نہیں تھی. پہلے تعمیر سازی، فلکیات، فنون لطیفہ اور کسی حد تک تکنینکی حوالوں سے انسان نے بہت کچھ حاصل کیا مگر مجھے لگتا ہے کے اب ہر چیز میں انسان بہت کچھ کر رہا ہے. شاید آج سے پچاس سو برس بعد ہماری اس تبدیلی اور ترقی کو بہت سست سمجھیں کیونکہ انکی ترقی اور تبدیلی کی رفتار شاید آج سے بھی زیادہ تیز ہو یا شائد پچا سو سال بعد کچھ بھی نہ ہو کیونکہ ہم بہت کچھ ختم بھی کرتے جا رہے ہیں اور تیزی برقرار رکھنا شاید ہمیشہ ممکن نہ ہو

    سب کچھ اتنا پرسرار ہے

    #17
    JMP
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 209
    • Posts: 3821
    • Total Posts: 4030
    • Join Date:
      7 Jan, 2017

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    bluesheep sahib

    محترم

    میں انتظار میں ہوں کے آپ اس موضوع کے اسرار اور رموز پر مزید روشنی ڈالیں گیں

    #18
    bluesheep
    Participant
    Offline
    Thread Starter
    • Advanced
    • Threads: 10
    • Posts: 176
    • Total Posts: 186
    • Join Date:
      7 Dec, 2018
    • Location: Pindi HQ

    Re: موجودہ حالات کو مستقبل سے چلایا جارہا ہے?

    bluesheep sahib

    محترم

    میں انتظار میں ہوں کے آپ اس موضوع کے اسرار اور رموز پر مزید روشنی ڈالیں گیں

    جی سر میں کوشش کروں گا لیکن اگر اس دوران اگر آپ کے من میں کوئی بات آتی ہے تو براہ مہربانی ضرور شیر کیجئے گا. چاہے وہ بات اس زمانے میں آپ کو ” ملحد ” کیوں نہ بنا دے .

Viewing 18 posts - 1 through 18 (of 18 total)

You must be logged in to reply to this topic.

Navigation