Thread: اپنا بچہ‘ فوج کی نظر میں دشمن قوتوں کا آلۂ کار کیوں بن گیا؟‘

Home Forums Siasi Discussion اپنا بچہ‘ فوج کی نظر میں دشمن قوتوں کا آلۂ کار کیوں بن گیا؟‘

This topic contains 43 replies, has 12 voices, and was last updated by  Bawa 1 week, 1 day ago. This post has been viewed 874 times

Viewing 4 posts - 41 through 44 (of 44 total)
  • Author
    Posts
  • #41
    Bawa
    Participant
    Online
    • Expert
    • Threads: 129
    • Posts: 8726
    • Total Posts: 8855
    • Join Date:
      24 Aug, 2016

    Re: اپنا بچہ‘ فوج کی نظر میں دشمن قوتوں کا آلۂ کار کیوں بن گیا؟‘

    Bawa sahib

    انتہائی محترم باوا صاحب سلام علیکم

    امید ہیکے آپ خیریت سے ہیں

    آپکے خیالات پڑھ کر بہت خوشی ہوئی. اچھا لگا کے آپ ہر کسی کے حقوق کے تحفظ کی حمایت کرتے ہیں

    مجھے یہ سمجھ نہیںآتا کے یہاں ہر ایک کو اپنے حقوق حاصل کرنے کے لئے جدوجہد کیوں کرنی پڑتی ہے . ایک ہی ریاست کے باسیوں کو ایک جسے حقوق کیوں حاصل نہیں ہوتے . وہ کون ہیں اور وہ کونسی قوتیں ہیں جو اس ریاست کی مخلتف اکائیوں کے حقوق کو سلب کر کے بیٹھے ہیں

    ایسا کیوں ہے کے ہر یق حقوق کی بات کر رہا ہے . کیا ان قوتوں کو آشکارا کیا جا سکتا ہے جو غاصب ہیں

    و علیکم السلام محترم جے بھائی جی

    میں ٹھیک ہوں، امید ہے آپ بھی بخیریت ہیں

    فوجیوں کے زیر قبضہ ملکوں میں عوام کو جتنے حقوق حاصل ہوتے ہیں، وہ ہم سب اچھی طرح جانتے ہیں. ملک کے کسی ایک خطے کے لوگ نہیں بلکہ پورا ملک ہی وردی پوشوں کی دہشتگردی کا شکار ہے

    وردی پوشوں کی دہشتگردی کا جو واقعہ ساہیوال میں دن دیہاڑے پورے ملک نے اپنی آنکھوں کے سامنے دیکھا ہے مجھے تو ان مقتولین کے ورثاء کو انصاف ملتا دکھائی نہیں دیتا ہے، فوجیوں کی غندہ گردی کے جو واقعات ملک کے ایسے حصوں میں ہوتے ہیں جہاں میڈیا کی رسائی نہیں ہے انہیں کہاں انصاف ملتا ہوگا؟ کب تک لوگ وردی پوش دہشتگردوں کے ہاتھوں مرتے رہیں اور ان کے خوف سے زبانیں بند کیے رکھیں؟ اگر عوام کی قسمت میں وردی پوشوں کے ہاتھوں مرنا ہی لکھا ہے تو کیوں نہ تھوڑا اعتجاج کرکے مریں؟ بقول فیض احمد فیض

    کچھ حشر تو ان سے اٹھے گا کچھ دور تو نالے جائیں گے

    لوگ اپنے حقوق کی بات کریں گے اور اعتجاج کریں گے تو ان غاصب قوتوں کو آشکارا کرکے ان سے چھٹکارا حاصل کیا جا سکتا ہے

    کٹتے بھی چلو، بڑھتے بھی چلو، بازو بھی بہت ہیں سر بھی بہت
    چلتے بھی چلو کہ اب ڈیرے منزل ہی پہ ڈالے جائیں گے

    #42
    Guilty
    Participant
    Offline
    • Professional
    • Threads: 0
    • Posts: 3283
    • Total Posts: 3283
    • Join Date:
      6 Nov, 2016

    Re: اپنا بچہ‘ فوج کی نظر میں دشمن قوتوں کا آلۂ کار کیوں بن گیا؟‘

    اسی اکثریتی فارمولے کے تحت جب مہاجر سندھیوں یا پنجابیوں کو موردِ الزام ٹہراتے ہیں تو ہمارے تمام اصول پسند اس وقت کیوں یہ فارمولہ بھول کر مہاجروں کو گالیاں نکالنا شروع کردیتے ہیں؟؟

    آپ کی بات ٹھیک ہے ۔۔۔۔ فارمولے  کے حساب سے بڑی قوم کو ہی گا لیاں پڑتی ہیں ۔۔۔۔۔  اور چھوٹی قوموں کی پیمپرنگ کی جاتی ہے ۔۔۔۔

    مہاجروں کے کیس میں بھی  گالیاں اور غاصب پنجاب کو ہی گرادنہ جاتا ہے ۔۔۔۔۔

    لیکن یہ بھی ہوتا ہے کہ ۔۔۔۔ مہاجروں کی بھی پلٹ کر گا لیاں پڑجاتی ہے ۔۔۔۔۔ میرا خیال ۔۔۔۔ اس لیئے کہ مہاجروں کا کیس دیگر کامن چھوٹی قوموں سے زرا مختلف ہے ۔۔۔۔

    ایک تو یہ کہ مہاجروں کے مخالفین  کو ۔۔۔۔۔ اپنی گالی کا جواب دینے کا موقع اس لیے ملتا ہے کہ ۔۔

    ۔۔ایم کیو ایم نے ۔۔۔۔ لفظ مہاجر ۔۔۔۔ خود اختیار کرکے قوم پر منفی لیبل لگا یا  کیا تفریق سے بنا نے کے لیئے

    ورنہ نہ تو تمام مہاجر قوم ایم کیو ایم تھی ۔۔۔۔ دوسرے مہا جر تو قوم کا نام نہیں تھا  قوم کا اصل نام تو پہلے ھندوستانی تھا یا انکو ۔۔۔۔ اردو سپینکگ ۔۔۔۔۔ کہلوانا چاھیے ۔۔

    بنیا دی طور پر تو مہا جر نام رکھنا ۔۔۔۔ تفریق ۔۔۔۔ نفاق ۔۔۔ اور نیگیٹو ۔۔ علا مت تھا  ۔۔۔۔ اور دوسروں کو قابل قبول نہیں تھا ۔۔۔۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    بنگا لیوں ۔۔۔ بلوچوں نے اپنے حقیقی نام سے تحریکیں شروع کیں تو ان کو پلٹ کر تنقید کرنا کافی مشکل تھا ۔۔۔۔

    ۔۔۔۔

    دوسرے میرا زاتی خیال  ہے کہ چونکہ ۔۔۔ الطاف حسین ۔۔۔۔ نے اپنی ایم کیو ایم ۔۔۔ سیاست کو ۔۔۔ پوری مہاجر قوم کی کمر پر زبردستی لاد دیا تھا  ۔۔۔ اور اوپر سے  قتل وغارت گری بھی  مچا ئی ۔۔۔

    اس لیئے بھی مخالفین کو ۔۔۔ مہاجروں  کو گا لیاں دینے کا موقع ملا ۔۔۔۔  یہ آپشن بنگالیوں بلوچو ں ۔۔۔۔ پٹھا نوں کے کیس میں موجود نہیں تھی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    ۔۔۔۔۔

    تیسرے میرا زاتی خیال ہے ۔۔۔۔ مہا جروں کو اس لیئے بھی گا لیاں پڑتی ہیں کہ ۔۔۔۔ پا کستانی کی بقیہ قومیں ۔۔۔۔ پنجابی پٹھان بلوچ ۔۔۔۔

    جنگجو ۔۔۔ غصے ۔۔۔ خان گیری کا ۔۔۔۔  بیک گراونڈ رکھتی ہیں اور ۔۔۔۔ بہادری ۔۔۔ لڑائی ۔۔۔۔ جیت ۔۔۔ کو صرف اپنے سے ہی جڑا  سمجتھی تھیں ۔۔۔۔۔۔

    ۔

    لیکن ۔۔۔۔ ایم کیو ایم ۔۔۔۔ کے دور میں ۔۔۔ کراچی میں ھزارھا نوجوانوں نے ۔۔۔ ٹھیک یا غلط ۔۔۔۔۔ گا لی کھا نے اور گولی مارنے کی جو نڈر بے باک تاریخ لکھی ۔۔۔۔۔۔

    اس  دلیرانہ ۔۔۔۔ گولی کے ٹورنامٹنس   اور ۔۔۔۔  جان لینے اور دینے کی جو مثا لیں قائم ہو ئیں ۔۔۔۔۔   ایک ایک شہری مسلحہ ایک ایک شہری کفن باند ھ کر نکلتا تھا

    شہری علاقے میں گولی اور موت کے ایسے لا ئیو کھیل کی مثا ل بھی پہلے کہیں دیکھنے میں نہیں آئی ۔۔۔۔۔۔۔۔

    ۔۔ اس چیز نے بھی خاص کر سند ھیوں ۔۔۔ پنجا بیوں ۔۔۔۔ کو پیچھے چھوڑ دیا  ۔۔۔۔

    ۔۔

    ان لوگوں کا خیال تھا ۔۔۔ کراچی والے پتلے دبلے  پانی والا دودھ پینے والے شہری  لوگ کیا جانے بہادری ۔۔۔۔۔۔۔

    مہاجروں کی  بندوق  کی زورآوری نے  بھی دوسری قوموں کو بہت  ڈا مینیٹ کیا جس کا بدلہ  ۔۔۔۔۔۔ اور انہوں نے موقع ملتے ہیں ۔۔۔ مہا جروں کو گا لیوں سے نوازا کر نکا لا ۔۔۔۔۔۔

    ۔۔۔۔اس قصے کے علاوہ ۔۔۔۔۔

    دنیا میں یہ بہت عام پریکٹس ہے کہ ۔۔۔۔ بڑی قوم کو ۔۔۔ چھوٹی قوموں سے گا لیاں پڑے بغیر کاروبار سیا ست چلتا نہیں ہے  ۔۔۔۔

    چاھے وہ پا کستان کی بڑی پنجابی قوم ہو ۔۔۔۔۔۔چھوٹی قوم الزام اور گا لیاں دیں گی ۔۔۔۔۔۔

    چاھے بھارت کی بڑی ھند و اکثریتی قوم ہو ۔۔۔۔۔۔ چھوٹی قومیں الزام اور گا لیاں دیں ۔۔۔۔۔

    چاھے نارتھ میں بڑی پٹھان قوم ہو ۔۔۔ ھزارہ چھوٹی قوم سے گا لیاں پڑیں گی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    ۔

    زما نے کے چلن کے حساب سے بڑی قوموں کو گا لیاں پڑنا نارمل پریکٹس ہے اس سے بچا نہیں جا سکتا ۔۔۔۔۔

    • This reply was modified 1 week, 3 days ago by  Guilty.
    #43
    SaleemRaza
    Participant
    Offline
    • Expert
    • Threads: 623
    • Posts: 11029
    • Total Posts: 11652
    • Join Date:
      13 Oct, 2016
    • Location: سہراب گوٹھ ۔

    Re: اپنا بچہ‘ فوج کی نظر میں دشمن قوتوں کا آلۂ کار کیوں بن گیا؟‘

    رضا بھائی میں نے پر امن اعتجاج کی حمات کی بات کی ہے اگر کوئی قانون کو ہاتھ میں لیے بغیر اپنے حقوق کے حصول کیلیے اعتجاج کرتا ہے تو اسے اسکا آئینی اور جمہوری حق سمجھتا ہوں اگر کوئی کنٹینر پر چڑھ کر اعتجاج کرتا ہے تو اسے کنٹینر پر ہی لمبیاں پا کر چھتر مارنے چاہیے اور اگر کوئی اعتجاج کرتا ہوا بھرے مجمعے میں شلواریں گیلی ہونے کی بات کرتا ہے تو اسکی شلوار اتار کر سکھانے کیلیے سپریم کورٹ کے جنگلے پر ڈال دینی چاہیے اور اسے اسوقت ننگا کھڑا رکھنا چاہیے جب تک اسکی گیلی شلوار سوکھ نہ جائے :bigsmile: :lol: :hilar: صوبہ سرحد کوئی نام نہیں تھا. وہ تو عارضی طور پر اسکی لوکیشن کے مطابق اسے نارتھ ویسٹ فرنٹیئر پراونس کا نام دے رکھا تھا جس کا اردو نام شمال مغربی سرحدی صوبہ بنتا تھا اور اسے مختصر طور پر صوبہ سرحد کہتے تھے. اپنے صوبے کو ایک مستقل نام دینا وہاں کی عوام کا حق اور ایک دیرینہ مطالبہ تھا

    باوا جی ۔۔

    پر امن کی اعتجاج کی حمائت تو ہم سب ہی کرتے ہیں لیکن یہ سارے پر امن اعتجاج پر امن نہیں رہتے ۔۔پر امن اعتجاج والے  جو امن کے جھنڈے اٹھائے ہوتے ہیں انہوں جھنڈوں کو الٹا کر کے ڈنڈے بنا لیتے ہیں۔۔۔۔۔میں ذاتی طور پر الیکشن ہو  چکنے کے بعد  کسی بھی اعتجاج  کے حق میں نہیں ہوں جس سے عوام کو روزمرہ زندگی  کے امور نمٹانے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑے ۔۔۔۔جس کسی کو آپنے مطالبات منوانے ہیں ۔۔میں پھر کہتا ہے جو لوگ ووٹ مانگتے آتے ہیں ان سے بجائے آپنے مخالف کی زندگی تنگ کرنے کے آپنے مطالبات کی بات کریں ۔۔۔اس قسم کی چیزیں ہونے میں بہت سارا وقت درکار ہوتا ہے ۔۔لیکن یہ لوگ وقت کا انتظار کرنے کی بجائے ہیتھلی پر سرسوں اگانا چاہتے ہیں ۔۔۔۔۔اور چند مشنڈے   لفنگے لیکر سڑکوں پر آجاتے ہیں ۔خوئی کنٹیر پر چڑ جاتا ہے کوئی  جی ٹی روڈ پر لوگوں کو تھلے دیتا پھر رہا ہے ۔۔۔۔۔۔باقی جب صوبہ سرحد کا نام بدل خر خواہ مخواہ  رکھ دیا گیا ہے ۔ان کو آپنی شناخت مل گئی ہے ۔۔تو یہ لوگ کون  حقوق کے کس گھوڑے کو بہرظلمات میں بھگائی جارے ہیں ۔۔۔

    :jhanda: :jhanda:   :jhanda:   :jhanda:

    اسلام آباد: (دنیا نیوز) مقتول ملک ماتوڑ کے بھائی پرخے جان نے کہا ہے کہ کچھ عرصہ پہلے حیات خان کے غلط بیان پر مبنی ویڈیو سامنے آئی، اصل حقائق سے دنیا کو آگاہ کرنا چاہتا ہوں۔
    تفصیلات کے مطابق خیسور واقعہ پر ڈپٹی کمشنر شمالی وزیرستان کی رپورٹ سامنے آ گئی جس میں مقتول ملک ماتوڑکے، کے بھائی پرخے جان کا بیان بھی شامل ہے۔

    مقتول ملک ماتوڑکے، کے بھائی پرخے جان نے 6 افراد پر قتل کی ذمہ داری عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کچھ عرصہ پہلے حیات خان کے غلط بیان پر مبنی ویڈیو سامنے آئی، میں اصل حقائق سے دنیا کو آگاہ کرنا چاہتا ہوں۔

    رپورٹ کے مطابق مقتول ماتوڑ کے بھائی نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ قتل کا ذمہ دار منظور پشتین، محسن داوڑ اور علی وزیر اور دیگر ہیں۔ پی ٹی ایم نے معاملہ میں شامل ہو کر اور ڈی آئی خان میں وزیر جرگہ کے ذریعہ ہمارے گھر گرانے کی کوشش کی، ناکامی پر مجھے اور میرے بھائی کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دی گئیں۔

    پرخے جان نے بیان میں کہا کہ 9 فروری کو دو موٹر سائیکل سواروں نے نورنگ لکی مروت میں مجھ پر فائرنگ کی لیکن میری جان بچ گئی۔ اس کے بعد 10 فروری کو میرے بھائی گل شماد خان عرف ماتوڑکے کو شہید کر دیا گیا۔

    مقتول ماتوڑکے نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ میرے بھائی کے قتل کی ذمہ داری منظور پشتین، محسن داوڑ، علی وزیر، مالک نصر اللہ پر عائد ہوتی ہے جبکہ ان کے ساتھ ساتھ ڈاکٹر گل عالم اور عید رحمان بھی اس قتل میں ملوث ہیں، یہ تمام افراد غیر قانونی جرگے اور خیسور واقعہ کے ذمہ دار ہیں۔

    • This reply was modified 1 week, 2 days ago by  SaleemRaza.
    #44
    Bawa
    Participant
    Online
    • Expert
    • Threads: 129
    • Posts: 8726
    • Total Posts: 8855
    • Join Date:
      24 Aug, 2016

    Re: اپنا بچہ‘ فوج کی نظر میں دشمن قوتوں کا آلۂ کار کیوں بن گیا؟‘

    باوا جی ۔۔ پر امن کی اعتجاج کی حمائت تو ہم سب ہی کرتے ہیں لیکن یہ سارے پر امن اعتجاج پر امن نہیں رہتے ۔۔پر امن اعتجاج والے جو امن کے جھنڈے اٹھائے ہوتے ہیں انہوں جھنڈوں کو الٹا کر کے ڈنڈے بنا لیتے ہیں۔۔۔۔۔میں ذاتی طور پر الیکشن ہو چکنے کے بعد کسی بھی اعتجاج کے حق میں نہیں ہوں جس سے عوام کو روزمرہ زندگی کے امور نمٹانے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑے ۔۔۔۔جس کسی کو آپنے مطالبات منوانے ہیں ۔۔میں پھر کہتا ہے جو لوگ ووٹ مانگتے آتے ہیں ان سے بجائے آپنے مخالف کی زندگی تنگ کرنے کے آپنے مطالبات کی بات کریں ۔۔۔اس قسم کی چیزیں ہونے میں بہت سارا وقت درکار ہوتا ہے ۔۔لیکن یہ لوگ وقت کا انتظار کرنے کی بجائے ہیتھلی پر سرسوں اگانا چاہتے ہیں ۔۔۔۔۔اور چند مشنڈے لفنگے لیکر سڑکوں پر آجاتے ہیں ۔خوئی کنٹیر پر چڑ جاتا ہے کوئی جی ٹی روڈ پر لوگوں کو تھلے دیتا پھر رہا ہے ۔۔۔۔۔۔باقی جب صوبہ سرحد کا نام بدل خر خواہ مخواہ رکھ دیا گیا ہے ۔ان کو آپنی شناخت مل گئی ہے ۔۔تو یہ لوگ کون حقوق کے کس گھوڑے کو بہرظلمات میں بھگائی جارے ہیں ۔۔۔ :jhanda: :jhanda: :jhanda: :jhanda: اسلام آباد: (دنیا نیوز) مقتول ملک ماتوڑ کے بھائی پرخے جان نے کہا ہے کہ کچھ عرصہ پہلے حیات خان کے غلط بیان پر مبنی ویڈیو سامنے آئی، اصل حقائق سے دنیا کو آگاہ کرنا چاہتا ہوں۔ تفصیلات کے مطابق خیسور واقعہ پر ڈپٹی کمشنر شمالی وزیرستان کی رپورٹ سامنے آ گئی جس میں مقتول ملک ماتوڑکے، کے بھائی پرخے جان کا بیان بھی شامل ہے۔ مقتول ملک ماتوڑکے، کے بھائی پرخے جان نے 6 افراد پر قتل کی ذمہ داری عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کچھ عرصہ پہلے حیات خان کے غلط بیان پر مبنی ویڈیو سامنے آئی، میں اصل حقائق سے دنیا کو آگاہ کرنا چاہتا ہوں۔ رپورٹ کے مطابق مقتول ماتوڑ کے بھائی نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ قتل کا ذمہ دار منظور پشتین، محسن داوڑ اور علی وزیر اور دیگر ہیں۔ پی ٹی ایم نے معاملہ میں شامل ہو کر اور ڈی آئی خان میں وزیر جرگہ کے ذریعہ ہمارے گھر گرانے کی کوشش کی، ناکامی پر مجھے اور میرے بھائی کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دی گئیں۔ پرخے جان نے بیان میں کہا کہ 9 فروری کو دو موٹر سائیکل سواروں نے نورنگ لکی مروت میں مجھ پر فائرنگ کی لیکن میری جان بچ گئی۔ اس کے بعد 10 فروری کو میرے بھائی گل شماد خان عرف ماتوڑکے کو شہید کر دیا گیا۔ مقتول ماتوڑکے نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ میرے بھائی کے قتل کی ذمہ داری منظور پشتین، محسن داوڑ، علی وزیر، مالک نصر اللہ پر عائد ہوتی ہے جبکہ ان کے ساتھ ساتھ ڈاکٹر گل عالم اور عید رحمان بھی اس قتل میں ملوث ہیں، یہ تمام افراد غیر قانونی جرگے اور خیسور واقعہ کے ذمہ دار ہیں۔

    رضا بھائی

    میں نے تو پہلے ہی کہا ہے کہ پر امن اعتجاج ہر شہری کا حق ہے لیکن اگر کوئی قانون توڑتا ہے تو اسے لمبیاں پا کر اتنے چھتر مارنے چاہیے کہ دوبارہ کسی کو قانون اپنے ہاتھ میں لینے کی جرات نہ ہو

    جہاں تک خیسور واقعہ پر ڈپٹی کمشنر شمالی وزیرستان کی رپورٹ کا تعلق ہے تو فوجی اپنے زیر قبضہ علاقے سے جو رپورٹ چاہیں جاری کروا سکتے ہیں. ڈپٹی کمشنر شمالی وزیرستان بیچارہ سرکاری ملازم ہے. وہ کہاں فوجیوں کا کوئی حکم ماننے سے انکار کر سکے گا؟ ساہیوال قتل کا واقعہ اگر خیسور میں ہوا ہوتا تو ان مقتولین کے قتل کی زمہ داری بھی نامعلوم دہشتگردوں پر دہلی جا چکی ہوتی

Viewing 4 posts - 41 through 44 (of 44 total)

You must be logged in to reply to this topic.

Navigation