Home Forums Siasi Discussion جھوٹے غدار جھوٹے غدار

#14
Athar
Participant
Offline
  • Professional
  • Threads: 111
  • Posts: 2183
  • Total Posts: 2294
  • Join Date:
    21 Nov, 2016

Re: جھوٹے غدار

بے شک غداری کے سرٹیفیکیٹ لیاقت علی خان کے دور سے بٹنے شروع ہوگئے تھے کیونکہ وہ خود بھی ایک نوابزادہ تھا جسے اختلاف راے پسند نہیں تھا اگرچہ اس دور میں مالی کرپشن کا تصور ابھی وجود میں نہیں آیا تھا لہذا لیاقت علی خان کے اکاونٹ میں تیس روپے یا شیروانی کی پھٹی جیب آجکل کے دور میں بہت بھلی لگتی ہیں مگر اس دور میں تقریبا سارے سیاسی لیڈرز اسی طرح سادگی سے زندگی بسر کرتے تھے اگر غداری کے سرٹیفیکیٹ اکٹھےکئے جائیں تو پتا چلے گا کہ نناوے فیصد سرٹیفیکیٹ آمروں کے دور حکومت میں چھاپے گئے تھے۔ ان کے پاس عوامی طاقت نہیں ہوتی تھی جسکی کمی ان سرٹیفیکیٹس کی اشاعت سے پوری کرلی جاتی تھی۔ بدقسمتی سے موجودہ حکومت کے مشیران باتدبیر ہر ٹاک شو میں ایک دو غداری کے سرٹیفیکیٹ دے کر جاتے ہیں۔ جیسا لیڈر ویسے اس کے چیلے بھی بن جاتے ہیں۔ جب عمران خان نے سابقہ حکومت کے سپیکر کو ٹی وی پر غداری کا سرٹیفیکیٹ دیا تو سب اہل راے نے اسے بچگانہ بلکہ احمقانہ موقف قرار دیا تھا ویسے بھی عمران خان بونگیاں مارنے کیلئے کافی مشہور ہے جو آج کہتا ہے اس پر کل یوٹرن یقینی ہوتا ہے۔ غداری کی سزا موت ہے مگر عمران اینڈ کو جو بوٹ چاٹنے کے پروسیجر میں غداری کے سرٹیفیکیٹ بانٹ رہی ہے اس پر کوی کاروای نہیں کی جاتی اور اکثر اوقات دوبارہ اس کا ذکر بھی نہیں کیا جاتا افسوس کہ لیڈر کی ان بچگانہ حرکات کی علامات اب اس کے چیلوں میں بھی دکھای دینے لگی ہیں اور انواع و اقسام کے سرٹیفیکیٹ بٹنے عام ہوگئے ہیں۔ وجاہت علی خان کی بات بالکل درست ہے کہ یہاں اختلاف راے رکھنے کو غداری کہہ دیا جاتا ہے حالانکہ اختلاف راے سے ڈسکشن اور معاملات کے حل کے دروازے کھلتے ہیں۔ چونکہ موجودہ حکمران اختلاف راے برداشت نہیں کرپاتے شائد اسی لئے معاملات بھی حل نہیں ہورہے۔ پاکستان کی عوام تاریخ کے تاریک ترین دور سے سسکتی ہوی گزر رہی ہے۔ دو سال بعد جب انتخابات ہونگے تو اس پارٹی کو عوام کے سامنے کٹہرے میں کھڑا ہونا پرے گا جیسے دیگر پارٹیاں کھڑی ہوتی رہی ہیں اور اگر اس بار بوٹوں کی اشیرواد نہ ملی تو پارٹی اپوزیشن بنچوں پر بھی دکھای نہیں دے گی

آشیر واد کیوں نہ ملے گی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ملے گی اور ضرور بہ ضرور ملے گی باجوہ جی نے جان چھوڑی سے اس سے آگے آنے والا نیازی کو باجوہ جی سے بھی زیادہ عزیز ہے آپ جمع خاطر رکھئے اگلے آنے والے ڈھکوسلہ الیکشن کے بعد پی ٹی آئی اپوزیشن پنچوں پر واقعی نظر نہیں آئے گی کیونکہ حکومتی بنچوں سے اُٹھے گی ہی نہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔جو اٹھارہ کے الیکشنز کا تیا پانچہ کر سکتے ہیں اُن کے لیئے تئیس کا الیکشن جھرلو کونسا مشکل کام ہوگا۔

×
arrow_upward DanishGardi