Home Forums Non Siasi آواز دے کہاں ہے آواز دے کہاں ہے

#3
Zaidi
Participant
Offline
  • Advanced
  • Threads: 19
  • Posts: 939
  • Total Posts: 958
  • Join Date:
    30 May, 2020
  • Location: دل کی بستی

Re: آواز دے کہاں ہے

Welcome back Anjaan Sahib:

مانا شب غم صبح کی محرم تو نہیں ہے
سورج سے تیرا رنگ حنا کم تو نہیں ہے
کچھ زخم ہی کھائے ،چلو کچھ گل ہی کھلائے
ھرچند بہاراں کا یہ موسم تو نہیں ہے

۔اب کارگاہ دھر میں لگتا ہے بہت دل
اے دوست کہیں یہ بھی تیرا غم تو نہیں ہے ۔

جانے یہ کسی کا ہو لہو دامن گل پر
صیاد یہ کل رات کی شبنم تو نہیں ہے ۔

  • This reply was modified 3 months ago by Zaidi.
×
arrow_upward DanishGardi