نون لیگ اور اسٹیبلشمنٹ ، پس پردہ کیا ہو رہا ہے ؟

Home Forums Siasi Discussion نون لیگ اور اسٹیبلشمنٹ ، پس پردہ کیا ہو رہا ہے ؟ نون لیگ اور اسٹیبلشمنٹ ، پس پردہ کیا ہو رہا ہے ؟

#10
Awan
Participant
Offline
Thread Starter
  • Professional
  • Threads: 140
  • Posts: 2822
  • Total Posts: 2962
  • Join Date:
    10 Jun, 2017

Re: نون لیگ اور اسٹیبلشمنٹ ، پس پردہ کیا ہو رہا ہے ؟

Awan اعوان بھائی، انگریزی کا مقولہ ہے کہ “فارچون فیور دا بریو” ایمانداری کی بات ہے کہ اپنی سیاست کے اس موڑ پر میاں صاحب نے میری توقع اور اپنی روایات کے بر خلاف کہیں زیادہ بہادری کا مظاہرہ کیا ہے اس بریوری کے کا سب سے بڑا اور غیر متوقع فائدہ کیپٹین صفدر کی مزار قائد پر جذباتی جمہوری نعروں اور نتیجتا ملٹری اسٹیبلشمنٹ کے رعونت بھرے اقدامات اور سندھ پولیس کے انتہائی موثر احتجاج نے ایسی صورتحال پیدا کردی ہے جس نے اس گندی اسٹیبلشمنٹ کو پوری طرح برہنہ کرکے میاں صاحب کو یہ کہنے کا موقع فراہم کردیا ہے کہ “دیکھیں ریاست سے اوپر ریاست کا اس سے بڑا ثبوت اور کیا چاہئے.” حالیہ چھکے اور چوکوں سے میاں صاحب اور انکی بہادر اور کراؤڈ پلر بیٹی نے اس میچ میں اپنے لئے سازگار ماحول بنالیا ہے . اب سے کچھ عرصہ قبل تک عمران اور اسٹیبلشمنٹ حزب اختلاف کے پیچھے ایسے بھاگ رہے تھے جیسے چوروں کے پیچھے کوتوال مگر اب صورتحال میں کافی بدلاؤ آچکا ہے اسٹیبلشمنٹ پہلی مرتبہ کافی عرصہ کے بعد دفاعی انداز میں آچکی ہے حزب اختلاف کے ساتھ ساتھ ڈھکے چھپے الفاظ میں خان بھی باجوہ پر تنقید کررہا ہے .جو کہ ایک تشویشناک بات ہے سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ سامنے جو کچھ ہو رہا ہے کیا وہ ایسا ہی ہے جو نظر آرہا ہے یا اسٹیبلشمنٹ کے ہی کچھ عناصر پی ڈی ایم کے پیچھے ہیں اور انکو عوامی دباؤ بڑھاکر عمران کو بلکل ہی تابعدار بنانا چاہتے ہیں جسکا اشارہ حالیہ دنوں میں خان نے یہ کہہ کر دیا ہے کہ اگر میری حکومت جاتی ہے تو جائے مگر میں نے ان چوروں کو نہیں چھوڑنا . سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ اسکو یہ کیوں محسوس ہو رہا ہے کہ اسکی حکومت جاسکتی ہے؟ اور اگر حکومت جاتی ہے تو عمران کی سیاست کے لئے یہ بیانیہ ضروری ہے کہ دیکھو میں نے چوروں اور مافیاؤں پر کمپرومائز نہیں کیا اور اپنی حکومت سے جان چھڑالی . ایک بلین ڈالر کا سوال ہے کہ وہ کونسی صورت ہو سکتی ہے جسکے تحت یہ حکومت گھر چلی جائے اور نیے انتخابات کی صورت بنے؟ ایک صورت تو یہ ہوسکتی ہے کہ خان کو بھی عدالت کے ذرئیے نااہل قرار دلوادیا جائے یا یوسف رضا گیلانی ٹائپ کا مقدمہ بنا کر اسکو باہر کردیا جائے جسکے نتیجے میں سڑکوں پر کچھ امن و امان کا مسلہ پیدا ہوجاے اور حالت کو درست کرنے کے بہانے اقدامات لئے جایں. اور بھی کچھ صورتیں ہوسکتیں ہیں . اب آتے ہیں اصل نکتہ کی طرف کہ کیا فوج سے مذاکرت کی بات کرکے مریم نے کچھ غلط کیا ہے؟ میرا خیال ہے ایسا نہیں ہے کیوں کہ فوج ایک ڈی فیکٹو طاقت ہے اور اس سے آپ کو بات کرنی ہی پڑے گی . اہم بات یہ ہے کہ کیا بات کرنی ہے. اس بات میں کسی شک و شبہ کی گنجائش نہیں ہے کہ موجودہ حالت میں اسٹیبلشمنٹ نے کچھ علاقہ بحالت مجبوری خالی کیا ہے، فلحال فوج کو فیس سیونگ دی جاسکتی ہے اور دیا جانا چاہئے کیونکہ یہ بات نہیں بھولنی چاہیے کہ بندوق کس کے پاس ہے . ایک بات مگر طے ہے کہ مریم گروپ اگر حکومت میں آتی ہے تو اسٹبلشمنٹ کو کافی علاقہ خالی کرنا پڑے گا خطرہ اس صورتحال کا یہ ہے کہ کیا خان کو رسی تڑوا کر بھاگنے اور حزب اختلاف کی سیاست کرنے کی سہولت دی سکتی ہے ؟ یہ بہت خطرناک آپشن ہوگا کیوں کہ حکومت میں رہتے ہوے خان جن رسیوں میں بندھا ہوا ہے آزاد ہوتے ہی اسکی زبان پر قابو کرنا ناممکن ہوگا اسکو یا تو جیل میں ڈالنا پڑے گا یا مستقل علاج کرنا پڑےگا جو بھی ہو آنے والا وقت انتہائی دلچسپ ہونے جارہا ہے

گھوسٹ بھائی بہت اچھی تجزیہ کیا آپ نے حالات کا ، سارے اینٹی اسٹیبلشمنٹ لوگ بہت خوش ہیں میاں صاحب کے نام لے کر فوجیوں کو للکارنے پر مگر اس کا سیاسی طور پر کتنا فائدہ اور کتنا نقصان ہے یہ دیکھنا ہو گا – ایک بات طے ہے کہ میاں صاحب نے اسٹیبلشمنٹ کے لئے کوئی چوئیس نہیں چھوڑی کہ وہ خان صاحب سے اپنی جپھی مزید مظبوط کر لے – اگر میاں صاحب کے پیچھے اسٹیبلشمنٹ کا کوئی نہیں ہے تو پھر بظاھر تو میاں صاحب کے لئے یہ سراسر گھاٹے کا سودا ہو گا اور انہوں نے خان کے پانچ سال پورے ہونے کے بھد بھی اپنے آنے کے چانس ختم کر دئے ہیں – دوسری طرف دیکھیں تو نون کے پاس بھی کوئی چوئیس نہیں تھی – حالات ایسے بنائے جا رہے تھے کہ سینٹ کے الیکشن کے بھد قانون سازی کر کے ان کے گرد شکنجہ مزید سخت کیا جائے اور خان حکومت والے موجودہ سیٹ اپ کو خان حکومت کے پانچ سال پورے ہونے کے بھد بھی جاری رکھا جائے جس میں اختیارات خان کے پاس کم اور مقتدرہ کے پاس زیادہ ہیں – نون لیگ نے سوچا ہے جب مرنا ہی ہے تو کیوں نہ لڑ کر مرا جائے اس سے کوئی فائدہ ہو نہ ہو نقصان بھی مزید کیا ہو گا – مرے ہوئے کو کیا مارو گے اور پھر وہ وقت بھی دور نہیں تھا جب شہباز شریف اور حمزہ کو بھی سات دس سال کے لئے نیب جیل کی سزا سنا دیتا – جب مفاہمت بھی ناکام ہے تو کیوں نا مزاحمت کو ٹاپ گئیر لگایا جائے – ہر چیز کا انجام بات چیت پر ہونا ہوتا ہے اسلئے مریم نے کچھ غلط نہیں کیا مگر میرا خیال ہے میاں صاحب نے ہمت کر ہی لی ہے تو فلحال آگ میں تھوڑا اور ایندھن ڈالیں یا آگ کو اسی رفتار سے چلنے دیں کیونکے ابھی فوج پر اتنا دباؤ نہیں پڑا کہ آپ کے حق میں کوئی نتیجہ نکل سکے – آج مریم نے سوات میں جلسے سے خطاب کیا وہاں میاں صاحب نے بھی ویڈیو لنک پر تقریر کی مگر کہیں رپورٹ نہیں ہوا میاں صاحب نے وہاں کیا کہا – اس تقریر کے سننے سے اندازہ ہو سکتا ہے کہ میاں صاحب اس لڑائی کو آگے کیسے لے کر چلنا چاہتے ہیں – میاں صاحب کو کچھ ملے یا نہ ملے مگر میاں صاحب نے سیاسی عمل میں فوج کی مداخلت کو اب ایسا موضوع بنا دیا ہے کہ اب ہر کوئی کھل کر اس پر بات کر رہا ہے اور وہ دن گئے جب فوج کی بجائے دوسرے الفاظ جیسے طاقت ور حلقے ، مقتدرہ ، خلائی مخلوق ، محکمہ زراعت ، پوشیدہ قوتیں وغیرہ کے الفاظ استعمال کئے جاتے تھے – آج کالم نگار بھی بہادر ہو گئے ہیں اور کھل کر فوج کا نام لے رہے ہیں – یہ چیز کہیں نہ کہیں کبھی نہ کبھی ملک کو فائدہ ضرور دے گی –

Navigation

Do NOT follow this link or you will be banned from the site!