کیا یہ کائنات واقعی ہی انسان کے واسطے بنائی گئی ہے

Home Forums Science and Technology کیا یہ کائنات واقعی ہی انسان کے واسطے بنائی گئی ہے کیا یہ کائنات واقعی ہی انسان کے واسطے بنائی گئی ہے

#8
shahidabassi
Participant
Offline
  • Expert
  • Threads: 32
  • Posts: 7272
  • Total Posts: 7304
  • Join Date:
    5 Apr, 2017

Re: کیا یہ کائنات واقعی ہی انسان کے واسطے بنائی گئی ہے

شاہد بھائی اگر آپ آیتوں پر غور کر تو زمین جمع کے صغیہ میں استعمال نہیں ہوئی … جس کا مطلب ہے ہماری زمین پر مجود جانداروں کی بات ہو رہی ہے …. جہاں تک پہلی آیت کا تعلق ہے

اور اسی کی نشانیوں میں سے ہے آسمانوں اور زمین کا پیدا کرنا اور ان جانوروں کا جو اس نے ان میں پھیلا رکھے ہیں اور وہ جب چاہے ان کے جمع کرلینے پر قادر ہے

اس میں آیت میں آسمانوں کے ساتھ صرف ایک زمین کا ذکر ہے زمینوں کا ذکر نہیں ہے جس سے یہ بات ثابت ہوتی ہے کہ زمین پر مجود مخلوق کی بات ہو رہی کیوں کہ آسمانوں میں یا خلا میں تو کوئی جاندار مخلوق زندہ نہیں رہ سکتی .. یہ اس وقت کی مشہور سائنس تھی کہ سات آسمان مجود ہیں … یہ بات ایک اور آیت میں بھی بیان ہوئی ہے اے کہ ہم نے قریب کے آسمان کو ستاروں سے زنیت تھی … جب کے آج سب کو معلوم ہو گیا آسمان نامی کوئی چیز مجود نہیں ہر طرف پھیلی ہوئی خلا ہے ….

ان سیف صاحب ۔ ا نٹرپریٹیشن پر منحصر ہے کہ آپ ان آیات کو کیسے سمجھتے ہیں۔
جی ہاں ایک ہی زمین اور یونیورس کی بات ہو رہی ہے۔ اللہ تعالی جن سے مخاطب ہے چونکہ وہ اس زمین پر رہتے ہیں تو اس کا ذکر ہے اور ساتھ آسمانوں یعنی یونیورس کا۔ زمین اور آسمانوں یعنی دونوں میں موجود حیات کا واضح ذکر ہے۔
رہا سوال آسمانوں یا سات آسمانوں برائے قدیم زمانے میں عام یقین کی تو آپ کو اس سے کچھ آگے بڑھ کر یہ بھی دیکھنا چاہیے کہ اس زمانے میں مزید کونسی کونسی تھیوریوں پر یقین کیا جاتا تھا اور کیا ان میں ۹۹ فیصد غلط نہی تھیں؟ اگر اسلام نے قران میں موجود سائنسی اعشارات ان تھیوریوں سے لئے ہوتے تو کیا قران میں بتائے ایسی باتوں کا بھی واضح طور ۹۹ فیصد تک غلط ہونا لازمی نہ ہوتا؟ جبکہ حقیقت یہ ہے کہ ایک بھی ایسی غلطی آپ بیان نہی کر سکتے جو واضح اور جس کی تردید نا ممکن ہو۔
دوسری اور تیسری آیت میں سارے مادہ کا پہلے ایک ہی ہونا اور پھر اسے پھاڑ کر الگ الگ کردینے یعنی بگ بینگ کا واضح ذکر ہے اور تیسری آیت میں واضح لکھا ہے کہ یہ ایکسپینڈ ہو رہی ہے۔
یقیناً یہ حقیقتوں کی طرف صرف اشارے ہیں ساینسی ڈیٹیلز نہی ہیں۔

Navigation

Do NOT follow this link or you will be banned from the site!